وجود

... loading ...

وجود
وجود
ashaar

جنوبی کوریا میں میزائل اور ریڈار سسٹم کی تنصیب، چین کو تشویش

جمعه 26 فروری 2016 جنوبی کوریا میں میزائل اور ریڈار سسٹم کی تنصیب، چین کو تشویش

THAAD

چین نے امریکا کے طاقتور طویل فاصلاتی ریڈار اور میزائل نظام کی تنصیب پر تشویش کا اظہار کیا ہے اور کہا ہے کہ واشنگٹن اپنے منصوبوں کی وضاحت پیش کرے۔

چینی وزیر خارجہ وانگ یی نے سینٹر فار انٹرنیشنل اینڈ اسٹریٹجک اسٹڈیز کے تھنک ٹینک سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ چین امریکا اور دیگر ممالک کے ساتھ مل کر جزیرہ نما کوریا کو جوہری ہتھیاروں سے پاک کرنے کا عزم رکھتا ہے اور امید ہے کہ اقوام متحدہ شمالی کوریا کے جوہری تجربے کے خلاف قرارداد پر رضامند ہو جائے گی لیکن THAAD میزائل سسٹم اور ساتھ ہی ایکس-بینڈ ریڈار کی جنوبی کوریا میں تنصیب پر اسے بدستور تشویش ہے۔ کیونکہ اس نظام کی رینج صرف جنوبی کوریا تک محدود نہیں ہوگی بلکہ یہ چینی سرحدی حدود میں بھی داخل ہو جائے گی۔

وزیر خارجہ نے کہا کہ یہ سسٹم چین کی سلامتی مفادات کو ٹھیس پہنچائے گا۔ امریکا اس معاملے پر چین کو وضاحت پیش کرے کیونکہ اسے اس معاملے پر خدشات لاحق ہیں۔

واضح رہے کہ امریکا اور جنوبی کوریا نے رواں ماہ کے اوائل میں THAAD سسٹم کی جنوبی کوریا میں تنصیب پر رضامندی ظاہر کی تھی۔ اس کا مقصد شمالی کوریا کی بڑھتی ہوئی عسکری صلاحیت کے خلاف جنوبی کوریا کا دفاع کرنا ہے۔


متعلقہ خبریں


شمالی کوریا کا ایک اور بیلسٹک میزائل کا تجربہ وجود - بدھ 02 اکتوبر 2019

شمالی کوریا نے ایک اور بیلسٹک میزائل کا تجربہ کرلیا ۔میڈیا رپورٹس کے مطابق شمالی کوریا نے بدھ کو اپنے مشرقی ساحل پر میزائل فائر کیا جس نے 450 کلومیٹر کا فاصلہ طے کیا اور زمین سے 910 کلومیٹر کی اونچائی تک گیا۔دوسری جانب جاپانی وزیراعظم شنزو آبے نے اس تجربے کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایک میزائل جاپان کے خصوصی اقتصادی زون (ای ای زیڈ)کے پانیوں میں گرا ، جو ساحل سے 370 کلومیٹر کے فاصلے پرواقعہ ہے ۔انہوں نے کہا کہ شمالی کوریا کا میزائل تجربہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادو...

شمالی کوریا کا ایک اور بیلسٹک میزائل کا تجربہ

شمالی کوریا کا طاقتور جوہری تجربہ، علاقے کے لیے خطرے کی گھنٹی وجود - هفته 10 ستمبر 2016

شمالی کوریا نے جمعے کو اپنا پانچواں اور اب تک کا سب سے بڑا جوہری تجربہ کیا ہے اور کہا ہے کہ وہ بیلسٹک میزائل پر وارہیڈ لگانے کی قابلیت بھی حاصل کر چکا ہے، جس سے حریف پڑوسی ممالک میں خوف کی لہر دوڑ گئی ہے۔ یہ تجربہ شمالی کوریا کے قیام کی 68 ویں سالگرہ کے موقع پر کیا گیا، جس کے بارے میں کہا جا رہا ہے کہ یہ ہیروشیما پر پھینکے گئے ایٹم بم سے زیادہ طاقتور ہے۔ 32 سالہ آمر کم جونگ ان کی زیر قیادت شمالی کوریا نے اقوام متحدہ کی پابندیوں کے باوجود اپنے نیوکلیئر اور میزائل پروگر...

شمالی کوریا کا طاقتور جوہری تجربہ، علاقے کے لیے خطرے کی گھنٹی

علاقائی مسائل خطے میں حل ہونے چاہئیں، دوسرے ممالک کی مداخلت قبول نہیں: چین کا واضح اعلان وجود - هفته 10 ستمبر 2016

چین نے کہا ہے کہ علاقائی مسائل علاقے میں حل ہونے چاہئیں، کسی دوسرے کی مداخلت قبول نہیں۔ یہ بات مشرقی ایشیائی اجلاس کے بعد بحیرۂ جنوبی چین کے معاملے پر سوالات اٹھنے پر چینی نائب وزیر خارجہ لیو چینمن نے کہی۔ گو کہ انہوں نے کسی ملک کا نام نہیں لیا لیکن وہ ایک صحافی کے سوال کا جواب دے رہے تھے جنہوں نے پوچھا تھا کہ جاپان اور امریکا کے رہنماؤں نے بحیرۂ جنوبی چین کے حوالے سے تشویش ظاہر کی ہے۔ جس پر نائب وزیر خارجہ نے کہا کہ "غیر متعلقہ ممالک اس وقت مداخلت کرنا پسند کرتے ہیں جب و...

علاقائی مسائل خطے میں حل ہونے چاہئیں، دوسرے ممالک کی مداخلت قبول نہیں: چین کا واضح اعلان

اب امریکا پر بھی براہ راست حملے کر سکتے ہیں، شمالی کوریا کا دعویٰ وجود - پیر 29 اگست 2016

شمالی کوریا نے اپنے پہلے آبدوز سے داغے گئے میزائل کے کامیاب تجربے کا اعلان کیا ہے، جس کا دعویٰ ہے کہ اب وہ جب چاہے امریکا پر حملہ کر سکتا ہے۔ شمالی کوریا کے رہنما کم جونگ ان نے اسے شمالی کوریا کی "عظیم کامیابی اور فتح" قرار دیا ہے۔ کورین سینٹرل نیوز ایجنسی کے مطابق "کم جونگ ان نے فخر کے ساتھ ان نتائج کو ملاحظہ کیا جو عوامی جمہوریہ کوریا کو ان فوجی طاقتوں میں صف اول میں لا چکا ہے جو نیوکلیئر حملے کی صلاحیت رکھتی ہیں۔ شمالی کوریا کے ساتھ امریکا کے سابق جوہری مذاکرات کار...

اب امریکا پر بھی براہ راست حملے کر سکتے ہیں، شمالی کوریا کا دعویٰ

شمالی کوریا جنگی اشعال نہ پھیلائے، جاپان کی تنبیہ وجود - جمعرات 25 اگست 2016

شمالی کوریا کی جانب سے امریکا-جنوبی کوریا جنگی مشقوں کے بعد نیوکلیئر جنگ کی دھمکیوں اور میزائل تجربات کا سلسلہ شروع کرنے پر جاپان نے خبردار کیا ہے کہ شمالی کوریا جنگی اشتعال پیدا نہ کرے۔ جاپان کے سینئر عہدیدار کیوشی اوڈاوارا نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کو شکایت کی ہے کہ شمالی کوریا کی جانب سے میزائل تجربات اقوام متحدہ کی قراردادوں کی "کھلی خلاف ورزی" ہیں۔ امور خارجہ کے لیے جاپان کے پارلیمانی نائب وزیر اوڈاوارا نے کہا کہ "جاپان شمالی کوریا سے پرزور مطالبہ کرتا ہے کہ...

شمالی کوریا جنگی اشعال نہ پھیلائے، جاپان کی تنبیہ

پاکستان کو دوسرا شمالی کوریا بنانے پر زور وجود - پیر 11 جولائی 2016

پاکستان کے خلاف مختلف سرگرمیوں میں معروف سمجھے جانے والے امریکی قانون ساز ایک مرتبہ پھر پاکستان کے خلاف محاذ بنانے میں مصروف ہو گئے ہیں۔ اور یہ سب کچھ بلاوجہ نہیں ہو رہا۔ امریکا کے پاکستان مخالف قانون سازوں نے کیپٹل ہِل میں ایک مرتبہ پھر جمع ہو کر اپنا پسندیدہ سوال دُہرایا ہے کہ پاکستان امریکا کا دوست ہے یا دشمن؟ امریکی قانون سازوں کی مذکورہ سماعت میں امریکی ایوان نمائندگان کی دہشت گردی، جوہری عدم پھیلاؤ، تجارت اور ایشیا پیسفک سے متعلق ذیلی کمیٹیوں کے ارکان نے مشترکہ طور پ...

پاکستان کو دوسرا شمالی کوریا بنانے پر زور

چین کا نیا دفاعی بجٹ، صرف ساڑھے 7 فیصد کا اضافہ وجود - هفته 05 مارچ 2016

چین سال 2016ء میں اپنے دفاعی بجٹ میں صرف 7 اعشاریہ 6 فیصد کا اضافہ کرے گا۔ اس امر کا انکشاف سنیچر کو پارلیمان میں پیش کی گئی ایک بجٹ رپورٹ میں ہوا جس کے مطابق گزشتہ سالوں کے مقابلے میں دفاع پر رواں سال کہیں کم اخراجات کیے جائیں گے۔ سرکاری خبر رساں ادارے سن ہوا کے مطابق یہ چھ سالوں میں کیا گیا سب سے کم اضافہ ہے، جس کی وجہ معاشی طور پر چند کا سخت مراحل سے گزرنا اور فوجیوں کی تعداد میں کی گئی کمی ہے۔ صدر سی جن پنگ نے گزشتہ ستمبر میں پیپلز لبریشن آرمی میں 3 لاکھ اہلکاروں کی ک...

چین کا نیا دفاعی بجٹ، صرف ساڑھے 7 فیصد کا اضافہ

شمالی کوریا سے لاحق اصل خطرہ وجود - منگل 09 فروری 2016

شمالی کوریا نے طویل فاصلے تک مار کرنے والے میزائل کے نئے نظام پر تجربات کرکے دنیا بالخصوص امریکا کو ایک نئے خطرے سے دوچار کردیا ہے۔ پیانگ یانگ کا کہنا ہے کہ اس کا تجربہ ایک پرامن خلائی پروگرام کا حصہ تھا لیکن مغرب کا کہنا ہے کہ یہ درحقیقت ایک بیلسٹک اور جوہری ہتھیاروں کے پروگرام کی جانچ تھی جسے خلائی پروگرام کا لبادہ اوڑھایا گیا۔ مغربی ذرائع ابلاغ کا کہنا ہے کہ راکٹ نظام سے جو سیٹیلائٹ لانچ کیا ہے وہ بالکل اسی وزن کا ہے جتنا نیوکلیئر وارہیڈ ہوتا ہے۔ پھر حال ہی میں کیے گئے...

شمالی کوریا سے لاحق اصل خطرہ

شمالی کوریا نے خلا میں سیٹیلائٹ بھیج دیا، مغرب کا شدید ردعمل وجود - اتوار 07 فروری 2016

شمالی کوریا نے اعلان کیا ہے کہ اس نے ایک سیٹیلائٹ کامیابی کے ساتھ زمین کے مدار میں بھیج دیا ہے۔ مغرب نے اس لانچنگ کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ ایسا میزائل بنانے کی سمت قدم ہے جو امریکا کو نشانہ بنا سکے۔ اسے اقوام متحدہ کی پابندیوں کی خلاف ورزی قرار دینے والے مغرب کو زیادہ پریشانی اس بات کی ہے کہ شمالی کوریا ابھی کچھ ہفتے قبل ہی ہائیڈروجن بم کے تجربات بھی کر چکا ہے۔ ابھی تک آزاد ذرائع سے تصدیق تو نہیں ہوئی کہ کوئی ایسا سیٹیلائٹ کا حامل راکٹ کامیابی سے زمین کے مدار میں پہ...

شمالی کوریا نے خلا میں سیٹیلائٹ بھیج دیا، مغرب کا شدید ردعمل

شمالی کوریا نے ہائیڈروجن بم کا پہلا کامیاب تجربہ کرلیا ! امریکی دباؤ نظر انداز وجود - بدھ 06 جنوری 2016

شمالی کوریا نے تمام عالمی اور امریکی دباؤ کو نظر انداز کرتے ہوئے ہائیڈروجن بم کا پہلا کامیاب تجربہ مقامی وقت کے مطابق صبح 10 بجے کر لیا۔ اسے حکمراں جماعت 'ورکرز پارٹی' کی دفاعی حکمت عملی کے تناظر میں دیکھا جارہا ہے۔ ہائیڈروجن بم کے تجربے کی تفصیلات غیر ملکی خبر رساں ادارے 'اے ایف پی' نے شمالی کوریا کے سرکاری ٹی وی کی رپورٹ کا حوالے سے دی ہے۔ جس کی تصدیق اس طرح بھی ہوئی کہ عین تجربے کے وقت خطے میں زلزلے کے جھٹکے محسوس کیے گئے۔خود امریکی جیولوجیکل سروے کے مطابق زلزلے کی شدت 5 ا...

شمالی کوریا نے ہائیڈروجن بم کا پہلا کامیاب تجربہ کرلیا ! امریکی دباؤ نظر انداز

چین کا نیا تجربہ، میزائل شکن یا سیٹیلائٹ شکن نظام؟ وجود - جمعه 13 نومبر 2015

چین کے تازہ ترین میزائل شکن نظام کے ٹیسٹ نے ایک مرتبہ پھر ایسی افواہوں کو جنم دیا ہے کہ بیجنگ ایسا ہائپر سونک ہتھیار تیار کررہا ہے جو زمین کے مدار میں موجود دشمن کے سیٹیلائٹس یعنی مصنوعی سیارچوں کو تباہ کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔ اگر واقعی ایسا ہے تو یہ امریکا کے لیے بہت بڑا خطرہ ہوگا۔ چین نے یہ تازہ ترین ہمیشہ کی طرح انتہائی خفیہ انداز میں کیے ہیں، جس کے دوران مغربی صوبہ سنکیانگ میں واقع کورلا تنصیب سے ایک ایسا ہائپر سونک میزائل بالائی سمت میں داغا گیا، جو اپنے پیچھے عجیب ...

چین کا نیا تجربہ، میزائل شکن یا سیٹیلائٹ شکن نظام؟

امریکی جنگی بحری جہاز کی دراندازی، چین نے انتباہ جاری کردیا وجود - بدھ 28 اکتوبر 2015

بحیرۂ چین کے جنوبی علاقے میں امریکا کے جنگی بحری جہاز کی آمد کے بعد چین نے انتباہ جاری کردیا ہے اور اس کا کہنا ہے کہ اس نے تمام قوانین کو ملحوظ خاطر رکھتے ہوئے تنبیہ جاری کی ہے۔ امریکی بحریہ کا جہاز یو ایس ایس لیسن بحیرۂ جنوبی چین کے اس علاقے میں داخل ہوا ہے جس پر چین اپنا دعویٰ رکھتا ہے۔ اس پر چینی بحریہ کے میزائل بردار لانژو اور کروزر تائی ژو نے امریکی جہاز کو وارننگ جاری کی ہے کہ وہ بین الاقوامی بحری سرحدوں کی خلاف ورزی سے باز رہے۔ وزارت قومی دفاع کے ترجمان یانگ یو جن ...

امریکی جنگی بحری جہاز کی دراندازی، چین نے انتباہ جاری کردیا