سندھ میں جائیداد کی خرید و فروخت کا پرانا نظام بحال

سندھ میں جائیدا د کی خرید وفروخت کا پرانا نظام بحال کردیا گیا ہے، یہ قدم سندھ میں دو ماہ تک جائیداد کی خریدو فروخت پر وفاقی ٹیکس پر ابہام کے بعدٹیکس کی مد میں ہونے والے مسلسل نقصان کے باعث اُٹھایا گیا۔ صوبائی بورڈ آف ریونیو کے سینئر افسران کے مطابق وفاقی ٹیکس پر ابہام کے سبب 2 ماہ تک وفاقی ٹیکس کی مد میں تقریباً 10 ارب روپے جمع نہ ہوسکے،جبکہ جائیدادوں کی مائیکرو فلمنگ کا کام بھی کافی متاثر رہا۔ ریونیو بورڈ کے سینئر حکام کے دعوے کے مطابق اب اصل قیمت پر ٹیکس لینے پر عمل نہ ہونے اور ایف بی آر کی وضاحت کے بعد جائیداد کی خریدوفروخت پر کام کا آغاز پرانے طریقے سے کر دیا گیا ہے ۔ البتہ نان فائلر پر جائیداد خریداری پر پابندی بدستور برقرار رہے گی جب کہ فائلر اور نان فائلر میں فرق بدستور برقرار رکھا جائے گا۔ذرائع کا کہنا ہے کہ ٹیکس رقم قومی خزانے میں اربوں روپے نہ آنے کے سبب فی الحال پرانے طریقے سے جائیداد خرید وفروخت کی اجازت دی گئی ہے ۔

Electrolux