وجود

... loading ...

وجود
وجود
ashaar
80 فی صد لوگ کرونا خطرے سے دوچار نہیں ہوں گے ،برطانوی سائنس دان وجود - پیر 08 جون 2020

معروف برطانوی نیورو سائنس دان پروفیسر کارل فریسٹن نے دعویٰ کیا ہے کہ 80 فی صد لوگ کرونا وائرس کا شکار نہیں ہوسکتے ۔میڈیارپورٹس کے مطابق انھوں نے ایک انٹرویو میں کرونا وائرس کی وبا پر قابو پانے کے لیے موجودہ اختیار کردہ پالیسی کے بارے میں اپنے شکوک کا اظہار کیا ۔حال ہی میں سائنس دانوں نے اس مفروضے کا اظہار کیا تھا کہ آبادی کی اکثریت کووِڈ19 کا شکار ہوسکتی ہے لیکن اس کی عملی طور پر تصدیق نہیں ہوئی تھی کیونکہ کرونا وائرس کے بیشتر کیسوں میں تو تمام علامات ظاہر نہیں ہوتی ہیں۔اس لی...

80 فی صد لوگ کرونا خطرے سے دوچار نہیں ہوں گے ،برطانوی سائنس دان

چین نے سب سے پہلے کورونا ویکسین متعارف کرانے کا منصوبہ بنالیا وجود - پیر 08 جون 2020

چین ممکنہ طور پر دنیا کا پہلا ملک بن سکتا ہے جو ستمبر میں ہی کورونا وائرس کی روک تھام کے لیے ویکسینز کو خطرے سے دوچار افراد کے لیے متعارف کراسکتا ہے چاہے اس دوران کلینیکل ٹرائل پر کام ہی کیوں نہ جاری ہو۔میڈیارپورٹس کے مطابق امریکا کے مقابلے میں کورونا وائرس کے علاج کو متعارف کرانے کے لیے چین کے طبی حکام نے ویکسینز کے حوالے سے گائیڈلائنز کا مسودہ تیار کرلیا ۔کسی بھی ملک کے مقابلے میں چین میں سب سے زیادہ 5 ویکسینز انسانی آزمائش کے دوسرے مرحلے میں داخل ہوچکی ہیں۔ویکسین کی تیاری ...

چین نے سب سے پہلے کورونا ویکسین متعارف کرانے کا منصوبہ بنالیا

گنجے مردوں میں کورونا سے متاثر ہونے کے خطرات زیادہ ہوتے ہیں، تحقیق وجود - پیر 08 جون 2020

ایک تازہ تحقیق میں انکشاف کیا گیا ہے کہ گنجے مردوں میں کورونا سے متاثر ہونے کے خطرات زیادہ ہوتے ہیں۔محققین نے مشورہ دیا ہے کہ گنج پن کو ہائی رسک عنصر سمجھا جانا چاہیے ، میڈیارپورٹس کے مطابق انہوں نے یہ بات امریکا میں کورونا سے مرنے والے پہلے امریکی ڈاکٹر فرینک گیبرن کا کیس سامنے آنے کے بعد کہی اوراسے گیبرن سائن کا نام دیا۔ڈاکٹر فرینک گیبرن بھی گنج پن کا شکار تھے ۔ چین میں کورونا کے بعد جنوری سے اب تک کے اعداد وشمار سے ظاہر ہوتا ہے کہ خواتین کے مقابلے میں مردوں میں اموات کے ام...

گنجے مردوں میں کورونا سے متاثر ہونے کے خطرات زیادہ ہوتے ہیں، تحقیق

کورونا وائرس اب پہلے جیسا جان لیوا نہیں رہا، اطالوی ڈاکٹروں کا دعویٰ وجود - منگل 02 جون 2020

اٹلی سے تعلق رکھنے والے ڈاکٹروں نے دعویٰ کیا ہے کہ نئے کورونا وائرس اب اتنا جان لیوا نہیں رہا جتنا عالمی وبا کے آغاز پر تھا۔مییا رپورٹ کے مطابق میلان کے سان ریفایلی ہاسپٹل کے سربراہ ڈاکٹر البرٹو زینگریلو نے ٹی وی انٹرویو کے دوران کہا کہ حقیقت تو یہ ہے کہ طبی لحاظ سے یہ وائرس اب اٹلی میں موجود نہیں۔انہوںنے کہاکہ گزشتہ 10 دن کے دوران سواب ٹیسٹوں میں جو وائرل لوڈ دیکھا گیا وہ ایک یا 2 ماہ قبل کے مقابلے میں نہ ہونے کے برابر ہے ۔انہوں نے اطالوی حکومت پر لاک ڈاؤن کی پابندیاں اٹھانے...

کورونا وائرس اب پہلے جیسا جان لیوا نہیں رہا، اطالوی ڈاکٹروں کا دعویٰ

کورونا وائرس، ذیابیطس کے مریضوں کے لیے خطرے کی گھنٹی وجود - هفته 30 مئی 2020

ذیابیطس کا ہر دس میں سے ایک مریض کورونا وائرس میں مبتلا ہونے کی صورت میں ہسپتال جانے کے سات دن بعد ہی اپنی زندگی کی بازی ہار سکتا ہے ۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق یہ انکشاف ایک تازہ سائنسی مطالعے کے نتائج میں کیا گیا ہے ، جو جمعے کے روز ایک جریدے میں شائع ہوئے ۔ اس مطالعے کے دوران ذیابیطس کے تیرہ سو مریضوں کا جائزہ لیا گیا۔ پچھتر برس سے زائد عمر کے مریضوں میں پچپن برس سے کم عمر کے مریضوں کے مقابلے میں شرح اموات چودہ فیصد زیادہ رہی۔ دل، بلڈ پریشر اور پھیپھڑوں کے امراض میں مب...

کورونا وائرس، ذیابیطس کے مریضوں کے لیے خطرے کی گھنٹی

کورونا وائرس کیلئے کرشماتی افریقی دوا پر ڈبلیو ایچ او کا ردعمل وجود - هفته 16 مئی 2020

افریقی ملک مڈغاسکر میں ایک ہربل مشروب کو نئے نوول کورونا وائرس سے ہونے والی بیماری کووڈ 19 کا علاج قرار دے کر اس براعظم کے متعدد ممالک کو بھی فراہم کیا جارہا ہے ۔اب عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) نے اعلان کیا ہے کہ وہ مڈغاسکر کے ساتھ اس ہربل مشروب کووڈ اورگینک (سی وی او) کے حوالے سے رابطے میں ہے ۔میڈیارپورٹس کے مطابق افریقہ میں ڈبلیو ایچ او کی ریجنل ڈائریکٹر متشیدیسو مویتی نے ایک میڈیا بریفننگ کے دوران کہا کہ ہم مڈغاسکر کی حکومت کے ساتھ رابطے میں ہیں۔عالمی ادارہ صحت کا یہ ردع...

کورونا وائرس کیلئے کرشماتی افریقی دوا پر ڈبلیو ایچ او کا ردعمل

امریکا کو کورونا ویکسین تک پہلے رسائی دینے پر فرانسیسی حکام مشتعل وجود - هفته 16 مئی 2020

نئے نوول کورونا وائرس کی وبا دنیا بھر میں پھیل چکی ہے اور ہر ملک ہی اس سے نجات کے لیے ویکسین حاصل کرنے کا خواہشمند ہیں۔مگر ایسا بھی لگتا ہے کہ مستقبل قریب میں کئی ممالک کے درمیان ویکسین کی تیاری کے حوالے سے تعلقات خراب ہوسکتے ہیں، جس کی ایک مثال فرانسیسی حکام کے سخت بیانات کی شکل میں سامنے آئی۔فرانسیسی کمپنی سینوفی کے چیف ایگزیکٹو پال ہڈسن نے کہا کہ ان کی کمپنی کی تیار کردہ ویکسین پر پہلا حق امریکی حکومت کا ہوگا جس نے اس خطرے کو مول لینے کے لیے سرمایہ کاری کی ہے ۔ان کا کہنا ت...

امریکا کو کورونا ویکسین تک پہلے رسائی دینے پر فرانسیسی حکام مشتعل

کورونا ویکسین کے بندروں پر تجربے کے حوصلہ افزا نتائج سامنے آگئے وجود - هفته 16 مئی 2020

عالمی وبا کورونا وائرس کے علاج کیلئے تیار کی جانے والی ویکسین کے جانوروں پر آزمائش کے حوصلہ افزا نتائج سامنے آئے ہیں جس نے کورونا کی ویکسین کی جلد دستیابی کی امیدیں روشن کردی ہیں۔برطانوی نشریاتی ادارے کی رپورٹ کے مطابق زیادہ تر ایشیا میں پائے جانے والے بندروں کی ایک نسل کے 6 بندروں میں کووڈ 19 ویکسین کی آزمائش کی گئی اور نتائج سے معلوم ہوا کہ ویکسین نے انہیں کورونا وائرس سے تحفظ فراہم کیا۔رپورٹ کے مطابق بندروں کو پہلے کورونا وائرس سے متاثر کیا گیا اور پھر انہیں ویکسین دی گئی ...

کورونا ویکسین کے بندروں پر تجربے کے حوصلہ افزا نتائج سامنے آگئے

جولائی کے وسط تک پاکستان میں کورونا مریضوں کی تعداد دو لاکھ سے تجاوز کر سکتی ہے ،ڈبلیو ایچ او وجود - بدھ 13 مئی 2020

عالمی ادارہ صحت نے خبردار کیا ہے کہ اگر حفاظتی تدابیر نہ اختیار کی گئیں تو جولائی کے وسط تک پاکستان میں کورونا کے مریضوں کی تعداد دو لاکھ سے تجاوز کر سکتی ہے ۔میڈیارپورٹس کے مطابق پاکستان میں بھی ڈاکٹروں اور طبی ماہرین کو ڈر ہے کہ اگر ایسا ہوا تو ملک میں صحت کا نظام اس بوجھ کو برداشت نہیں کر پائے گا کیونکہ تمام تر سرکاری ہسپتالوں کو ملا کر بھی مریضوں کی اتنی گنجائش نہیں۔کورونا کے تمام متاثرین کو ہسپتال جانے کی ضرورت نہیں ہو گی لیکن اگر ان میں سے نصف یا ایک چوتھائی افراد بھی ہ...

جولائی کے وسط تک پاکستان میں کورونا مریضوں کی تعداد دو لاکھ سے تجاوز کر سکتی ہے ،ڈبلیو ایچ او

کورونا وائرس آنکھوں کے ذریعے بھی جسم میں داخل ہو سکتا ہے ،امریکی تحقیق وجود - منگل 12 مئی 2020

کورونا وائرس کے پھیلاؤ سے متعلق حال ہی میں سائنسدانوں نے انکشاف کیا ہے کہ یہ وائرس آنکھوں کے ذریعے بھی جسم میں داخل ہو سکتا ہے ۔میڈیارپورٹس کے مطابق امریکا کی جونز ہاپکنز یونیورسٹی کے سائنسدانوں کی جانب سے ایک تحقیق کی گئی جس میں انہوں نے یہ نتیجہ اخذ کیا گیا کہ اگر کورونا وائرس سے متاثرہ شخص کی چھینک یا کھانسی میں سے نکلنے والے قطرے کسی دوسرے شخص کی آنکھوں میں جا گریں تو اس سے اس شخص کی آنکھوں کے ذریعے سے وائرس جسم میں داخل ہو سکتا ہے ۔سائنسداوں کا کہناتھا کہ کورونا وائرس ان...

کورونا وائرس آنکھوں کے ذریعے بھی جسم میں داخل ہو سکتا ہے ،امریکی تحقیق

بل گیٹس ملوث ، شہریوں کو قابوکرنے کے لیے کورونا پھیلایا،جرمنی میں مظاہرہ وجود - پیر 11 مئی 2020

جرمنی میں برلن، میونخ، شٹٹ گارٹ اور دیگر شہروں میں کورونا وائرس کی وجہ سے حکومت کی جانب سے عائد پابندیوں کے خلاف مظاہرے کیے گئے ۔ ڈورٹمنڈ میں دائیں بازو کے ایک احتجاجی نے صحافیوں کی ایک ٹیم پر حملہ بھی کیا۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق جرمنی کے متعدد بڑے شہروں میں کئی ہزار افراد نے کورونا وائرس کی وجہ سے حکومت کی جانب سے عائد کردہ حفاظتی اقدامات کو انتہائی سخت قرار دیتے ہوئے اس کے خلاف مظاہرہ کیا۔ مظاہرین سیاستدانوں اور شعبہ طب سے تعلق رکھنے والے افراد پر معاشرے میں افراتفر...

بل گیٹس ملوث ، شہریوں کو قابوکرنے کے لیے کورونا پھیلایا،جرمنی میں مظاہرہ

3 ادویات کا امتزاج کورونا وائرس سے جلد صحت یابی میں مدد دیتا ہے ، تحقیق وجود - پیر 11 مئی 2020

3 اینٹی وائرل ادویات کا امتزاج مدافعتی نظام کو مضبوط بنا کر نئے نوول کورونا وائرس کے مریضوں کو کووڈ 19 سے جلد صحتیاب ہونے میں مدد دیتا ہے ۔یہ بات ہانگ کانگ کے ڈاکٹروں نے بتائی ۔ انہوں نے کہا کہ اس حوالے سے مزید آزمائش کی ضرورت ہے مگر اس سے ضرورت پڑنے پر کووڈ 19 کے مریضوں کے علاج کا ایک اور امکان بھی ظاہر ہوتا ہے ۔اس وقت امریکا اور جاپان میں صرف ایک دوا ریمیڈیسیور کو علاج کے لیے استعمال کرنے کی اجازت دی گئی ہے جو بیماری کا دورانیہ تو کم کرتی ہے مگر اس کی سپلائی محدود ہے ۔ہانگ ...

3 ادویات کا امتزاج کورونا وائرس سے جلد صحت یابی میں مدد دیتا ہے ، تحقیق

2021 کے آخر تک کرونا علاج کی ویکسین دستیاب نہیں ہوگی،ڈبلیو ایچ او وجود - پیر 11 مئی 2020

عالمی ادارہ صحت(ڈبلیو ایچ او) نے خبردار کیا ہے کہ 2021ء کے اختتام سے قبل کرونا کی کسی ویکسین کی تیاری کا امکان نہیں۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق عالمی ادارہ صحت کے ایک سینئر عہدے دار ڈیل فشر نے کہاکہ کرونا کی ویکسین کی 2021 کے اختتام سے قبل دستیابی کا امکان نہیں ۔انھوں نے امریکی نشریاتی ادارے سے ایک انٹرویو میں کہا کہ میرے خیال میں اگلے سال کا اختتام بہت مناسب توقع ہوگی۔ڈیل فشر ڈبلیو ایچ او کے عالمی وَبا الرٹ اور ردعمل نیٹ ورک کے سربراہ ہیں۔انھوں نے خبردار کرتے ہوئے کہا کہ ...

2021 کے آخر تک کرونا علاج کی ویکسین دستیاب نہیں ہوگی،ڈبلیو ایچ او

چین کا وبائوں سے نمٹنے کے لیے نظامِ صحت میں اصلاحات لانے کا اعلان وجود - اتوار 10 مئی 2020

چین نے کہا ہے کہ وہ طبی نظام میں کورونا وائرس کی وبا کے نتیجے میں عیاں ہونے والی خامیوں کو دور کرنے کے لیے نظام میں اصلاحات لائے گا۔میڈیارپورٹس کے مطابق چینی نیشنل ہیلتھ کمیشن کے نائب وزیر لی بِن نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ کورونا وائرس کی یہ وبا ہمارے ملک کے نظامِ حکمرانی اور ہماری حکمرانی کی صلاحیت کے لیے سب سے بڑا امتحان ہے ، اور اس نے بڑی وباں پر ہمارے ردِ عمل اور عوامی نظامِ صحت میں موجود خامیوں کو عیاں کر دیا ہے ۔انھوں نے کہا کہ کمیشن وبا کے انسداد اور اس پر قا...

چین کا وبائوں سے نمٹنے کے لیے نظامِ صحت میں اصلاحات لانے کا اعلان

لاما میں پائے جانے والی اینٹی باڈیز سے کورونا کا علاج ممکن وجود - اتوار 10 مئی 2020

امریکا اور بیلجیئم کے سائنسدانوں نے کہاہے کہ لاما جسے ونٹر بھی کہا جاتا ہے ، کورونا وائرس کے شکار میں مفید ثابت ہوسکتا ہے ۔غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق سائنسدانوں نے ایک چھوٹے ذرے کی نشاندہی کی جو ممکنہ طور پر نئے کورونا وائرس کا راستہ روک سکتا ہے ۔ بیلجیئم کے وی آئی بی یو جینٹ سینٹ برائے میڈیکل بائیو ٹیکنالوجی اور آسٹن کے یونیورسٹی آف ٹیکساس کے سائنسدانوں نے جرنل سیل میں تحقیق شائع کی جس میں لاما ان کی تحقیق کا مرکز رہا۔اس گروہ نے 4 سال قبل 2003 میں پھیلنے والے ...

لاما میں پائے جانے والی اینٹی باڈیز سے کورونا کا علاج ممکن

تین ادویات کا مرکب کووڈ انیس کے خلاف موثرہوسکتاہے ،نئی تحقیق وجود - اتوار 10 مئی 2020

تین مختلف اینٹی وائرل ادویات کا مرکب کورونا وائرس کے مریضوں میں جلد صحت یابی کا باعث بن سکتا ہے ۔میڈیارپورٹس کے مطابق ہانگ کانگ میں محققین نے ایک مطالعے میں پتا لگایا کہ کووڈ انیس کے کم شدت والے کیسز میں تین ادویات کا مرکب موثر ثابت ہوا ہے ۔ اس مطالعے کے نتائج لانسیٹ نامی سائنسی جریدے میں شائع ہوئے ۔ ہانک کانگ کے چھ مختلف ہسپتالوں میں سوا سو سے زائد مریضوں کو یہ ادویات دی گئیں اور سامنے آنے والے نتائج کی بنیاد پر یہ اعلان کیا گیا۔ واضح رہے کہ فی الحال کووڈ انیس کے علاج کے لیے...

تین ادویات کا مرکب کووڈ انیس کے خلاف موثرہوسکتاہے ،نئی تحقیق

لاک ڈاون کے خاتمے میں جلدی خطرناک ہوسکتی ہے ،عالمی ادارہ صحت وجود - جمعه 08 مئی 2020

عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او)نے خبردار کیا ہے کہ مختلف ممالک میں کورونا لاک ڈاون کیخاتمے میں جلدی خطرناک ہوسکتی ہے ۔میڈیارپورٹس کے مطابق عالمی ادارہ صحت کے ڈائریکٹر جنرل ٹیڈروس نے ایک بریفنگ میں کہا کہ وہ ممالک جو کورونا وائرس کے باعث لاک ڈاون میں تھے انہیں اس کے خاتمے سے پہلے 6 نکات کا لازمی خیال رکھنا ہوگا۔انہوں نے کہا کہ لاک ڈاون میں نرمی سے پہلے یہ یقینی ہونا چاہیے کہ کورونا کیسز کی تعداد کم ہو رہی ہے اور وائرس کی منتقلی قابو میں ہے ۔ٹیڈروس نے کہا کہ حکومتوں کو اس بات کا...

لاک ڈاون کے خاتمے میں جلدی خطرناک ہوسکتی ہے ،عالمی ادارہ صحت

شہری جان بوجھ کر خود کو کورونا لگوا سکتے ہیں، امریکی حکام وجود - جمعه 08 مئی 2020

امریکا میں لاک ڈاون اور بڑھتی ہوئی بے روزگاری کی وجہ سے لوگ قوتِ مدافعت کے حصول کے لیے جان بوجھ کر خود کو کورونا وائرس لگوانے کی کوشش کر سکتے ہیں۔امریکی میڈیا کے مطابق صحت عامہ کے حکام کا کہنا تھا کہ لوگ کورونا وائرس لگوانے کے لیے خصوصی پارٹیز کا اہتمام کر سکتے ہیں۔امریکا میں اس طرح کا رجحان پہلے ہی موجود ہے کہ لوگ خود کورونا وائرس لگوانے کی کوشش کریں تاکہ وہ اپنے اندر قوتِ مدافعت پیدا کر سکیں۔حکام کا کہنا تھا کہ ایسے لوگوں کی نشاندہی ہوئی ہے جنہیں کورونا سماجی تقریب سے لگا ہ...

شہری جان بوجھ کر خود کو کورونا لگوا سکتے ہیں، امریکی حکام

بنگلادیش میں مساجد باجماعت نماز کے لیے کھول دی گئیں وجود - جمعه 08 مئی 2020

بنگلہ دیش میں عالمی وبا کورونا وائرس کے باعث لاک ڈاون کے تحت بند کی گئیں مساجد ڈیڑھ ماہ بعد باجماعت نمازوں کے لیے کھول دی گئیں۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق مساجد میں آنے کے لیے نمازیوں کو ہاتھ دھونے ، ماسک لگانے اور سماجی فاصلے کا خیال رکھنا ہوگا، مساجد میں ڈس انفیکشن اسپرے بھی کیا جائے گا۔بنگلہ دیش میں 26 مارچ کو لگائے جانے والے لاک ڈاون میں بتدریج نرمی کی جارہی ہے ۔بنگلہ دیش میں کورونا کے مریضوں کی تعداد 12 ہزار 425 اور اموات 186 ہیں۔

بنگلادیش میں مساجد باجماعت نماز کے لیے کھول دی گئیں

کورونا وائرس 80 ممالک میں پھیل گیا، اموات 3206ہوگئیں وجود - بدھ 04 مارچ 2020

کورونا وائرس 80 ممالک میں پھیل گیا، چین میں مزید38افراد ہلاک ہو گئے ، اموات 3 ہزار206ہوگئیں،اسپین میں بھی کورونا وائرس کا پہلا کیس سامنے آ گیا ۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق چین سے شروع اور پھر دیگر ملکوں میں پھیلنے والے جان لیوا کورونا وائرس سے دنیا کے 80 ممالک متاثر ہوچکے ہیں۔ دنیا بھر میں وائرس 3 ہزار 206 افراد کی موت کا باعث بن چکا ہے جبکہ 92ہزار 883 افراد بیمار ہیں۔غیرملکی خبرایجنسی کے مطابق چین میں کورونا سے مزید 38 افراد ہلاک ہوگئے ہیں،مزید 119 کیس افراد میں کورونا وا...

کورونا وائرس 80 ممالک میں پھیل گیا، اموات 3206ہوگئیں

کورونا 76 ممالک میں پہنچ گیا، امریکا میں ہلاکتوں کی تعداد 6 ہوگئی وجود - منگل 03 مارچ 2020

کورونا 76ممالک پہنچ گیا، چین میں مزید 31 افراد جان لیوا وائرس کی بھینٹ چڑھ گئے ، مرنے والوں کی تعداد دو ہزار 945 ہو گئی، امریکا میں تعداد 6 ہوگئی۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق دنیا بھر میں کرونا وائرس نے 76 ممالک کو لپیٹ میں لے لیا،چین میں کورونا سے مزید 31افراد ہلاک ہوگئے جس کے بعد صرف چین میں ہلاکتوں کی تعداد 2 ہزار 9 سو 43 ہوچکی ہے ۔ جبکہ80 ہزار افراد ہسپتالوں میں زیرعلاج ہیں ۔ امریکا میں مہلک وائرس سے 6 افراد ہلاک ہو گئے ،حالیہ چاروں ہلاکتیں واشنگٹن کے نرسنگ سینٹر میں ہو...

کورونا 76 ممالک میں پہنچ گیا، امریکا میں ہلاکتوں کی تعداد 6 ہوگئی

موٹاپے کا شکار خواتین، کویت پہلے، قطر دوسرے نمبر پر وجود - پیر 24 فروری 2020

عرب ممالک جہاں موٹاپے کا شکار خواتین سب سے زیادہ ہیں، ان میں کویت پہلے نمبر پر ہے جہاں ایسی خواتین کا تناسب 77فیصد ہے ۔ ان ممالک میں قطر دوسرے نمبر پر ہے جہاں موٹاپے کی شکار خواتین کی شرح 75 فیصد ریکارڈ کی گئی ہے ۔ غیرملکی خبررساں ادارے نے عالمی بینک کی ایک رپورٹ شائع کی ہے جس میں موٹاپے کے صحت اور معیشت پر منفی اثرات اجاگر کیے ہیں۔رپورٹ کے مطابق موٹی خواتین کے حوالے سے 10 عرب ممالک سب سے آگے ہیں۔اس فہرست میں میں عراق دسویں نمبر پر ہے جہاں موٹاپے کا شکار خواتین کا تناسب 70 فی...

موٹاپے کا شکار خواتین، کویت پہلے، قطر دوسرے نمبر پر

کرونا وائرس کے وار جاری، 96 افراد مزید نگل لیے، تعداد2442 ہو گئی وجود - اتوار 23 فروری 2020

چین میں کرونا وائرس سے مزید 96 افراد ہلاک ہوگئے جس کے بعد مہلک وائرس سے ہلاکتوں کی تعداد 2 ہزار 442 ہو گئی۔ دنیا بھر میں متاثرہ افراد کی تعداد 78 ہزار 599 ہو گئی۔ ایران میں 6 اور اٹلی میں 2 افراد وائرس سے ہلاک ہوئے ۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق چین کے علاوہ خطرناک وائرس کی تباہ کاریاں دنیا بھر میں پھیلتی جا رہی ہیں، چین مزید 630افراد میں وائرس کی تصدیق ہو گئی، ایران میں کرونا وائرس سے 6 افراد زندگی کی بازی ہار گئے ، متاثرین کی تعداد 18 ہو گئی۔ وائرس سے متاثرہ مریضوں کو ایر...

کرونا وائرس کے وار جاری، 96 افراد مزید نگل لیے، تعداد2442 ہو گئی

چین کورونا وائرس سے مزید 118افراد ہلاک ،تعداد2247ہو گئی وجود - جمعه 21 فروری 2020

کورونا وائرس سے مزید 118 افراد جان کی بازی ہارگئے ،مرنیوالوں کی تعداد 2247ہو گئی ۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق چین میں کورونا وائرس سے ہلاکتیں نہ رک سکیں اورمزید 118 افراد ہلاک ہوگئے جس کے بعد مجموعی ہلاکتوں کی تعداد2247ہوگئی۔899 نئے مریضوں میں وائرس کی تصدیق ہوئی ہے جس سے متاثرہ افراد کی تعداد 76700ہوگئی۔ صرف صوبہ ہوبئی میں وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد 62ہزارسے زائد ہے جبکہ 11ہزار633مریضوں کی حالت نازک ہے ۔دوسری جانب شنگھائی میں کورونا وائرس کے علاج کے لیے پلازما تھراپی ...

چین کورونا وائرس سے مزید 118افراد ہلاک ،تعداد2247ہو گئی

کورونا وائرس کی وبا ، عالمی خطر ے کے درجے میں اضافہ نہیں کیا جائیگا ، عالمی ادارہ صحت وجود - منگل 18 فروری 2020

عالمی ادارہ صحت نے کورونا وائرس کے حوالے سے ایک پریس کانفرنس کا انعقاد کیا جس میں عالمی ادارہ صحت کے ڈائریکٹر جنرل تیدروس ادھنوم نے کہا کہ چین کے جاری کردہ اعدادوشمار کے مطابق نوول کورونا وائرس سے متاثرہ نئے کیسز میں کمی دیکھنے میں آ رہی ہے ۔اس لئے عالمی ادارہ صحت موجودہ نتائج کو برقرار رکھے گا یعنی نوول کرونا وائرس نمونیا عالمی سطح پر وبائی بیماری نہیں اور عالمی سطح پر وبا کے خطر ے کی درجہ بندی کو نہیں بڑھایا جائے گا۔عالمی ادارہ صحت کے تحت ہنگامی صحت عامہ پروگرام کے انچارج م...

کورونا وائرس کی وبا ، عالمی خطر ے کے درجے میں اضافہ نہیں کیا جائیگا ، عالمی ادارہ صحت

کورونا وائرس مزید 142افراد ہلاک، تعداد 1671ہو گئی وجود - اتوار 16 فروری 2020

چین میں جان لیوا کورونا وائرس سے مزید 142افراد ہلاک ہو گئے ہیں جس کے بعد اس وبا سے مرنے والوں کی کل تعداد 1671ہو گئی ہے ۔ورلڈ ومیٹر کے مطابق کورونا وائرس سے اب تک 69ہزار 269افراد متاثر ہو چکے ہیں جن میں سے 11ہزار 299افراد کی حالت انتہائی تشویش ناک ہے ۔اس مضر بیماری سے صحت یاب ہونے والے افراد کی تعداد 11ہزار 308ہے جبکہ دنیا بھر کے 29ممالک کورونا وائرس سے متاثر ہوئے ہیں۔ان ممالک میں چین، جاپان، سنگاپور، تھائی لینڈ، جنوبی کوریا، ہانگ کانگ، آسٹریلیا، امریکہ، ملائشیا، جرمنی، تائیو...

کورونا وائرس مزید 142افراد ہلاک، تعداد 1671ہو گئی

کورونا وائرس کے باعث مختلف ممالک میں مساجد اور گرجا گھر ویران وجود - اتوار 16 فروری 2020

چین سے پھیلنے والے کورونا وائرس نے مختلف ممالک میں مسلمانوں کی مساجد کے ساتھ ساتھ دیگر عبادت گاہوں کو بھی ویران کر دیا ہے ، چین کے علاوہ دیگر مشرق بعید کے ممالک میں عبادت گاہوں میں جانے والے لوگ مصافحہ کرنے سے گریز کر رہے ہیں۔چین میں کورونا وائرس کے بعد مسلم کمیونٹی کی مساجد بھی اپنے نمازیوں سے محروم ہوتی جا رہی ہیں۔

کورونا وائرس کے باعث مختلف ممالک میں مساجد اور گرجا گھر ویران

چین ، وبائی مرض کی سب سے پہلے خبر دینے والا ڈاکٹر بھی کورونا وائرس سے ہلاک وجود - هفته 08 فروری 2020

چین میں کورونا وائرس کی وبا کے خطرے سے سب سے پہلے آگاہ کرنے والے ڈاکٹر لی وین لیانگ بھی کورونا وائرس کا شکار ہو کر جان کی بازی ہار گئے جس کے بعد ہلاک ہونے والوں کی تعداد 640 ہوگئی ہے ۔چینی نیشنل ہیلتھ کمیشن کے مطابق دو دن میں کورونا وائرس سے متاثرہ مزید 73 افراد ہلاک ہوگئے جس کے بعد مجموعی طور پر ہلاک ہونے والوں کی تعداد 640 ہوگئی ہے جب کہ 31 ہزار سے زائد مریض اب بھی زیر علاج ہیں۔پراسرار وائرس کی ہلاکت خیزی کا مقابلہ کرنے والے میڈیکل اسٹاف اور چینی عوام کو اس وقت دھچکہ لگا جب...

چین ، وبائی مرض کی سب سے پہلے خبر دینے والا ڈاکٹر بھی کورونا وائرس سے ہلاک

چین میں کورونا وائرس کے علاج کی انسانی آزمائش شروع وجود - بدھ 05 فروری 2020

چین نے ووہان سے دنیا کے مختلف ممالک میں پھیل جانے والے 2019 ناول کورونا وائرس انفیکشن کے علاج کے لیے ایک دوا کی آزمائش شروع کردی ہے۔امریکی ٹی وی کے مطابق Remdesivir نامی یہ اینٹی وائرل دوا گیلاڈ سائنسز انکارپوریشن نے تیار کی ہے جس کا مقصد وبائی امراض جیسے ایبولا اور سارس پر قابو پانا ہے اور اب اس کی آزمائش ایک طبی ٹیم بیجنگ میں چائنا جاپان فرینڈ شپ ہسپتال میں کورونا وائرس کی نئی قسم پر کررہی ہے۔اس دوا کی آزمائش ووہان میں بھی کی جائے گی جہاں سے یہ وائرس پھیلنا شروع ہوا اور ...

چین میں کورونا وائرس کے علاج کی انسانی آزمائش شروع

گوگل کورونا وائرس سے متعلق غلط معلومات روکے، عالمی ادارہ صحت وجود - بدھ 05 فروری 2020

عالمی ادارہ صحت کے سربراہ ٹیڈروس اڈہینوم گبرائسس نے کہا ہے کہ ان کا ادارہ سرچ انجن گوگل کے ساتھ مل کر کورونا وائرس سے متعلق افواہیں اور غلط معلومات روکنے پر کام کر رہا ہے۔میڈیارپورٹس کے مطابق انہوں نے یہ بات ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس میں کہی۔ اس اجلاس میں چین میں کورونا وائرس کی وبا کے حوالے سے سوشل میڈیا کے کردار پر غور کیا گیا۔ گبرائسس کے مطابق ٹویٹر، فیس بک، ٹین سینٹ اور ٹک ٹوک نے اس وبا کے حوالے سے غلط اطلاعات کے پھیلاؤ کو محدود کرنا شروع کر دیا ہے...

گوگل کورونا وائرس سے متعلق غلط معلومات روکے، عالمی ادارہ صحت

چین، کرونا وائرس ، مزید 64ہلاک ، تعداد 425 ہو گئی وجود - منگل 04 فروری 2020

چین میں کرونا وائرس سے مزید 64افراد ہلاک ہو گئے ، ہلاکتوں کی تعداد 425 ہو گئی، 20 ہزار 500 افراد متاثر ہیں۔ ہانگ کانگ میں ایک اور کرونا وائرس کا مریض ہلاک ہو گیا ۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق جان لیوا کروناوائرس کے دنیا بھر میں بڑھتے سائے ، چین میں مزید 64 افراد ہلاک ہو گئے ۔ مجموعی ہلاکتوں کی تعداد 425 ہوگئی جبکہ متاثرین کی تعداد 20 ہزار 500 تک پہنچ گئی۔ہانگ کانگ میں کروناوائرس سے ایک شخص جان کی بازی ہار گیا۔ چین کی اعلی قیادت نے مہلک کرونا وائرس کے پھیلا ئو میں کوتاہیوں ...

چین، کرونا وائرس ، مزید 64ہلاک ، تعداد 425 ہو گئی

کورونا وائرس،چین سے باہر20ممالک میں 100 سے زائد کیسز رپورٹ وجود - پیر 03 فروری 2020

چین کے شہر ووہان سمیت دیگر شہروں کے بعد کورونا وائرس دنیا کے 20 سے زائد ممالک تک پہنچ گیا ہے جہاں 100 سے زائد کیسز رپورٹ ہو چکے ہیں۔غیر ملکی خبر ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق آسٹریلیا میں 10 مریضوں میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوئی جن میں سے اکثر چین کے شہر ووہان یا ہوبے صوبے سے واپس پہنچے ۔کمبوڈیا کی وزارت صحت کا کہنا تھا کہ 60 سالہ شہری کورونا وائرس سے متاثر ہوئے جو ووہان سے آئے ۔ہانگ کانگ میں 13 افراد میں کورونا وائرس کی موجودگی کی رپورٹ دی گئی ۔بھارت میں حکام نے تصدیق کیا کہ ری...

کورونا وائرس،چین سے باہر20ممالک میں 100 سے زائد کیسز رپورٹ

چین،کرونا وائرس سے ہلاکتیں 26ہو گئیں ، 830 متاثر وجود - جمعه 24 جنوری 2020

چین میں کرونا وائرس سے ہلاکتوں کی تعداد بڑھ کر26 ہوگئی جبکہ830 افراد متاثر بھی ہوئے ۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق کوروناوائرس کے باعث سب سے زیادہ متاثر ہونے والے شہر ووہان کے قریب 7شہروں میں ٹرانسپورٹ بند کر دی گئی جب کہ شہریوں کو جھیلوں، دریائوں اور نہروں پر جانے سے روک دیا گیا ۔عالمی ادارہ صحت(ڈبلیو ایچ او)نے اسے ہنگامی صورتحال قرار دیا ہے ۔ حکام نے کہا کہ کرونا وائرس کو عالمی وبا ئوقرار دینا قبل از وقت ہوگا۔ڈبلیو ایچ او نے کہا کہ اس وائرس کے پھیلا پر کڑی نظر رکھی جارہی ...

چین،کرونا وائرس سے ہلاکتیں 26ہو گئیں ، 830 متاثر

چین ، کرونا وائرس بے قابو، ہلاکتیں 17ہو گئیں وجود - جمعرات 23 جنوری 2020

چین کے شہر ووہان سے پھیلنے والا پراسرار کورونا وائرس اب ملک بھر کے دیگر شہروں میں بھی پھیلنے لگا ، چین کے صوبے ہوبائی کے دارلحکومت ووہان میں کورونا وائرس سے 17 افراد ہلاک ہو گئے ہیں جبکہ وائرس سے متاثر ہونے والوں کی تعداد 547 تک پہنچ گئی ۔ غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق چین کے صحت حکام نے وائرس کے پھیلا سے بچنے کے لئے 1 کروڑ افراد پر مشتمل شہر ووہان کو مکمل طور سیل کرنے کی کوششیں شروع کر دی ہیں۔ چین میں ٹرینوں اور بس سروسز کا نظام معطل ہونے کے باعث قمری سال کی تعطیلات گزارن...

چین ، کرونا وائرس بے قابو، ہلاکتیں 17ہو گئیں

امریکی حکومت کا ای سگریٹ کے مختلف ذائقوں پر جزوی پابندی کا اعلان وجود - هفته 04 جنوری 2020

امریکی حکومت نے ای سگریٹ کے سب سے مقبول دو ذائقوں پر پابندی عائد کر دی ہے۔امریکی میڈیا رپورٹس میں بتایاگیاکہ حکومتی اعلان کے مطابق اس پابندی کا مقصد نوجوان نسل کی صحت کا تحفظ ہے۔ امریکا میں ای سیگرٹ کے دو مقبول ذائقوں جول اور انجوائے پر پابندی عائد کرنے کا معاملہ گزشتہ برس ستمبر سے وائٹ ہاس میں زیر غور تھا۔ امریکی خوراک و ادویات کے قومی ادارے ایف ڈی اے کے مطابق ای سیگرٹ کی کارٹریج میں تمباکو یا مینتھول کے علاوہ کسی اور شے کی آمیزش کو غیر قانونی قرار دے دیا گیا ہے۔ جول ذائقے ک...

امریکی حکومت کا ای سگریٹ کے مختلف ذائقوں پر جزوی پابندی کا اعلان

سائنسدانوں نے ذیابیطس کی وجہ اور نجات کا طریقہ دریافت کرلیا وجود - هفته 04 جنوری 2020

ذیابیطس ٹائپ ٹو دنیا بھر میں وبا کی طرح پھیلنے والا مرض ہے جو دیگر طبی پیچیدگیوں کا خطرہ بھی بڑھاتا ہے، جس کے بارے میں ڈاکٹر حالیہ برسوں میں کافی کچھ جان چکے ہیں مگر اب پہلی بار سائنسدانوں نے اس مرض کے پھیلنے کے عمل کا مشاہدہ بھی کرلیا ہے۔میڈیارپورٹس کے مطابق طبی جریدے جرنل سیل میٹابولزم میں شائع تحقیق میں بتایا گیا کہ ذیابیطس ٹائپ ٹو اس وقت جسم میں نمودار ہوتا ہے جب جگر سے اضافی چربی چھلک کر لبلبے میں پہنچ جاتی ہے۔برطانیہ کی نیوکیسل یونیورسٹی سے تعلق رکھنے والے روئے ٹیلر اور...

سائنسدانوں نے ذیابیطس کی وجہ اور نجات کا طریقہ دریافت کرلیا

افغانستان میں فضائی آلودگی سے ایک ہفتے کے دوران 17 افراد جاں بحق وجود - جمعرات 02 جنوری 2020

افغانستان میں بدترین فضائی آلودگی کے باعث17 افراد جاں بحق جبکہ آٹھ ہزار سے زائد شہری متاثر ہوئے۔غیرملکی نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق وزارت صحت کے ایک عہدیدار فدا محمد پیکان نے میڈیا کو بتایا کہ افغانستان بدترین فضائی آلودگی کی لپیٹ میں ہے اور ایک ہفتے میں کم ازکم 17 افراد جاں بحق ہوگئے ۔ان کا کہنا تھا کہ فضائی آلودگی سے متاثر 8 ہزار سے زائد مریضوں میں سے اکثریت کو سانس لینے میں دشواری کاسامنا ہے اور اس کے علاج کے لیے ہسپتالوں میں پہنچے جہاں ایک ہفتے کے دوران اموات ہوئیں۔...

افغانستان میں فضائی آلودگی سے ایک ہفتے کے دوران 17 افراد جاں بحق

انوکھی بیماری نے 15 سالہ چینی بچی کو بوڑھی خاتون بنا دیا وجود - هفته 07 دسمبر 2019

شمال مشرقی چین میں ہیشان کاؤنٹی کی رہائشی 15 سالہ نوجوان لڑکی ایک ایسی بیماری میں مبتلا ہے کہ وہ دکھنے میں ایک بوڑھی خاتون کی طرح نظر آتی ہے اور اس بیماری نے اس کے روز مرہ معاملات زندگی کو بری طرح متاثر کر کے رکھ دیا ہے۔ میڈیارپورٹس کے مطابق 15سالہ چینی لڑکی ایک سال کی عمر سے ایک ایسی بیماری میں مبتلا ہے جس کا نام ہٹچنسن گلفورڈ پروگیرہ سینڈروم ہے اور یہ بیماری بہت ہی کم لوگوں میں پائی جاتی ہے۔چینی میڈیا کے مطابق شیاؤ فینگ نامی لڑکی کی بیماری کی وجہ سے اس کے چہرے پر جھریاں ...

انوکھی بیماری نے 15 سالہ چینی بچی کو بوڑھی خاتون بنا دیا

مدینہ منورہ کو دنیا کا صحت کے شعبہ میں ترقی یافتہ شہر بنانے کی تیاریاں وجود - جمعه 29 نومبر 2019

مدینہ منورہ کو صحت کے شعبہ میں دنیا کا ترقی یافتہ شہر بنانے کی تیاریاں شروع کر دی گئیں۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق مدینہ میں ترقی یافتہ شہروں کی سپریم سپر وائزری کمیٹی کی دعوت پر عالمی ادارہ صحت کی ٹیم 10اور 11دسمبر کو شہرکا دورہ کرے گی۔اس موقع پر کمیٹی کی جانب سے ایک ورکشاپ کا اہتمام کیا جا رہا ہے ۔ شہر کے مختلف ادارے مدینہ منورہ کو یہ حیثیت دلانے کے لئے اس پروگرام میں حصہ لیں گے ۔عالمی ادارہ صحت کے مطابق صحت کے شعبہ میں ترقی یافتہ شہر انسان کے لیے جسمانی اور معاشرتی ماح...

مدینہ منورہ کو دنیا کا صحت کے شعبہ میں ترقی یافتہ شہر بنانے کی تیاریاں

جرمنی ، ہر چار میں سے ایک بچہ ذہنی بیماری میں مبتلاہے،ہیلتھ انشورنس کمپنی وجود - منگل 26 نومبر 2019

جرمنی کی ہیلتھ انشورنس کمپنی ڈی اے نے کہاہے کہ ملک میں ہر چار میں سے ایک بچہ ذہنی بیماری میں مبتلاہے۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق گزشتہ روز جرمنی کی ہیلتھ انشورنس کمپنی ڈی اے کے نے مریضوں کے ڈیٹا پر مشتمل ایک نئی رپورٹ جاری کی ، جس کے مطابق ہر چار میں سے ایک بچہ کسی نہ کسی ذہنی بیماری میں مبتلا ہے۔ یہ رپورٹ ان آٹھ لاکھ بچوں کا ڈیٹا جمع کرتے ہوئے مرتب کی گئی ہے، جنہوں نے 2016 سے 2017 کے درمیان اس کمپنی کے پاس ہیلتھ انشورنس کروائی تھی۔ جرمنی میں بچوں کی عام بیماریوں کی فہرست ...

جرمنی ، ہر چار میں سے ایک بچہ ذہنی بیماری میں مبتلاہے،ہیلتھ انشورنس کمپنی

مصنوعی گردوں کے ذریعے ڈائیلاسز کے عمل میں کامیاب پیشرفت وجود - منگل 12 نومبر 2019

گردوں کے امراض کے دوران ڈائیلاسز کرانا مریض کے لیے زیادہ تکلیف دہ ثابت ہوتا ہے تاہم لگتا ہے کہ مستقبل میں اس سے نجات مل جائے گی۔میڈیارپورٹس کے مطابق سائنسدانوں کا کہنا تھا کہ آٹومیٹڈ وئیرایبل مصنوعی گردے سے کڈنی فیلیئر کے مریضوں کے خون میں سے زہریلے مواد کو موثر طریقے سے نکالنے میں مدد مل سکے گی۔سائنسدانوں کی جانب سے اس مصنوعی گردے والی ڈیوائس کی ڈائیلاسز کے لیے آزمائش کی جارہی ہے جس سے تھراپی کے کئی گھنٹوں اور بڑی مشینوں کے استعمال سے نجات مل جائے گی۔اس ٹیکنالوجی میں ڈائیلاس...

مصنوعی گردوں کے ذریعے ڈائیلاسز کے عمل میں کامیاب پیشرفت

روزانہ 7 سے 8 منٹ کی دوڑ قبل از وقت موت سے بچا سکتی ہے،نئی تحقیق وجود - پیر 11 نومبر 2019

آسٹریلیا کی مشہور وکٹوریہ یونیورسٹی نے نئی تحقیق میں بتایا ہے کہ ہفتے میں ایک مرتبہ 50 منٹ کی دوڑ انسان کو قبل از وقت موت سے بچا سکتی ہے۔غیر ملکی خبر رساں ادارے رنرز ورلڈ کے مطابق ملبورن کی وکٹوریا یونیورسٹی کی تحقیق میں 14 تحقیق کی معلومات کو اکٹھا کیا گیا جس میں 23 لاکھ سے زائد لوگ شامل تھے۔ ماہرین نے نتیجہ اخذ کیا کہ دوڑ صحت کیلئے بے حد مفید ہے اور یہ انسان کے قبل از وقت مرنے کے امکانات یا خطرات کو 27 فیصد تک کم کر سکتی ہے۔خبر رساں ادارے کے مطابق روزانہ 7 سے 8 منٹ کی دوڑ ...

روزانہ 7 سے 8 منٹ کی دوڑ قبل از وقت موت سے بچا سکتی ہے،نئی تحقیق

بے خوابی فالج اور ہارٹ اٹیک کا خطرہ بڑھا دیتی ہے، نئی تحقیق وجود - هفته 09 نومبر 2019

بے خوابی فالج اور ہارٹ اٹیک کا خطرہ بڑھا دیتی ہے، میڈیارپورٹس کے مطابق یہ بات چین میں ہونے والی ایک طبی تحقیق میں سامنے آئی۔پیکنگ یونیورسٹی کی تحقیق میں دریافت کیا گیا کہ جن لوگوں کو بے خوابی کی شکایت ہوتی ہے، ان میں جان لیوا امراض کا خطرہ بھی نمایاں حد تک بڑھ جاتا ہے۔اس تحقیق کے دوران 5 لاکھ کے قریب افراد کا جائزہ لینے کے بعد دریافت کیا گیا کہ بے خوابی کے شکار افراد میں ہارٹ اٹیک یا فالج جیسے جان لیوا امراض کا خطرہ 20 فیصد تک بڑھ جاتا ہے۔تحقیقی ٹیم میں شامل لی منگ لی نے بتای...

بے خوابی فالج اور ہارٹ اٹیک کا خطرہ بڑھا دیتی ہے، نئی تحقیق

تمباکو نوشی سے ڈپریشن میں اضافہ وجود - هفته 09 نومبر 2019

ایک تحقیق میں کہاگیا ہے کہ تمباکو نوشی کرنے والے افراد میں ڈپریشن اور دماغی بیماری (شیزوفرینیا) کے خطرات میں بھی اضافہ ہو جاتا ہے۔برسٹل یونیورسٹی کے ماہرین کے مطابق تمباکو نوشی کرنے والے افراد میں ذہنی امراض کے خطرات بڑھ جاتے ہیں۔تحقیق میں تقریباً ڈیڑھ لاکھ افراد شامل تھے، ماہرین نے بتایا کہ ا بھی یہ بات ثابت نہیں ہوئی کہ تمباکو نوشی ڈپریشن کا باعث بنتی ہے تاہم انہوں نے خبردار کیا ہے کہ تمباکو نوشی کے ڈپریشن کے ساتھ تعلق کے حوالے سے انہیں کافی ثبوت ملے ہیں۔تحقیق کا نتیجہ جنرل...

تمباکو نوشی سے ڈپریشن میں اضافہ

بریسٹ کینسر کی پانچ سال قبل تشخیص کرنے والا بلڈ ٹیسٹ دریافت وجود - بدھ 06 نومبر 2019

چھاتی کا سرطان یا بریسٹ کینسر خواتین میں سب سے عام کینسر ہے اور اکثر اس کی تشخیص اس وقت ہوتی ہے جب صورتحال کافی خراب ہوجاتی ہے۔تاہم اب سائنسدانوں نے ایسا خون کا ٹیسٹ تیار کرنے کا دعویٰ کیا ہے جو بریسٹ کینسر کو کسی قسم کی علامات سے 5 سال قبل ہی پکڑنے میں مدد دے سکتا ہے۔کینسر زدہ خلیات ایسے پروٹین تیار کرتے ہیں جن کو اینٹی جینز (ٹی اے ایز) کہا جاتا ہے جو جسم کو ان کے خلاف اینٹی باڈیز تیار کرنے پر مجبور کرتے ہیں۔میڈیارپورٹس کے مطابق برطانیہ کی ناٹنگھم یونیورسٹی کے محققین نے دریا...

بریسٹ کینسر کی پانچ سال قبل تشخیص کرنے والا بلڈ ٹیسٹ دریافت

بھارتی دنیا میں سب سے چھوٹے دماغ رکھتے ہیں، تحقیق وجود - جمعه 01 نومبر 2019

بھارتی دنیا میں سب سے چھوٹے دماغ رکھتے ہیں، ان کے دماغ اونچائی، چوڑائی اور حجم میں مغربی اور دیگر مشرقی آبادیوں کے مقابلے میں کم ہیں۔بھارتی ٹی وی کے مطابق یہ انکشاف حید ر آباد کے انٹرنیشنل انسٹی ٹیوٹ آف انفارمیشن ٹیکنالوجی (آئی آئی آئی ٹی) کے ایک مطالعے میں کیا گیا ہے۔یہ تحقیق ’’نیورو سائنس انڈیا ‘‘ جریدے میں شائع ہوئی، مطالعے میں کینیڈا کی میک گِل یونیورسٹی کے محقق راگھو مہتا، حیدرآباد کے بین الاقوامی انسٹی ٹیوٹ آف انفارمیشن ٹیکنالوجی کے جیانتھی سواسوامی اور الفن جے ...

بھارتی دنیا میں سب سے چھوٹے دماغ رکھتے ہیں، تحقیق

خود پرست افراد میں ڈپریشن کا خطرہ کم ہوتا ہے،نئی تحقیق وجود - بدھ 30 اکتوبر 2019

اپنی شخصیت تو ہر انسان کو پسند ہوتی ہے مگر کچھ ایسے ہوتے ہیں جو دیوانگی کی حد تک اپنے آپ سے محبت کرتے ہیں۔ایسے افراد کو خود پسند، مغرور، گھمنڈی اور نرگسیت پسند سمیت متعدد الفاظ سے پکارا جاتا ہے اور آپ کے ارگرد بھی ایسے لوگ ہوسکتے ہیں جو گفتگو کے دوران ہر موضوع کو اپنی ذات کی جانب موڑ دیتے ہوں، ایسا رشتے دار جو اپنے سامنے کسی کو کچھ نہ سمجھتا ہو یا دفتری ساتھی جو ہر وقت اپنی ہی تعریفوں کے پل باندھتا رہتا ہو۔مگر ایسے افراد ذہنی طور پر مضبوط ہوتے ہیں اور ان میں ڈپریشن اور ذہنی...

خود پرست افراد میں ڈپریشن کا خطرہ کم ہوتا ہے،نئی تحقیق

خشک میوہ جات کا استعمال کینسر اور قبل از وقت موت سے بچا سکتا ہے، ماہرین وجود - هفته 26 اکتوبر 2019

ماہرین نے کہا ہے کہ روزانہ 20 گرام خشک میوہ جات (جن میں اخروٹ، ہیزل نٹ، اور مونگ پھلی وغیرہ شامل ہیں) کا استعمال کرنے سے انسان میں امراض قلب، کینسر اور بر وقت موت کے خطرات میں کمی ہوتی ہے۔سی این این کی رپورٹ کے مطابق خشک میوہ جات میں ’پولی اَن سیچوریٹڈ فیٹس اور مونو اَن سیچوریٹڈ فیٹس‘ پائے جاتے ہیں جو کہ انسانی جسم میں پائے جانے والے ایل ڈی ایل کولیسٹرول جسے خطرناک چربی بھی کہا جاسکتا ہے اسے کم کرنے میں مدد دیتا ہے جب کہ ان میں ایسی خاصیت بھی پائی جاتی ہے جو کہ جسم میں کولیسٹ...

خشک میوہ جات کا استعمال کینسر اور قبل از وقت موت سے بچا سکتا ہے، ماہرین

پرتگال میں بغیر چہرہ بچے کی پیدائش ،لوگ خوف زدہ وجود - هفته 26 اکتوبر 2019

پرتگال میں ایک خاتون نے ایک ایسے بچے کو جنم دیا ہے جس کا چہر نہیں۔ دوسری طرف خاتون کے معالج ایک ڈاکٹر کو کام سے روک دیا گیا ہے۔ ڈاکٹر پر خاتون کے بطن میں بچے میں موجود خرابی کے بارے میں پتا نہ لگانے اور علاج میں غفلت برتنے کا الزام عاید کیا گیا ہے۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق پرتگال کی میڈیکل ایسوسی ایشن کی انضباطی کمیٹی کے متفقہ فیصلے میں کہاگیا کہ ڈاکٹر کو چھ ماہ کے لیے معطل کیے جانے کے ساتھ اس کے خلاف چھ دیگر شکایات کے تحت بھی قانونی کارروائی کی جارہی ہے۔ ان میں ایک شکا...

پرتگال میں بغیر چہرہ بچے کی پیدائش ،لوگ خوف زدہ

قبل از وقت سفید بال خطرناک بیماری کی علامت ہے، ماہرین وجود - جمعرات 17 اکتوبر 2019

رواں دور میں سفید بال ہونا عمومی بات ہے اور مرد و خواتین دونوں ہی اس بات سے پریشان نظر آتے ہیں،کیونکہ سفید بال بڑھاپے کی نشانی سمجھے جاتے ہیں۔ماہرین صحت قبل از وقت سفید بال امراض قلب کا عندیہ دیتے ہیں۔یونیورسٹی آف قاہرہ کے ماہرین کی جانب سے کی گئی تحقیق میں 545 مردوں میں سفید بالوں اور دل کی بیماری کے خطرے کے درمیان تعلق کا مطالعہ کیا گیا۔نتائج سے معلوم ہوا کہ بالوں کی جتنی سفید رنگت زیادہ تھی اتنا ہی دل کی بیماری کا خطرہ زیادہ دیکھا گیا۔ماہرین نے مردوں کو وارننگ جاری کر تے...

قبل از وقت سفید بال خطرناک بیماری کی علامت ہے، ماہرین

امراض قلب سے بچنے کے لیے سرخ گوشت کا استعمال کم کردیں،برطانوی تحقیق وجود - منگل 01 اکتوبر 2019

ناٹنگھن یونیورسٹی کی تحقیق میں کہاگیا ہے کہ اگر آپ زندگی میں امراض قلب کو خود سے ہمیشہ دور رکھنا اور صحت مند رہنا چاہتے ہیں تو اپنی غذا میں سرخ گوشت کی مقدار میں کمی لے آئیں۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق یہ دعوی برطانیہ میں ہونے والی ایک طبی تحقیق میں سامنے آیا۔ناٹنگھن یونیورسٹی کی تحقیق میں 46 افراد کی خدمات حاصل کی گئیں اور انہیں 12 ہفتوں کے لیے سرخ گوشت کی مقدار میں کمی لانے کی ہدایت کرتے ہوئے اس دورانیے میں ان کے خون کے نمونوں کا کئی بار تجزیہ کیا گیا۔سرخ گوشت کا استعمال...

امراض قلب سے بچنے کے لیے سرخ گوشت کا استعمال کم کردیں،برطانوی تحقیق

لمبی،صحت مند زندگی کا راز، مایوسی کی جگہ امید پیدا کرلیں،نئی تحقیق وجود - جمعه 30 اگست 2019

امریکا کی بوسٹن یونیورسٹی میں کی گئی نئی تحقیق سے معلوم ہوا ہے کہ انسان اگر لمبی اور صحت مند زندگی گزارنا چاہتے ہیں تو مایوسی کی جگہ امید کو اپنے اندر پیدا کرلیں۔درحقیقت مثبت سوچ رکھنے والے افراد میں لمبی زندگی کا امکان زیادہ ہوتا ہے، جو 85 سال تک زندہ رہ سکتے ہیں۔ میڈیارپورٹس کے مطابق یہ بات ایک نئی طبی تحقیق میں سامنے آئی۔تحقیق میں بتایا گیا کہ جو لوگ ذہنی تناؤ کو زیادہ اچھے طریقے سے قابو کرلیتے ہیں، ان کی جسمانی صحت بھی زیادہ بہتر ہوتی ہے۔ایسے افراد زندگی کے مقصد کا تعین ب...

لمبی،صحت مند زندگی کا راز، مایوسی کی جگہ امید پیدا کرلیں،نئی تحقیق

ایک عشرے میں نابالغ لڑکیوں کی شادیوں میں نمایاں کمی ہوئی، یونیسیف وجود - هفته 08 جون 2019

اقوام متحدہ نے کہا ہے کہ دنیا بھر میں بچیوں کی کم عمری میں شادی کے واقعات میں معمولی سی کمی واقع ہوئی ہے۔ اقوام متحدہ کے ادارہ برائے بہبود اطفال، یونیسف کے مطابق گزشتہ دہائی کے دوران18 سال سے کم عمر لڑکیوں کی شادیاں 25 فیصد سے کم ہو کراکیس فیصد ہو گئی۔ اس طرح دنیا بھر میں مجموعی طور پر 765 ملین کم عمر شادی شدہ لوگ ہیں جن میں سے لڑکیوں کی تعداد 85 فیصد ہے۔ لڑکوں کی کم عمری میں شادی کم ہی کی جاتی ہے۔ 20 اور 24 سال کی درمیانی عمر کے تقریبا 115 ملین مرد اپنی شادی کے وقت نابالغ تھ...

ایک عشرے میں نابالغ لڑکیوں کی شادیوں میں نمایاں کمی ہوئی، یونیسیف

جنسی طور پر پھیلنے والی بیماریوں کے انسداد میں پیش رفت نہیں ہوئی،عالمی ادارہ صحت وجود - هفته 08 جون 2019

عالمی ادارہ صحت نے جنسی طور پر پھیلنے والی بیماریوں کے انسداد میں مناسب پیش رفت نہ ہونے پر گہری تشویش کا اظہار کیا ہے اورکہاہے کہ روزانہ کی بنیاد پر دس لاکھ افراد دنیا بھر میں جنسی طور پر منتقل ہونے والی بیماریوں کی لپیٹ میں آتے ہیں،دنیا کی مجموعی آبادی میں اوسطاً پچیس فیصد افراد کو کوئی نہ کوئی ایسی بیماری لاحق ہے۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطاق صحت کے عالمی ادارے نے ہفتے کو جاری کی گئی اپنی ایک رپورٹ میں کہاکہ ایسی بیماریوں میں افزائش کی وجہ ڈیٹنگ ایپس کا زیادہ استعمال ہے۔ یہ...

جنسی طور پر پھیلنے والی بیماریوں کے انسداد میں پیش رفت نہیں ہوئی،عالمی ادارہ صحت

بھارت میں فضائی آلودگی سے سالانہ پانچ سال سے کم عمر ایک لاکھ بچوں کی اموات وجود - جمعرات 06 جون 2019

بھارت کے شہروں اور قصبوں میں زہرآلود فضا سے ہر سال پانچ سال سے کم عمر ایک لاکھ بچے موت کے منہ میں چلے جاتے ہیں۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق اس بات کا انکشاف ماحولیات کے عالمی دن کے موقع پر ایک رپورٹ میں کیا گیا۔یہ رپورٹ مرکز برائے سائنس اور ماحول (سی ایس ای) نے تیار کی ہے۔اس میں بتایا گیا ہے کہ بھارت کے پانی مہیا کرنے کے 86 فی صد ادارے خطرناک حد تک آلودہ ہیں۔اس نے ملک کی قابل تجدید توانائی کے لیے پیش رفت کو بھی مایوس کن قرار دیا ہے۔بھارت اپنے شہروں میں آلودگی کے مسئلے سے نمٹنے میں ...

بھارت میں فضائی آلودگی سے سالانہ پانچ سال سے کم عمر ایک لاکھ بچوں کی اموات

فضا میں کاربن اخراج کی بڑھتی مقدار سے غذاؤں کی تاثیر تبدیل ہونے لگی، تحقیق وجود - پیر 25 فروری 2019

حال ہی میں کی جانے والی ایک تحقیق کے مطابق ہماری فضا میں کاربن اخراج کی بڑھتی ہوئی مقدار ہماری غذاؤں کی تاثیر کو تبدیل کر رہی ہے۔ماہرین کا کہنا ہے کہ صحتمند غذائیں جیسے پھل اور سبزیاں اپنی غذائیت کھو رہی ہیں اور ان کا صحت پر ممکنہ اثر جنک فوڈ جیسا ہوسکتا ہے۔چونکہ پودوں کو افزائش کے لیے کاربن ڈائی آکسائیڈ کی ضرورت ہوتی ہے ، لہٰذاعام طور پر سمجھا جاتا تھا کہ جتنی زیادہ کاربن ڈائی آکسائیڈ ہوگی اتنا ہی زیادہ پودوں کے لیے فائدہ مند ہوگا، تاہم نئی تحقیق میں دیکھا گیا کہ کاربن کی زی...

فضا میں کاربن اخراج کی بڑھتی مقدار سے غذاؤں کی تاثیر تبدیل ہونے لگی، تحقیق

سبز رنگ کی سبزیاں اور پھل پھیپھڑے، سینے اور مادر رحم کے کینسر کے خلاف موثر، تحقیق وجود - هفته 23 فروری 2019

تحقیقاتی رپورٹ میں کہاگیاہے کہ سبز رنگ کی سبزیاں اور پھل پھیپھڑے، سینے اور مادر رحم کے کینسر کے خلاف موثر ثابت ہوتے ہیں۔حالیہ تحقیق کے مطابق لہسن، پیاز، ادرک، ہرے پیازوں کے پتے اور اسی طرح کی ملتی جلتی سبزیاں قولون مستقیمی کینسر کو روکنے میں مدد فراہم کرتی ہیں۔قولون مستقیمی سرطان جسے انگریزی میں کلیکٹرول کینسر کہا جاتا ہے جو آنتوں اور نظام ہاضمہ کے دیگر اعضاء میں ہوتا ہے،اس کینسر کو باؤل اور قولون کینسر بھی کہا جاتا ہے۔یہ کینسر نظام ہاضمہ میں اہم کام سر انجام دینے والے اعضاء ...

سبز رنگ کی سبزیاں اور پھل پھیپھڑے، سینے اور مادر رحم کے کینسر کے خلاف موثر، تحقیق

بلند آہنگ موسیقی کانوں میں زہر گھول سکتی ہے، عالمی ادارہ صحت کی تنبیہ وجود - بدھ 13 فروری 2019

عالمی ادارہ صحت کی طرف سے جاری ایک بیان میں خبر دار کیا گیا ہے کہ اسمارٹ فون انسانی قوت سماعت کے لیے خطرناک بھی ہو سکتا ہے۔میڈیارپورٹس کے مطابق مطابق عالمی ادارہ صحت کی طرف سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا کہ اسمارٹ فون میں موجود 'ساؤنڈ' کا ضرورت سے زیادہ آواز پیدا کرنا یا زیادہ آواز میں 'ایم پی 3' ریکارڈنگ سننا صارفین کی سماعت کی قوت پرمنفی اثرات ڈال سکتی ہے۔ عالمی ادارے کا کہنا تھا کہ اسمارٹ فون استعمال کرنے والے 12 سے 35 سال کی عمر کے 50 فیصد افراد یا ایک ارب 10 کروڑ لوگ زیا...

بلند آہنگ موسیقی کانوں میں زہر گھول سکتی ہے، عالمی ادارہ صحت کی تنبیہ

گرم پانی سے نہا کر موٹاپے سے نجات حاصل کریں، تحقیق وجود - اتوار 03 فروری 2019

برطانوی ماہرین نے جسم کی اضافی چربی کم کرنے کا آسان طریقہ دریافت کرلیاہے، جس کے تحت اب ورزش یا سخت محنت کی ضرورت نہیں بلکہ اس کے لیے نہانا ہوگا۔تفصیلات کے مطابق اضافی وزن یا موٹاپے کا شکار افراد اپنے وزن میں کمی کے لیے سخت ورزش یا ادویات استعمال کرتے ہیں مگر اب انہیں ایسا کرنے کی ضرورت نہیں ہوگی۔برطانیہ کے طبی ماہرین نے جسم کی اضافی چربی ختم کرنے ایسا طریقہ ایجاد کیا جس کے لیے ہاتھ بھی ہلانے یا چہل قدمی کی ضرورت نہیں ہوگی بلکہ نہا کر اسے ختم کیا جاسکے گا۔ برطانوی خبررساں ا...

گرم پانی سے نہا کر موٹاپے سے نجات حاصل کریں، تحقیق

سائنس دانوں کا زندگیاں بچانے والے غذا تیارکرنے کا دعویٰ وجود - جمعه 18 جنوری 2019

سائنس دانوں نے دعویٰ کیا ہے کہ ایک ایسی غذا تیار کر لی گئی ہے جو زندگیاں بچانے کی ضمانت دیتی ہے، جو دس ارب افراد کو میسر ہوگی اور جس کے ماحول کے لیے تباہ کن اثرات بھی نہیں ہیں۔سائنسدان آنے والی دہائیوں میں مزید اربوں افراد کی غذائی ضروریات کو پورا کرنے کا حل تلاش کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔اس کا حل ہماری غذا سے دودھ اور گوشت کو مکمل طور پر نکالنا نہیں ہے، بلکہ اْس رویے میں بڑی تبدیلی لانا ہے جس کے تحت کہ ہم اپنے کھانے کی پلیٹیں بھرتے ہیں لیکن بہ مشکل ختم کر پاتے ہیں۔ غیرملکی ...

سائنس دانوں کا زندگیاں بچانے والے غذا تیارکرنے کا دعویٰ

برطانیہ میں علاج کے بعد کینسر سے بچ جانے والے نوجوانوں میں اضافہ وجود - جمعه 18 جنوری 2019

انگلینڈ میں ہڈیوں اور خون کے کینسر کے شکار نوجوانوں میں صحت یاب ہونے کی شرح میں اضافہ ہوا ہے تاہم ٹین ایج کینسر ٹرسٹ اور پبلک ہیلتھ انگلینڈ کی اس رپورٹ میں لکھا ہے کہ کم آمدنی والے علاقوں میں رہنے والے نوجوانوں کے ان بیماریوں سے بچ جانے کے امکانات کم ہیں۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق رپورٹ میں 2001 اور 2015 کے دوران 13 سے 24 سال کے افراد کے بارے میں اعداد و شمار اکٹھے کیے گئے۔ کینسر نوجوانوں میں کم ہوتا ہے اور 13 سے 24 سال کی عمر کے افراد میں کینسر کے مریضوں کی تعداد کینسر ک...

برطانیہ میں علاج کے بعد کینسر سے بچ جانے والے نوجوانوں میں اضافہ

کم ترین شرح پیدائش،جاپان کی آبادی میں 2018 کے دوران ریکارڈ کمی وجود - بدھ 26 دسمبر 2018

دنیا میں جاپان ایک ایساملک ہے جہاں سب سے زیادہ معمر افراد موجود ہیں، یہی وجہ ہے کہ رواں سال جاپان کی آبادی میں ر یکارڈ کمی دیکھی گئی۔میڈیارپورٹس کے مطابق 2018 میں جاپان کی تاریخ کی کم ترین شرح پیدائش ہوئی جس سے آبادی میں بھی واضح کمی دیکھی گئی۔جاپانی حکومت کی جانب سے جاری اعداد وشمار میں کہا گیا کہ رواں برس آبادی میں زبردست کمی ہوئی ہے۔جاپان کی حکومت نے 2017 میں اعلان کیا تھا کہ 3 سال سے 5 سال کی عمر کے بچوں کی اسکول کی تعلیم اور 2 برس سے کم عمر غریب بچوں کے لیے مجموعی طور پر...

کم ترین شرح پیدائش،جاپان کی آبادی میں 2018 کے دوران ریکارڈ کمی

خبردار!نمک کا زائد استعمال آپ کی جان لے سکتا ہے، ماہرین وجود - هفته 22 دسمبر 2018

برطانوی ماہرین کے مطابق ہر سال تقریباً4000افراد دل کے امراض کے سبب ابدی نیند سو جاتے ہیں۔ اسکی بڑی وجہ کھانے پینے کی اشیاء میں نمک کا زیادہ استعمال کرنا ہے۔ایکشن آن سالٹ نامی مہم کے گروپ چیئرمین پروفیسر گراہم میک گریگرنے برطانیا کے پبلک ہیلتھ ڈپارٹمنٹ پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ گزشتہ دو برسوں میں یہ محکمہ مکمل طور پر ناکام رہا جس کے باعث ہزاروں لوگ طبعی موت سے قبل مر رہے ہیں۔ برطانوی حکومت نے کھانوں میں نمک کی مقدار کی حد 2014 میں مقرر کی تھی۔ اس کے بعد تمام کمپنیوں کو پہلے...

خبردار!نمک کا زائد استعمال آپ کی جان لے سکتا ہے، ماہرین

سوتے وقت موبائل فون قریب رکھنا ذہنی امراض کا سبب بن سکتا ہے وجود - پیر 10 دسمبر 2018

طبی ماہرین نے موبائل فون صارفین کو خبردار کیا ہے کہ سونے سے قبل اپنا موبائل فون خود سے فاصلے پر رکھیں، کیوں کہ خاص طور پر یہ اسمارٹ فونز، معلومات کے تبادلے کیلیے کم فریکوئینسی والے ریڈیو سگنلز استعمال کرتے ہیں، خصوصا اس وقت، جب موبائل فون صارف اسٹریمنگ یا بڑی فائل ڈاؤن لوڈ کررہا ہو۔ایسے میں اس سے جو شعائیں خارج ہوتی ہیں، وہ سرطان، بانجھ پن اور ذہنی امراض کا باعث بن سکتی ہیں، خاص طور پر کم عمر بچوں پر اس کے مضر اثرات بڑوں کی نسبت دو گنا زائد مرتب ہوتے ہیں۔ ماہرین صحت نے اس کے ...

سوتے وقت موبائل فون قریب رکھنا ذہنی امراض کا سبب بن سکتا ہے

طبی ماہرین نے خواتین میں بڑھتے ہوئے چھاتی کے سرطان کی وجہ فضائی آلودگی کو قرار دے دیا وجود - بدھ 28 نومبر 2018

طبی ماہرین نے خواتین میں بڑھتے ہوئے چھاتی کے سرطان کی وجہ فضائی آلودگی کو قرار دے دیا۔یہ بات اسکاٹ لینڈ کی جامعہ یونیورسٹی آف اسٹرلنگ میں ہونے والی تحقیق کے دوران سامنے آئی۔تحقیق کے دوران ماہرین نے تجزیہ کیا کہ روزانہ گھروں سے باہر نکلنے والی خواتین سڑکوں پر چلنے والی گاڑیوں کے دھوئیں سے بہت تیزی کے ساتھ متاثر ہورہی ہیں۔ماہرین نے بڑھتے ہوئے ٹریفک اور گاڑیوں سے نکلنے والے دھوئیں کو فضائی آلودگی کی وجہ بھی قرار دیا اور متنبہ کیا کہ اگر ان معاملات پر قابو نہ پایا گیا تو بہت ساری...

طبی ماہرین نے خواتین میں بڑھتے ہوئے چھاتی کے سرطان کی وجہ فضائی آلودگی کو قرار دے دیا

پاکستانی بچوں میں کینسر کی شرح بڑھنے لگی وجود - جمعه 23 نومبر 2018

دنیا بھر میں ہر سال لاکھوں بچے کینسر کی مختلف اقسام کا شکار ہو رہے ہیں،پاکستان میں بھی اس سال 30 فیصد بچوں کے کیسز فائل ہو چکے ہیں۔ماہرین کے مطابق بچوں کو لاحق ہونے والے سرطان کی اقسام بڑوں سے مختلف ہوتی ہیں، بچے عام طور پر لیوکیمیا (خون اور ہڈیوں کے گودے کا کینسر)، دماغ اور حرام مغز کے ٹیومر، ہڈیوں، آنکھ اور دیگر اعضا کے سرطان میں مبتلا ہوتے ہیں۔لیوکیمیا بچوں میں سرطان کی سب سے عام قسم ہے، اس سے مراد ہڈیوں کے گودے اور خون کا کینسر ہے، کینسر کے مریض 30 فیصد بچے اس مہلک قسم می...

پاکستانی بچوں میں کینسر کی شرح بڑھنے لگی

صبح جلدی بیدار ہونے والی خواتین میں چھاتی کے سرطان کا امکان کم ہوتا ہے، تحقیق وجود - جمعه 16 نومبر 2018

برطانوی ماہرین نے کہاہے کہ صبح جلدی بیدار ہونے والی خواتین میں چھاتی کے سرطان کا امکان کم ہوتا ہے۔تفصیلات کے مطابق برطانیا کی برسٹل یونیورسٹی میں گزشتہ ہفتے ہونے والی تحقیق میں یہ بات سامنے آئی کہ وہ خواتین جو صبح جلدی اٹھنے میں سستی نہیں کرتیں یا انہیں کوئی مشکل پیش نہیں آتی تو ان میں چھاتی کے سرطان کا امکان بہت کم ہوتا ہے۔ماہرین کے مطابق انسانی جسم میں قدرتی گھڑی اور چھاتی کے سرطان کا گہرا تعلق ہے اور تحقیق کے نتائج اچھی صحت میں نیند کی اہمیت کو اجاگر کرتے ہیں۔تحقیقاتی ماہر...

صبح جلدی بیدار ہونے والی خواتین میں چھاتی کے سرطان کا امکان کم ہوتا ہے، تحقیق

پاکستان کی دس فیصد آبادی ٹائپ 2 ذیابیطس کا شکار ہے،طبی ماہرین وجود - جمعرات 15 نومبر 2018

بسیار خوری، ورزش میں کمی اور ذہنی پریشانیاں ذیابیطس لاحق ہونے کی اہم وجوہات ہے، یہ بات آغا خان یونیورسٹی اسپتال میں شعبہ فیملی میڈیسن کے پروفیسر ڈاکٹر یوسف کمال مرزا نے ذیابیطس کے موضوع پر صنوفی پاکستان اور فرانسیسی ثقافتی مرکز کی جانب سے منعقدہ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے بتائی۔ ذیابیطس سے متعلقہ اسباب ، احتیاط اور علاج کی جانب توجہ دلانے کے لیے 14 نومبر کو دنیا بھر میں ذیابیطس کا عالمی دن منایا جاتا ہے۔ سروے کے مطابق پاکستان میں بالغ عمر کے تین کروڑ ترپن لاکھ افراد ذیابیطس کے...

پاکستان کی دس فیصد آبادی ٹائپ 2 ذیابیطس کا شکار ہے،طبی ماہرین

گزشہ پانچ سالوں میں ملک بھر سے 1195247ٹی بی کے رجسٹرڈ مریضوں کا علاج کیا گیا وجود - اتوار 11 نومبر 2018

ملک بھر سے گزشتہ پانچ سالوں کے دور ان تپ دق (ٹی بی) کے1661961 رجسٹرڈمریضوں میں سے 1195247 کا کامیابی سے علاج کیا گیا، وزارت صحت کی دستاویز کے مطابق2013ء میں مجموعی طور پر296743 مریض رجسٹرڈ ہوئے جن میں سے 274812 کا کامیاب علاج کرایا گیا ،جس کی کامیابی کی شرح93% رہی،2014ء میں308213 مریض رجسٹرڈ ہوئے جن میں سے 287045 کا کامیابی علاج کیا گیا،جس کی کامیابی کی شرح93%رہی،2015 ء میں322977مریض رجسٹرڈ ہوئے جن میں سے 301727 کا علاج کیا گیا،جس کی کامیابی کی شرح93 رہی،2016ء میں365131 مریض ...

گزشہ پانچ سالوں میں ملک بھر سے 1195247ٹی بی کے رجسٹرڈ مریضوں کا علاج کیا گیا

بچوں کی اموات میں پاکستان خطرناک ترین ملک قرار، اقوام متحدہ وجود - جمعه 09 نومبر 2018

بچوں کے لیے اقوام متحدہ کے ادارے یونیسیف نے پاکستان کو نومولود بچوں کی اموات کے لحاظ سے دنیا کا سب سے خطرناک ترین ملک قراردے دیا جب کہ محفوط ترین ممالک کی فہرست میں جاپان پہلے نمبر پر ہے۔یونیسیف کی ایک نئی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ پاکستان نومولود بچوں کی اموات کے لحاظ سے دنیا کا سب سے خطرناک ترین ملک ہے جہاں ہر 22 ویں بچے کی پیدائش کے بعد ایک بچے کی موت ہوتی ہے جبکہ پاکستان میں نومولود بچوں کی شرح اموات 46 فیصد تک ہے۔ اس فہرست میں مزید 10 ممالک شامل ہیں جنہیں بچوں کی اموات ...

بچوں کی اموات میں پاکستان خطرناک ترین ملک قرار، اقوام متحدہ

تولیدی صلاحیت میں کمی کے باوجود دنیا کی آبادی میں مسلسل اضافہ ریکارڈ وجود - جمعه 09 نومبر 2018

بچوں کے حقوق کے لیے کام کرنے والی بین الاقوامی تنظیم سیو دی چلڈرن کی تحقیقاتی رپورٹ میں کہاگیا ہے کہ 1950 کے بعد سے دنیا بھر میں مجموعی طور پر اولاد پیدا کرنے کی صلاحیت (فرٹیلیٹی یا تولیدی صلاحیت) گھٹ کر آدھی رہ گئی ہے لیکن اس کے باوجود آبادی میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے۔مذکورہ تحقیق میں 172 ممالک کی صورتحال کا جائزہ لیا گیا جس میں یہ بات سامنے آئی کہ ایک خاتون کی زندگی میں بچوں کی تعداد اوسطاً 2.4 ہوگئی ہے جو 1950میں 4.7 فی خاتون تھی۔دوسری جانب عالمی آبادی سال 1950 میں 2.6 ارب ت...

تولیدی صلاحیت میں کمی کے باوجود دنیا کی آبادی میں مسلسل اضافہ ریکارڈ

رات گئے تک جاگنے والی خواتین میں بریسٹ کینسر کا خطرہ زیادہ ہوتا ہے، تحقیق وجود - جمعرات 08 نومبر 2018

صبح جلد جاگنے والی خواتین کے مقابلے میں رات گئے تک جاگنے والی خواتین میں بریسٹ کینسر کا خطرہ زیادہ ہوتا ہے۔یہ بات برطانیا میں ہونے والی ایک طبی تحقیق میں سامنے آئی ہے۔برسٹل یونیورسٹی کی تحقیق کے دوران 4 لاکھ خواتین کے جاگنے اور سونے کی عادات کا جائزہ لیا گیا اور معلوم ہوا کہ رات گئے تک جاگنے کی عادت بریسٹ کینسر کا خطرہ 48 فیصد تک بڑھا دیتی ہے۔تحقیق میں بھی یہ دریافت کیا گیا کہ جو خواتین 8 گھنٹے سے زیادہ سونے کی عادی ہوتی ہیں، ان میں بھی بریسٹ کینسر کی تشخیص کا خطرہ 20 فیصد تک...

رات گئے تک جاگنے والی خواتین میں بریسٹ کینسر کا خطرہ زیادہ ہوتا ہے، تحقیق

موٹاپے سے سب سے زیادہ متاثرہ ممالک میں پاکستان نوویں نمبر پرآگیا وجود - جمعرات 08 نومبر 2018

موٹاپے سے سب سے زیادہ متاثرہ ممالک میں پاکستان نویں نمبر پرآگیا ہے۔وزن کا بڑھنا نہ صرف ظاہری شخصیت کو تباہ کردیتا ہے بلکہ یہ امراض کی جڑ بھی ثابت ہوتا ہے کیونکہ اس سے ذیابیطس، بلڈپریشر، امراض قلب اور فالج غرض کہ لاتعداد بیماریوں کا خطرہ بھی بڑھ جاتا ہے۔ موٹاپاایک عالمی وبا بن چکا ہے۔ماہرین کے مطابق وزن میں کمی کا کوئی جادوئی حل نہیں بلکہ طرزِ زندگی میں تبدیلی سے ہی اس کا سدباب کیا جاسکتا ہے۔ کچھ طریقے ایسے بھی ہیں جن پر عمل کرکے وزن میں کمی لائی جاسکتی ہے اور سائنس نے بھی ان ...

موٹاپے سے سب سے زیادہ متاثرہ ممالک میں پاکستان نوویں نمبر پرآگیا

کراچی کے شہریوں میں بہرہ پن بڑھنے لگا وجود - جمعرات 08 نومبر 2018

کراچی کے شہریوں میں بہرہ پن بڑھنے لگا، ماہرین کے مطابق شہر کے بے ہنگم ٹریفک کے باعث 45 سال سے زائد عمر کے 80 فیصد لوگ سماعت کے کسی نہ کسی مسئلے کا شکار ہیں۔کراچی میں اس وقت 60 لاکھ سے زائد گاڑیاں سڑکوں پر رواں دواں ہیں،گاڑیوں اور ماحول میں پائے جانے والے اس شور شرابے سے شہری متاثر ہورہے ہیں، ماہرین کے مطابق شہر میں شور کی آلودگی سے قوت سماعت میں کمی، ذہنی دباؤ، چڑا چڑا پن اور دیگر نفسیاتی مسائل تیزی سے جنم لے رہے ہیں۔ نہ صرف یہ بلکہ شور کی آلودگی نیند میں کمی، دل کے امراض ...

کراچی کے شہریوں میں بہرہ پن بڑھنے لگا

مطالعے کی عادت ڈپریشن کو کم کرنے میں مددگار ثابت ہوسکتی ہے، ماہرین وجود - پیر 05 نومبر 2018

ماہرین نے کہا ہے کہ زندگی میں مطالعے کی عادت ڈپریشن کو کم کرنے میں مددگار ثابت ہوسکتی ہے۔آج کل کی مصروف زندگی میں ڈپریشن نہایت ہی عام مرض بن چکا ہے اور ہر دوسرا شخص اس مرض کا شکار ہے۔ یونیورسٹی آف سسکیس میں کی جانے والی ایک تحقیق کے مطابق مطالعہ کرنا دل کی دھڑکن کو کم کرتا ہے جبکہ اعصاب کو پرسکون کرتا ہے جس سے ذہنی تنا ؤمیں کمی واقع ہوتی ہے۔تحقیق میں کہا گیا کہ مطالعہ کسی بھی اور طریقے سے زیادہ 68 فیصد تک ڈپریشن میں کمی کرسکتا ہے۔ماہرین کے مطابق مطالعے کے دوران ڈپریشن کے شکار...

مطالعے کی عادت ڈپریشن کو کم کرنے میں مددگار ثابت ہوسکتی ہے، ماہرین

صوبہ سندھ کا سب سے بڑا طبی منصوبہ اب تک مکمل فعال نہ ہوسکا وجود - پیر 05 نومبر 2018

صوبہ سندھ کا سب سے بڑا طبی منصوبہ اب تک مکمل فعال نہ ہوسکا۔ 600 کڑوڑ کی لاگت سے بننے والا شہید بے نظیر ایکسیڈنٹ اینڈ ٹراما سنٹر کراچی تاحال اہم ترین شعبوں سے محروم ہے 2008 میں سنگ بنیاد رکھنے کے بعد2016 میں نظیر کی سالگرہ کے موقع پر بلاول بھٹو زرداری نے ادھورے منصوبے کا افتتاح کیا تھا۔ تفصیلات کے مطابق شہید بینظیر ایکسیڈنٹ اینڈ ٹراما سنٹر کراچی اب تک مکمل فعال نہیں ہوسکا ،کراچی شہر اور اندرون سندھ سے آنے والے مریضوں کو مکمل طور پر خاطر خواہ طبی سہولیات فراہم نہیں کی جارہی ہے،...

صوبہ سندھ کا سب سے بڑا طبی منصوبہ اب تک مکمل فعال نہ ہوسکا

بین الاقوامی ماہرین نے 31پراسرار ،لاعلاج امراض شناخت کرلیے وجود - جمعرات 18 اکتوبر 2018

تمام تر طبی ترقی کے باوجود اب بھی ترقی یافتہ ممالک میں ایسے مریض موجود ہیں جو قابل ترین ڈاکٹروں کو طبی تشخیص میں کامیابی سے دور رکھتے ہیں۔ اس ضمن میں قائم بین الاقوامی ماہرین کی ایک ٹیم بنائی گئی ہے جسے غیرتشخیص شدہ امراض کا نیٹ ورک یا یو ڈی این کا نام دیا گیا ہے۔2014میں قائم اس نیٹ ورک نے اب تک 31ایسی کیفیات کی وضاحت کی ہے جنہیں لاعلاج اور ناقابلِ تشخیص مرض سمجھا جاتا رہا تھا۔ کئی ناقابلِ حل کیسوں کی وضاحت کے بعد ماہرین مزید بیماریوں پر بھی غور کررہے ہیں۔ اس کی وجہ یہ ہے کہ...

بین الاقوامی ماہرین نے 31پراسرار ،لاعلاج امراض شناخت کرلیے

پاکستان میں 34 فیصدافراد کے ذہنی بیماری میں مبتلا ہونے کا انکشاف وجود - منگل 09 اکتوبر 2018

پاکستان میں چونتیس فیصد افراد نفسیاتی اور ذہنی بیماریوں میں مبتلاء ہیں ،خیبر ٹیچنگ اسپتال کے سائیکاٹرسٹ ڈاکٹر سید محمد سلطان کے مطابق چودہ اور پندرہ سال کے بچوں میں نفسیاتی اور ذہنی بیماریاں زیادہ ہوتی ہیں۔پشاور پریس کلب ورلڈ مینٹل ہیلتھ ڈے کی مناسبت سے نیوز کانفرنس سے خطاب میں ڈاکٹر سلطان محمد کا کہنا تھا کہ پاکستان میں 34 فیصدافراد ذہنی اورنفسیاتی بیماری میں مبتلا ہیں،14 یا 15 سال کے بچوں میں نفسیاتی اور ذہنی بیماریاں زیادہ ہوتی ہیں،چترال میں 46 فیصد خواتین ڈیپریشن کی بیمار...

پاکستان میں 34 فیصدافراد کے ذہنی بیماری میں مبتلا ہونے کا انکشاف

طب کا نوبل انعام کینسر کا نیا طریقہ علاج متعارف کروانے والے سائنسدانوں کے نام وجود - منگل 02 اکتوبر 2018

طب کے شعبے میں امسال نوبل انعام امریکی سائنسدان جیمز ایلسن اور جاپانی محقق ٹاسوکو ہونیو کو دینے کا اعلان کیا گیا ہے۔غیرملکی خبررساں ا دارے کے مطابق سویڈن کے کارولنسکا انسٹیٹیوٹ نے ایک بیان میں کہاکہ ان دونوں سائنسدانوں نے کینسر کے مرض کے خلاف تھراپی کا ایک نیا طریقہ علاج دریافت کیا ہے۔ نوبل جیوری نے اپنے اعلان میں کہا کہ ان دونوں سائنسدانوں کی تحقیق سے کینسر کے خلاف جنگ میں ایک سنگ میل عبور کر لیا گیا ہے۔ نوبل انعام کو طب کی دنیا کا سب سے بڑا انعام خیال کیا جاتا ہے اور رواں ب...

طب کا نوبل انعام کینسر کا نیا طریقہ علاج متعارف کروانے والے سائنسدانوں کے نام

سندھ بھر میں 122 بچے خسرے کے باعث موت کا شکار وجود - منگل 02 اکتوبر 2018

محکمہ صحت کے مطابق سندھ بھر میں رواں برس 290 سے زائدبچے خسرہ سے متاثرہوچکے ہیں جن کا تعلق کراچی،حیدرآباد ،سکھر سمیت دیگراضلاع سے ہے ۔سندھ میں گزشتہ سال 35 بچے خسرہ کے باعث انتقال کر گئے تھے،رواں سال 122 بچوں کی اموات کے بعد محکمہ صحت سندھ نے صوبے میں انسداد خسرہ مہم چلانے کافیصلہ کیا ہے۔ذرائع محکمہ صحت کے مطابق صوبے بھر میں انسداد خسرہ کی مہم 15 سے 27 اکتوبر تک چلائی جائے گی جس کے تحت9 ماہ سے5سال تک کے70لاکھ سے زائدبچوں کو خسرہ کے ٹیکے لگائے جائیں گے۔

سندھ بھر میں 122 بچے خسرے کے باعث موت کا شکار

عدالت کامنرل واٹر کمپنی نیسلے کو 5 سال کا ریکارڈ پیش کرنے کا حکم وجود - اتوار 30 ستمبر 2018

سپریم کورٹ نے منرل واٹر کمپنی نیسلے کو اپنے 5 سال کا ریکارڈ پیش کرنے کا حکم دیتے ہوئے پانی کے نمونوں کی لیبارٹری رپورٹ بھی جلد پیش کرنے کی ہدایت کردی۔چیف جسٹس پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثار کی سربراہی میں بینچ نے سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں زیر زمین پانی نکال کر فروخت کرنے والی کمپنیوں سے متعلق ازخود نوٹس کی سماعت ۔دوران سماعت نیسلے کمپنی کے وکیل اعتزاز احسن کی جانب سے فرانزک آڈیٹر کوکب جمال پر اعتراض کیا گیا۔اس پر چیف جسٹس نے اعتزاز احسن سے مکالمہ کیا کہ کسی بڑی کمپنی کے وکیل ہ...

عدالت کامنرل واٹر کمپنی نیسلے کو 5 سال کا ریکارڈ پیش کرنے کا حکم

پہلی بار چوہوں سے انسان میں ہیپاٹائٹس وائرس منتقلی کا انکشاف وجود - هفته 29 ستمبر 2018

پہلی بار چوہوں سے انسان میں ہیپاٹائٹس وائرس منتقلی کا انکشاف ہوا ۔میڈیا رپورٹ کے مطابق ہانگ کانگ کے رہائشی ایک شخص کے بارے میں یہ انکشاف اس وقت سامنے آیا جب اس نے بیماری کے بعد ڈاکٹروں سے رجوع کیا۔فکرمند طبی ماہرین کے مطابق وہ شخص ہیپاٹائٹس ای کا شکار اس لیے ہوا کیونکہ اس نے چوہے کے فضلے سے آلودہ غذا کو استعمال کیا تھا۔طبی ماہرین کے مطابق یہ انسانی صحت کے لیے انتہائی تشویشناک خبر ہے کیونکہ اس سے ثابت ہوتا ہے کہ چوہے انسانوں میں وائرس منتقل کرسکتے ہیں۔

پہلی بار چوہوں سے انسان میں ہیپاٹائٹس وائرس منتقلی کا انکشاف

آپریشن سے بچوں کی پیدائش کا خطرناک کھیل وجود - منگل 12 جون 2018

حضرت آدم علیہ السلام کی پیدائش مٹی سے ہوئی۔ پہلے ایک پتلا بنایا گیا اور پھر اس میں روح پھونک دی گئی۔ پھر آدم علیہ السلام کی پسلی سے حضرت حواء علیہاالسلام کی پیدائش ہوئی۔ پھر جب دونوں دنیا میں آئے تو ان سے آگے انسانی نسل پھیلی اور بچوں کی پیدائش ایک خاص عمل کے بعد عورت کے رحم سے ہوتی رہی۔ آج سے دس ہزار سال قبل حضرت آدم علیہ السلام سے لے کر آج سے تقریبا چندسال قبل تک بچوں کی پیدائش اسی فطری طریقے سے ہوتی رہی جو ہزاروں سال سے نہ صرف انسانوں بلکہ تمام جانداروں، دوسری مخلوق...

آپریشن سے بچوں کی پیدائش کا خطرناک کھیل

شہد کی مکھی کا شفا بخش زہر وجود - منگل 12 جون 2018

جدید تحقیق سے یہ بات سامنے آئی ہے کہ شہد کی مکھی (APIS)کے ڈنک میں موجود زہر میں شفا بخشی کی صلاحیت ہے۔ اس کے ڈنک سے جوڑوں کا درد، ہڈیوں اور اعصاب کی بیماریاں ختم ہو جاتی ہیں۔شہد کی مکھی کے ڈنک سے اس طریقِ علاج کو ”ایپی تھراپی“ (Apitherapy)کہتے ہیں۔ امریکا میں5لاکھ افراد اعصابی نظام کے اکڑجانے کی بیماری میں مبتلا ہیں یہ بیماری انسان کو معذور بھی کر سکتی ہے امریکی تحقیق کاروں کے مطابق ایک ہزار افراد کو شہد کی مکھی کے ڈنک سے علاج کروانے پر فائدہ ہوا۔ مغربی لندن میں رہنے والے ٹو...

شہد کی مکھی کا شفا بخش زہر

تخمِ بالنگو۔گرمی اور امراض کا دشمن وجود - منگل 12 جون 2018

گرمیوں میں تخمِ بالنگو کھانے سے بہت فائدہ ہوتا ہے۔یہ جسم کی گرمی کو ختم کر کے ٹھنڈک پیداکرتا ہے۔اسے تخمِ ملنگابھی کہتے ہیں۔ا س میں مانع تکسید (Antioxidant)صلاحیت پائی جاتی ہے۔ تخمِ بالنگو میں اومیگا3 وافر مقدار میں ہوتا ہے، یعنی اس میںدیگر غذائی اشیاکی نسبت 60فی صد زیادہ اومیگا3پایا جاتا ہے۔ تخم بالنگو کے پودے کا شمار ان پودوں میں کیا جاتا ہے جن میں چربیلے تیزاب (فیٹی اسیڈ) کی مقدار سب سے زیادہ ہوتی ہے۔یہ ہائی کولیسٹرول سے محفوظ رکھتا اوردماغ کو توانائی بخشتا ہے۔ تخمَ بالنگو ...

تخمِ بالنگو۔گرمی اور امراض کا دشمن

عید اور کھانے میں احتیاط وجود - منگل 12 جون 2018

رمضان المبارک کے بعد جب میٹھی میٹھی عید آتی ہے تو ہر طرف کھلکھلاتے چہروں اور چمکتی مسکراہٹوں کے ساتھ ساتھ کھانے پینے کا بھی اک جوش اُمڈ آتا ہے ۔اور ہو بھی کیوں نہیں۔ یوم عید اللہ تعالیٰ کا تحفہ جو ہے جو پورے مہینے ماہ رمضان کے روزے رکھنے والوں کے لئے اللہ کی طرف سے روزِ انعام ہے ۔ عیدالفطر نام تو ہے میٹھی میٹھی سویوں کا مگر عید الفطر کے پر مسرت موقع پر بھی لوگ زیا دہ تر گوشت کی بنی ہوئی مختلف ڈشز سے لطف اندوز ہوتے نظر آتے ہیں ۔ عید کے دن مہمانوں کی خاطر مدارات ہمارے معاشر...

عید اور کھانے میں احتیاط

گرمی کا علاج ۔۔درخت لگاؤ ؟ وجود - منگل 05 جون 2018

پاکستان کا سب سے بڑا شہر کراچی رواں برس گرمی کی یکے بعد دیگرے آنے والی لہروں کی لپیٹ میں ہے۔شہر والے ایک لہر کے اثرات سے نکلنے نہیں پاتے کہ گرم موسم کی دوسری لہر سر پر کھڑی ہوتی ہے۔ماہرین کا کہنا ہے کہ کراچی میں گرمی کی شدت بڑھنے کی وجہ موسمیاتی تبدیلی ہے، جس کا ایک عنصر درختوں کی کٹائی اور نئے درخت نہ لگائے جانا ہے۔ اس صورتحال میں شہر بھر میں 'درخت لگاؤ مہم کا آغاز ہوا ہے اور سماجی رابطے کی ویب سائٹس پر بھی شہریوں کو ہر گھر کے سامنے ایک درخت یا پودا لگانے کی تجویز دی گئی...

گرمی کا علاج ۔۔درخت لگاؤ ؟

کیا پروٹین سے وزن کم کیا جا سکتا ہے؟ وجود - پیر 04 جون 2018

بیسویں صدی کے آغاز میں آرکٹک میں ایک کھوج کے لیے نکلنے والے محقق الجامر سٹیفنسن نے پانچ سال صرف گوشت کھا کر گزارے۔ اس کا مطلب یہ تھا کہ ان کے کھانے میں 80 فیصد چربی اور 20 فیصد پروٹین تھا۔ 20 سال کے بعد سنہ 1928 میں سٹیفنسن نے تقریباً ایک سال تک یہی تجربہ دوبارہ نیویارک کے بیلویو ہسپتال میں کیا۔ سٹیفنسن نے یہ تجربہ اس لیے کیا کیونکہ وہ ان لوگوں کو غلط ثابت کرنا چاہتے تھے، جو کہتے تھے کہ انسان صرف گوشت کھا کر زندہ نہیں رہ سکتا۔لیکن بدقسمتی سے دونوں ہی تجربوں کے دوران وہ بہت...

کیا پروٹین سے وزن کم کیا جا سکتا ہے؟

پانی ایک عظیم نعمت اور ہماری ذمہ داریاں وجود - بدھ 30 مئی 2018

پانی ایک عظیم قدرتی نعمت ہے جو انسانی زندگی کے لئے سانس کی اہمیت رکھتا ہے، جس طرح سانس کے بنا ہم زندگی کا تصور نہیں کرسکتے ہوبہو پانی کے بنا بھی زندگی کے وجود کا تصور کیا جانا محال ہے، ہم سب جانتے ہیں کہ آب زمزم سے جڑی ایسی ہی ایک کہانی ہے جو ایک بیٹے کے پیاس کی شدت میں ایک ماں کی تڑپ کو دیکھ کر قادر مطلق نے اس عظیم نعمت سے انسانیت کوسرشارکیا ہے، پانی خواہ میلا ہو یا صاف دونوں کی اپنی اہمیت ہے اور دونوں کے طریقئہ استعمال جدا ہیں، صاف پانی کو جہاں ہم نہانے دھونے، اچھی صحت کو ...

پانی ایک عظیم نعمت اور ہماری ذمہ داریاں

بینگن وجود - منگل 29 مئی 2018

یہ برصغیر کی مشہور اور پسندیدہ ترکاری ہے یہ خوبصورت سیاہی مائل رنگت والی سبزی ہے اس کی ایک قسم سفید رنگ میںبھی ہوتی ہے۔ اس کی بہت سی اقسام ہیں لمبا، گول اور قدو قامت میں ایک دوسرے سے بڑا اور چھوٹا ہوتا ہے۔یہ بے حد منافع بخش سبزی ہے سیاہ ہلکے ارغوانی رنگ کا بینگن بھی اکثر دیکھنے میں آتا ہے۔یہ سال میں تین بار کاشت ہوتا ہے اس لیے موسم گرما اور برسات کی سبزی کہلاتا ہے۔ ماہ فروری اور ماہ اکتوبر میں اس کی کاشت کی جاتی ہے ماہ اپریل اور مئی میں بھی کاشت کیا جا سکتا ہے۔ امراض معدہ ک...

بینگن

تمباکو نوشی سے انکار کاعالمی دن وجود - منگل 29 مئی 2018

عالمی ادارہ صحت کے مطابق دنیا بھر میں سالانہ تقریباََ ساٹھ لاکھ افراد تمباکو نوشی سے ہونے والی بیماریوں میں مبتلا ہو کر وفات پا جاتے ہیں ۔ جن میں سے تقریباََ چھ لاکھ سے زیادہ افراد خود تمباکو نوشی نہیں کرتے ہیں بلکہ تمباکو نوشی کے ماحول میں موجود ہونے کے سبب اس کے زہریلے دھوئیں کا شکار ہو جاتے ہیں ۔ تیس مئی کے دن پاکستان سمیت دنیا بھر میں سگریٹ نوشی سے انکار کے عالمی دن " نو ٹو بیکو ڈے " کے طور پر منانے کا اصل مقصد عوام الناس میں سگریٹ نوشی سے انکار کا شعور بیدار کرنا اور سگر...

تمباکو نوشی سے انکار کاعالمی دن

مزاحمتی ٹی بی کی شرح میں بڑھتا ہوا اضافہ وجود - منگل 29 مئی 2018

ٹی بی دنیا کی خطرناک بیماریوں میں سے ایک ہے۔ ٹی بی کے کنٹرول اور خاتمہ کے لئے دنیا کے بہت سے ممالک گرانٹ دیتے ہیں پھر یہ فنڈ ان ممالک کو دیا جاتا ہے جہاں ٹی بی کے مریضوں کی تعداد ذیادہ ہوتی ہے۔ ٹی بی کی ادویات ہر سرکاری و نیم سرکاری ہسپتالوں اور کچھ پرائیویٹ ڈاکٹرز اور ہسپتالوں میں مہیا کی جاتی ہیں۔ اگر ٹی بی کے مریضوں کی تشخیص اور ان کے علاج کا فالو اپ نہ ہو تو ٹی بی کا ایک مریض ایک سال میں دس سے پندرہ تندرست لوگوں کو ٹی بی لگا سکتا ہے۔ اس سے اندازہ لگایا جا سکتا ہے کہ ٹی بی...

مزاحمتی ٹی بی کی شرح میں بڑھتا ہوا اضافہ

کراچی میں درجہ حرارت میں اضافے کاسبب کونوکارپس درخت وجود - پیر 28 مئی 2018

قدرت کا انمول تحفہ ’درخت‘ ہیں۔ زمین کی یہ خوب صورتی، فضا کی فرحت، تازگی اور صفائی، گنگناتی آبشاریں، ٹھنڈے اور میٹھے پانی کے چشمے، دریا، بہتی ندیاں، چاندی اوڑھے ہوئے سفید برف سے ڈھکے پہاڑ، رنگ رنگ کے خوبصورت پھول، میٹھے، لذیذ مختلف النوع پھل، جڑی بوٹیاں اور ان سے بنی ہوئی دوائیاں جو انسانوں کو صحت اور آرام دیتی ہیں۔ کیا کسی نے غور کیا ہے کہ ان تمام نعمتوں کا منبع اور سر چشمہ کیا ہے؟ تو یقینا ًیہ ’’درخت‘‘ ہی ہیں۔ درخت نہ صرف ہمیں آکسیجن فراہم کرتے ہیں، بلکہ ماحولیاتی آلودگ...

کراچی میں درجہ حرارت میں اضافے کاسبب کونوکارپس درخت

اگر بال جھڑ رہے ہیں تو آپ میں اس چیز کی کمی ہے وجود - پیر 28 مئی 2018

جب اچھے بھلے خوبصورت بال خزاں کے سوکھے پتوں کی طرح جھڑنے لگتے ہیں تو اکثر لوگوں کو مارے پریشانی کے سمجھ نہیں آتی کہ کیا کریں اور کدھر جائیں۔ ایسے میں کوئی خاص تیل سر میں رگڑتا ہے تو کوئی مہنگی گولیاں پھانکتا ہے، مگر ان بنیادی اسباب کی جانب کم ہی توجہ کی جاتی ہے جو بال گرنے کی اصل وجہ ہوتے ہیں۔ سائنسی ماہرین کہتے ہیں کہ بالوں کے گرنے کی دو اہم ترین وجوہات تھائیرائڈ ہارمون کی گربڑ اور آئرن کی کمی ہے، اور ان دو مسائل کو حل کر کے بالوں کے گرنے کا مسئلہ بھی حل کیا جا سکتا ہے۔ ت...

اگر بال جھڑ رہے ہیں تو آپ میں اس چیز کی کمی ہے

ماہرِنفسیات بدلنے کی 10 وجوہات وجود - منگل 22 مئی 2018

جسمانی کی طرح ذہنی امراض بھی لاحق ہو جاتے ہیں۔ نفسیاتی امراض کا علاج تھراپی اور ادویات دونوں سے کیا جاتا ہے۔ اگر مرض کی شدت کم ہو تو کوشش کی جاتی ہے کہ ادویات کے بغیر تھراپی کے ذریعے علاج کر لیا جائے۔ بعض افراد کو اپنے ماہر نفسیات یا تھراپسٹ سے شکایات ہوتی ہیں۔ دوران علاج انہیں احساس ہونے لگتا ہے کہ نفسیاتی مسائل کے لیے تھراپی کام نہیں کر رہی۔ نفسیاتی امراض کے لیے تھراپی موثر ہے۔ تھراپی میں گفتگو اور مشاورت ہی کے ذریعے بہت سے لوگ بہتر ہو جاتے ہیں لیکن اس کے لیے ضروری ہے کہ تھ...

ماہرِنفسیات بدلنے کی 10 وجوہات

نرسوں کا یوم عالمی خاموشی سے گزرگیا وجود - منگل 15 مئی 2018

ہر سال کی طرح اس سال بھی پاکستان میں نرسوں کا عالمی یوم خاموشی سے گزر گیا،حکومت اور نجی شعبہٗ صحت میں اس حوالے سے ملک کے طول وعرض میں چند رسمی اور روایتی تقریبات کے علاوہ کچھ ایسا نہیں ہوا،جس سے یہ پتہ چل سکے کہ 71سال گزرنے کے بعد ہمارے ملک کے شعبہٗ صحت میں سرکاری اور نجی سطح پر اس نظر انداز شعبیٗ کی اہمیت کو تسلیم کرلیا ہے،یہ بھی ناقابل تریدد حقیقت ہے کہ آج دنیا میں جہاں کہیں بھی صحت کا منظم نظام موجود ہے،اس کے پیچھے نرسنگ کا ہیلتھ کیئر سٹم موجود ہے بلکہ ترقی یافتہ ممالک می...

نرسوں کا یوم عالمی خاموشی سے گزرگیا

ناریل۔۔۔ ایک صحت بخش پھل وجود - منگل 15 مئی 2018

ناریل بہت فائدوں کا حامل پھل ہے۔یہ بڑی دلچسپ با ت ہے کہ اس کا پودا انسان کی طرح اٹھارہ سال تک بالغ ہو جاتا ہے اور بیس بائیس برس میںپھل دینا شروع کر دیتا ہے ۔یہ پچاس سے ستر برس تک پھل دیتا ہے ۔ اس کے بعد انسا ن کی طرح بوڑھا ہو جاتا ہے۔ ناریل کے افادی پہلو اعصابی توانائی کا مظاہرہ کرنے والوں کے لیے یہ مفید ہے۔ زچگی کے عالم میںجب ماں کا دودھ کم ہو جائے اور بچہ سیر ہو کر دودھ نہ پی سکے تو ایسی صورت حال میںناشتے یا کھانے کے بعد زچہ کو ناریل کی گری کھلائی جائے تو چند دنوں میں دود...

ناریل۔۔۔ ایک صحت بخش پھل

انار کھائیں بھوک لگائیں وجود - منگل 15 مئی 2018

انار ہاضم، معدہ اور جگر کو قوت دینے والا متبرک پھل ہے۔ انار کا جوس، چھلکااور اناردانہ شفائی اثرات سے مالا مال ہیں۔ آج ہم انار جیسے متبرک پھل کا ذکر کریں گے۔ جس کا ذکر قرآن حکیم سورة الرحمٰن میں موجود ہے گویا یہ جنت کا پھل ہے۔ روایات کے مطابق یہ پھل حضرت نوع علیہ السلام کے زمانے میں بھی موجود تھا۔ حضرت محمد مصطفیٰﷺ نے بھی اس پھل کی بڑی تعریف فرمائی ہے۔ اس کے بارے میں تو کہاوت بھی مشہور ہے ” اےک انار سو بیمار“۔ قدیم اطلباءکرام کی مستند ریسرچ کے مطابق اس کا پانی‘ چھلکا اور انا...

انار کھائیں بھوک لگائیں

بڑھتی ہیجانی کیفیت وجود - جمعرات 10 مئی 2018

ہم ایک ایسے معاشرے میں رہتے ہیں جہاں ہم پریشانیوں کے جال میں پھنسے ہوئے ہیں۔ کچھ پریشانیاں ظاہری ہیں اور کچھ پریشانیوں کی کوئی باقاعدہ شکل نہیں ہے۔ یہ پریشانیاں ، روز بروز بڑھتی ہوئی بیماریوں کا بہت بڑا سبب بن رہی ہیں۔ بظاہر ایساہی لگتا ہے کہ یہ بھی ہمارے دشمن کی سازش ہے۔ بظاہر جو پریشانیاں ہیں ان میں سب سے اوّل ہمارے ملک میں بجلی کی دستیابی کا کوئی پیمانہ متعین نہیں اور نا ہی کوئی پوچھنے والا ہے۔ کوئی مرتا ہے تو مرے اور جیتا ہے تو اپنے خرچے پر جئے۔ یہ ہمارا مزاج بنتا جا رہا ...

بڑھتی ہیجانی کیفیت

روزے اور ہماری صحت وجود - منگل 08 مئی 2018

رمضان المبارک کی آمد آمد ہے اور رمضان کے روزے بہت سے صحت اور روحانی فوائد کے حامل ہوتے ہیں ۔ اور رمضان ہمیں موقع فراہم کرتا ہے کہ ہم اللہ تعالیٰ کی عبادت کریں ۔اپنے نفوس اور اجسام کو پاک ا ور صاف رکھیں اور پرہیز گارانہ طرز عمل اپنائیں ۔ ہمارا جسم ایک مشین کی مانند ہے جو خود کار انداز میں ہر وقت اپناکام سر انجام دیتا رہتا ہے لیکن اس مشین کو بھی آرام کی ضرورت ہوتی ہے اور رمضان کے مبارک مہینے میں کم کھانے پینے کے باعث ہمارا جسم آرام کرتا ہے ۔اس کے علاوہ مختلف ماہرین کے مطابق...

روزے اور ہماری صحت

موٹاپا درمیانی عمر کے افراد میں جگر کے لیے بڑا خطرہ وجود - منگل 08 مئی 2018

ایک مطالعے سے پتا چلا ہے کہ برطانیہ میں درمیانی عمر کے ہر آٹھ میں سے ایک فرد کو موٹاپے کی وجہ سے جگر کے امراض کا سامنا ہے۔بائیو بینک ریسرچ پروجیکٹ میں تقریبا تین ہزار افراد کے سکین سے پتہ چلا ہے کہ تقریبا 12 فیصد افراد کے جگر یا لیور کا سائز بڑھا ہوا اور ان میں چربی موجود تھی۔برٹش لیور ٹرسٹ کا کہنا ہے کہ یہ نتائج 'بہت تشویشناک ہیں' اور یہ 'خطرے کی گھنٹی' ہے کیونکہ ایسی صورت حال سے جگر سخت اور ناکام ہوسکتا ہے اور موت واقع ہوسکتی ہے۔ہیپاٹولوجسٹ کا کہنا ہے کہ چربی دار جگر کی بی...

موٹاپا درمیانی عمر کے افراد میں جگر کے لیے بڑا خطرہ

نمونیا وجود - منگل 24 اپریل 2018

نمونیا پھیپھڑوں کی خطرناک بیماری ہے۔ عام طور پر بچے اور عمر رسیدہ افراد اس بیماری کا شکار ہوتے ہیں۔ یہ فنگس ،بیکٹریا اور وائرس کے سبب پھیلتا ہے۔ پاکستان میں ہر سال 80 ہزار سے زائد بچے نمونیا کا شکار ہو کر انتقال کر جاتے ہیں۔ نمونیا کے خطرے کی زد میں فالج‘ کینسر‘ شوگر اور ایڈز کا شکار مریض زیادہ آتے ہیں۔ اس کے ساتھ تمباکو نوشی‘ شراب نوشی اور منشیات کا استعمال کرنے والے افراد بھی بڑھاپے میں اس کا شکار ہو جاتے ہیں۔ ایک محتاط اندازے کے مطابق دنیا بھر میں ہر سال 5 لاکھ عمر رسیدہ ...

نمونیا

وٹامن ڈ ی وجود - منگل 24 اپریل 2018

انسانی جسم میں مختلف اقسام کے وٹامنز کام کر رہے ہیں جن میں سے ایک وٹامن ڈی بھی ہے جو ایک Fat-Soluble Vitaminsہے ۔ یہ انسانی غذا میں ہوتا ہے اور آنتوں کے ذریعے جسم میں داخل ہوتا ہے ۔ وٹامن ڈی آنتوں سے کیلشیم اور فاسفورس حاصل کرنے میں مدد کرنے کے ساتھ ساتھ پیرا تھائی رائیڈ غدودوں کو روکتا ہے جو ہڈیوں سے کیلشیم جذب کرتا ہے ۔ وٹامن ڈی خون میں کیلشیم اور فاسفورس کو تناسب میں رکھتا ہے ۔ ماہرین وٹامن ڈی کو ہڈیوں کو مضبوط، صحت مند ساخت اور سائز دینے والا کارخانہ بھی کہتے ہیں کیونکہ...

وٹامن ڈ ی

نیم۔۔ نہایت کارآمد درخت وجود - هفته 21 اپریل 2018

نیم ایک گھنا سایہ دار اور نہایت کار آمد درخت ہے۔ اردو لغت میں نیم بمعنی آدھا، نصف بھی آیا ہے اور اس لفظ سے اہل ادب و زبان نے بہت سے مرکب الفاظ، تراکیب، اصلاحات اور محاورے وضع کیے ہیں۔ مثلاً نیم آستیں، نیم اشارہ، نیم وا، نیم بسمل، نیم جاں، نیم رضا، نیم کش، نیم ملا خطرہ ایمان، نیم حکیم خطرہ جان وغیرہ۔ یہ تحریر اس نیم کے حوالے سے ہے جو ایک سایہ دار اور مفید درخت ہے۔ یہ خوبصورت، مشہور اور سدا بہار درخت ہر جگہ گلی کوچوں، پارکوں، شاہراہوں اور گھروں کے آنگنوں میں اپنی بہار دکھا...

نیم۔۔ نہایت کارآمد درخت

موٹاپے سے بچیں وجود - هفته 21 اپریل 2018

عام طور پر خیال کیا جاتا ہے کہ صرف زیادہ کھانا،ہوٹل کے کھانے اور فاسٹ فوڈز ہی موٹاپے کا باعث بنتے ہیں لیکن ایک نئی تحقیق میں خبردار کیا گیا ہے کہ جس فضا میں آپ سانس لیتے ہیں اس کی آلودگی اور اس میں موجود زہریلے مادے بھی جسم میں داخل ہو کر موٹاپے کا باعث بن سکتے ہیں۔ جس فضا میں انسان سانس لے رہا ہو اس میں موجود ذرات سانس کی نالی کے ذریعے جسم میں داخل ہو کر جلن اور بد ہضمی پیدا کرتے ہیں اور اس سے انسانی جسم پھولنے لگتا ہے۔تحقیق کاروں کے مطابق ٹریفک اور سگریٹ کا دھواں اس آلود...

موٹاپے سے بچیں

ماں اور بچہ وجود - هفته 21 اپریل 2018

آج کل کے والدین کو اپنے بچوں کی پرورش کے سلسلے میں کل کے والدین سے زیادہ پریشانیوں اور اُلجھنوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔آج کی دنیا گزشتہ دور سے بے حد مختلف ہو چکی ہے۔ والدین کی ذمہ داریوں میں اس لیے اضافہ ہو گیا ہے کہ بچہ باہرکے اثرات قبول کر رہا ہے اور اس کی سماجی ،نفسیاتی اور جسمانی صحت پر باہری ماحول کے اثرات مرتب ہونے لگے ہیں۔ بچوں کی نگہداشت، ان کی پرورش اور ان کی صحت کے ہر پہلو کا جائزہ لینا کس طرح ممکن ہے اور کن اہم چیزوں کو مدِ نظر رکھ کر مائیں اپنے بچوں کو بہتر طور پ...

ماں اور بچہ

ہمارے بال کیا کرتے ہیں؟ وجود - بدھ 18 اپریل 2018

بال کا بنیادی کام حفاظت کرنا ہے، اگر یہ حفاظت محدود ہے۔ مثلاًسر کے بال اسے چوٹ اور سورج کی شعاعوں سے بچاتے ہیں۔ بھنویں اور پلکیں بیرونی ذرات سے آنکھوں کی حفاظت کرتی ہیں۔ ناک کے اندر بال اور بیرونی کان کی نالی میں موجود بال ان اعضا کو کیڑوں مکوڑوں اور گردو غبار سے بچاتے ہیں۔ بال جسم کے درجہ حرارت کو قابو میں رکھنے میں بھی اہم کردار ادا کرتے ہیں اور چھونے کی حس کے طور پر بھی کام کرتے ہیں۔ پیدائش ہی سے بچے کے سر پر نرم اور ملائم بال ہوتے ہیں جو کہ پیدائش کے کئی مہینوں کے بعد جھ...

ہمارے بال کیا کرتے ہیں؟

نگلیریا فائولیری (دماغ کھانے والاامیبا) وجود - منگل 17 اپریل 2018

نگلیریا فائولیری Naegleria Fowleri جسے دماغ کھانے والا امیبا (Brain Eating Amoeba) بھی کہتے ہیں ایک ایسا یک خلیاتی (Unicellular) امیباہے جو صرف آلودہ پانی میں پرورش پاتا ہے اور یہ جھیلوں ، تالابوں ، چشموں ، سوئمنگ پولز اور نلکوں کے پانی میں پائے جاتے ہیں جہاں یہ جرثومہ کائی (Algae) اور مختلف جراثیموں پر گزارہ کرتے ہیں یہ جرثومہ نرم مرطوب مٹی اور تازہ پانی طفیلی ہے اور موسم گرما میں درجہ حرارت کے اضافے کے ساتھ ساتھ ان کی افزائش کی رفتار بھی تیز ہو جاتی ہے ۔ نگلیریا فائولیر...

نگلیریا فائولیری (دماغ کھانے والاامیبا)

الزائمر یادداشت کو متاثر کرنے والامرض وجود - منگل 17 اپریل 2018

الزائمر ڈیمنشیا کی بہت عام قسم ہے تا ہم اسے شدید امراض میں شمار کیا جاتا ہے۔ الزائمر کا سب سے پہلے ذکر جرمن سائیکاٹرسٹ اور نیوروفزیالوجسٹ ایلو ٹس الزائمر نے 1906 میں کیا جس کے نام پر اس بیماری کو الزائمر کہتے ہیں۔ الزائمر عام طور پر 65 سے زائد العمر افراد پر اثر انداز ہوتا ہے تا ہم نو جوانوں کو بھی اس میں مبتلا ہوتے دیکھا گیا ہے۔ خاص طور پر وہ لوگ جو ڈاوٴن سینڈرم میں مبتلا ہوتے ہیں ایک اندازے کے مطابق پوری دنیا میں 26 ملین افراد اس موذی مرض میں مبتلا ہیں بہت سی مشہور شخصیات ا...

الزائمر یادداشت کو متاثر کرنے والامرض

ذہنی دباوٴ میں دماغ کا کردار وجود - منگل 17 اپریل 2018

ایک عام ذہنی معیار رکھنے والے فرد کے لئے یہ سائنسی حقیقت ہضم کرانا نسبتاَ َد شوار امر ہے کہ اس کا اپنی بیوی کی طرف محبت سے دیکھنا خود اس کے جسم میں کیسی کیسی کیمیائی تبدیلیاں واقع کردیتا ہے، جب کہ خود اس نے سوائے ایک فطری جذبے کے کچھ بھی محسوس نہیں کیا۔ لیکن سائنسدان کہتے ہیں کہ کسی بھی قسم کا جذبہ اوراحساس جسم میں کئی طرح کی سرگرمیاں شروع کرسکتا ہے اور جذباتی حالت کے اعتبار سے انسانی دماغ پچاس سے بھی زیادہ کیمیائی مرکبات نہیں نیورو پیپٹائڈز کہتے ہیں، پیدا کرسکتا ہے۔ اس کی سب...

ذہنی دباوٴ میں دماغ کا کردار

غصہ کیوں آتا ہے؟ وجود - منگل 17 اپریل 2018

ایک ماہر نفسیات کا دعویٰ ہے کہ جدید طرز زندگی جہاں ہماری بنیادی ضرورتوں کو پورا کرنے میں کامیاب ہوئی ہے، وہیں بدلے میں، ہمیں بے صبرا اور غصہ کرنے والا بنا رہی ہے۔ برطانیا میں لنکاشائر سے تعلق رکھنے والی نفسیات کی پروفیسر سینڈی مان کہتی ہیں کہ 'جارحیت جو کبھی ہماری بقا کے لیے ضروری تھی اس کا ہمارے دماغ کیساتھ آج بھی ربط موجود ہے، جو کبھی بھی غلط نشانہ چن لیتا ہے، جب کہ اس کی وجہ موجود نہیں ہوتی۔' ڈاکٹر مان ایک ڈائجسٹ میں لکھتی ہیں کہ 'کبھی انسان کی توانائیاں سرپر چھت قائم رکھ...

غصہ کیوں آتا ہے؟

اشیائے خوردنی کی خریداری وجود - منگل 17 اپریل 2018

کھانے پینے کی چیزوں کی خریداری روزمرہ کا معمول ہے۔ اگر یہ خریداری محتاط طریقے سے کی جائے تو اس سے نہ صرف روپے پیسے اور وقت کی بچت ہوتی ہے بلکہ اس سے جسمانی اور ذہنی صحت پر بھی اچھا اثر پڑتا ہے۔ اچھی خریداری کا یہ معیار نہیں کہ جو چیزیں سستے بھائو مل سکتی ہیں۔ ان کو مہنگے داموں خریدا جائے یا اپنی ضرورت سے زیادہ چیزیں خریدی جائیں، بلکہ کھانے پینے کی ایسی اشیا کا خریدنا بہتر ہے جو غذائی اجزا سے بھرپور ہوں اور اہل خانہ کی پسند و ناپسند اور ماہانہ آمدنی کے مطابق ہوں۔ اشیائے خوردن...

اشیائے خوردنی کی خریداری

پیدائش کے بعد، ا سکول سے پہلے وجود - منگل 17 اپریل 2018

نومولود بے حد بے کس اور مجبور دکھائی دیتا ہے اور اس کی بہت سی حرکات بے مقصد معلوم ہوتی ہیں۔ لیکن فوراً ہی وہ ماں کے بطن سے باہر کی دنیا سے مطابقت پیدا کرکے زندگی پر اپنی گرفت مضبوط کر لیتا ہے۔ بہت جلد اس کی حرکات و افعال میں شعور اور سلیقہ آ جاتا ہے۔ اور تھوڑے ہی دنوں میں بلکہ گھنٹوں کے اندر اندر وہ یکتا شخصی خصوصیات کا اظہار کرنے لگتا ہے۔ ایک یا دو سال کے اندر وہ اپنے ساتھیوں کے ساتھ مستحکم باہمی رشتہ قائم کر لیتا ہے۔ وہ شیر خوارگی کے زمانے ہی میں اپنے اندر جذبات کا سیلاب ا...

پیدائش کے بعد، ا سکول سے پہلے

صحت کے بارے میں والدین کے رویے وجود - منگل 17 اپریل 2018

والدین اپنے بچوں اور نوعمروں کی صحت اور تندرستی کے بارے میں فکر مند رہتے ہیں اور اسی لیے کسی مسئلے کی صورت میں ماہر غذائیت کے پاس بھی لے جاتے ہیں۔ معائنے کے بعد معلوم ہوتا ہے کہ ان کا غذائی نظام متاثر ہے، کیونکہ وہ غیر متوازن غذائیں کھاتے ہیں۔ مزید یہ کہ ان کو گہری اور پْرسکون نیند بھی نہیں ا?تی۔ عام طور پر والدین اپنے بچوں کی کارکردگی سے مطمئن ہوتے ہیں اور فخریہ انداز میں کہتے ہیں کہ ا?ج کل کی پڑھائی بہت مشکل ہے اور ہمارے بچے بہت محنت سے پڑھتے ہیں۔ انہیں اس بات پر بھی فخر ہو...

صحت کے بارے میں والدین کے رویے

لیموں احتیاط سے استعمال کیجیے وجود - منگل 17 اپریل 2018

پکے لیموں کا رنگ زرد اور کچے لیموں کا سبز ہو تا ہے۔ اس کا ذائقہ تر ش ہوتا ہے۔ اس کا مزاج سرد دوسرے درجے اور تر پہلے درجے ہوتا ہے۔ اس کی مقدار خوراک چھ ما شہ لیموں کا رس ہے جبکہ روغن لیموں کی مقدار ایک سے تین قطرے تک ہے۔ لیموں کے فوائد لیموں کے متعدد فوائد ہیں جن میں سے چند کا ذکر ذیل میں کیا جا رہا ہے۔ سر دھونے کے بعد اگر لیموں کا رس ملا کر پانی دوبارہ با لوں میں لگا یا جائے اور تولیے سے خشک کر لیا جائے تو بالوں میں چمک آ جاتی ہے۔ سلاد والی سبزیاں مثلاً پو دینہ وغیرہ اگر مرج...

لیموں احتیاط سے استعمال کیجیے

موٹا پاکرنے والی عادات وجود - هفته 14 اپریل 2018

موٹاپا انسانی جسم کی ایک طبی حالت ہے جس میں انسانی جسم پر چربی چڑھ جاتی ہے اور انسان کا وزن زیادہ ہوکر اس کی توند نکل آتی ہے۔ماہرین موٹاپے کو بیماریوں کی ماں قرار دیتے ہیں۔ذیل میں چند ایسی عادات کا ذکر ہے جنہیں اختیار کرنے سے ہم موٹاپے کا شکار ہوتے ہیں،لہٰذا ان سے دور رہیے اور خود کو سدا سمارٹ رکھیں۔ کیلی فورنیا یونیورسٹی کے محققوں نے تجربات سے دریافت کیا ہے کہ جو مردو زن پانچ گھنٹے سے کم سوئیں ان کے شکم پہ ڈھائی گنا زیادہ چربی چڑھ جاتی ہے۔جب کہ جو آٹھ گھنٹے سے زیادہ نیند ...

موٹا پاکرنے والی عادات

چہرے میں جھریاںپڑنے کی وجوہات وجود - هفته 14 اپریل 2018

چہرے پر جھریاں کیوں پڑتی ہیں اور ان سے کیسے بچا جا سکتا ہے؟ عمر بڑھنے کے ساتھ چہرے پر جھریاں پڑنا ایک قدرتی عمل ہے۔یہ بڑھاپے کی نشانیو ں میں سے ایک ہے،لیکن کچھ لوگوں کے چہرے پر جھریاں وقت سے پہلے نمودار ہو جاتی ہیں۔ لاپرواہی، بُری عادات یا غیر منظم زندگی اس کی وجوہات ہو سکتی ہیں۔ دیکھا گیا ہے کہ لوگ ان جھریوں کو ختم کرنے کے لیے بہت سا پیسہ خرچ کرتے ہیں۔جھریاں جسم کے کھُلے حصوں جیسا کہ ہاتھ،گردن،چہرے ،گال اور پیشانی پر نمودار ہوتی ہیں۔اگر ہم چند باتوں کا خیا ل رکھیں تو ہم اپن...

چہرے میں جھریاںپڑنے کی وجوہات

آٹزم کیا ہے ؟ وجود - منگل 10 اپریل 2018

اگرآپ اپنے بچے کا نام لیں اور وہ بہت کم ردعمل ظاہر کرے، جب دوسرے لوگ اس سے بات کرنے یا اس کے ساتھ کھیلنے کی کوشش کریں تو وہ لاپروا سا رہے۔ وہ دوسروں کی توجہ کا طالب نہ ہو یا بہت کم ہو، اس کا کھلونوں سے کھیلنے کا طریقہ عام بچوں سے ہٹ کر ہو یا کھلونوں میں دلچسپی ہی نہ لے یا ایک ہی کام بار بار کرتا رہے تو ممکن ہے کہ وہ آٹزم (خودتسکینی) کا شکار ہو۔آٹزم کی دیگر علامات میں بول چال میں دشواری، بے ربط الفاظ میں مدعا بیان کرنا، لوگوں سے نظریں چارکرنے سے گریز، کچھ آلات یا اشیا مثلا...

آٹزم کیا ہے ؟

صحت کا عالمی دن وجود - منگل 10 اپریل 2018

اچھی صحت کا حصول ہر شہری کا بنیادی حق ہے اور کسی بھی ملک کی ترقی اور خوشحالی کے لئے اس ملک کا صحت کا شعبہ کلیدی کردار ادا کرتا ہے ۔ اور ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتا ہے اور اس شعبے میں ترقی کئے بغیر کوئی بھی ملک ترقی کی راہوں پر کامزن نہیں ہوسکتا ہے ۔ صحت کی ابتر ہوتی ہوئی صورتحال کے بہت سے عوامل کارفرما ہوتے ہیں مگر غیر معیاری تعلیم ، مستند ڈاکٹرز اور پیرا میڈاکس اسٹاف کی عدم دستیابی اور عوام میں آگاہی اور شعور کی کمی اس کی اہم اور بنیادی وجوہات ہیں ۔ پاکستان میں صحت کے حوالے...

صحت کا عالمی دن

کراچی کی 65فیصد آبادی شور کی آلودگی میں،ڈاکٹر قیصر سجاد وجود - منگل 03 اپریل 2018

کراچی شور کی آلودگی کے حوالے سے خطرناک زون میں ہے۔ لیکن اس خوفناک صورتحال پر نہ تو متعلقہ اداروں نے اب تک کچھ کیا ہے اور نہ ہی حکومت اور انتظامیہ کو اس حوالے سے کوئی تشویش اور فکر ہے ۔ چیف جسٹس آف پاکستان کے حکم کے باوجود شہر میں کچرا اٹھانے کے بجائے متلعقہ منتخب نمائندے بے شرمی سے کچرا نہ اٹھانے کے بہانے ڈھونڈرہے ہیں۔ پاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن کے مرکزی سیکرٹری جنرل اور ای این ٹی کے معروف سرجن ڈاکٹر ایس ایم قیصر سجاد نے ’’روزنامہ جرات‘‘ سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اس وقت شور...

کراچی کی 65فیصد آبادی شور کی آلودگی میں،ڈاکٹر قیصر سجاد