وجود

... loading ...

وجود
وجود
ashaar

آسٹریلین کرکٹ ٹیم کی بال ٹمپرنگ کی شرمناک حرکت

جمعرات 05 اپریل 2018 آسٹریلین کرکٹ ٹیم کی بال ٹمپرنگ کی شرمناک حرکت

جنوبی افریقہ کے شہر کیپ ٹائون میں آسٹریلیا اور جنوبی افریقہ کے درمیان تیسرے دن کے میچ جاری تھا کھانے کے وقفہ ہوا تو اس وقت تک میزبان ٹیم جنوبی افریقہ مہمان ٹیم آسٹریلیا کو اپنی دوسری اننگز میں238/5رنز بنا کر 294رنز کا ہدف دے چکی تھی ،اس سے قبل آسٹریلیا کو سیریز میں 2-1خسارے کا سامنا اور انہیں50 سال میں پہلی مرتبہ جنوبی افریقہ میں سیریز ہارنے کا خطرہ درپیش تھا،کھانے کا وقفہ ہوا تو آسٹریلوی کپتان اسٹیون سمتھ اور نائب کپتان ڈیوڈ وارنر نے ایک پلان تشکیل دیا ،ٹیم میدان میں پہنچی تو پلان کے مطابق گیند کو ٹیم کے سب سے کم عمر مگر با صلاحیت بلے بار کیمرون پین کرافٹ کی جانب اچھال دیا گیا جنہوں نے پیلے رنگ کی ٹیپ کی مدد سے بال کو ٹیمپر کر دیا،اس میچ کو براہ راست براڈ کاسٹ کرنے والے چینل سپر ا سپورٹس کے پروڈکشن کے سربراہ ایلین نائیکر نے کرکٹ کی تاریخ کا بہت بڑا سیکنڈل پکڑ لیا کرکٹ میچ قوانین کے مطابق براڈ کاسٹ کا یہ طریقہ ہوتا ہے کہ کیمرا ہمیشہ گیند پر ہی رکھا جاتا ہے چاہے وہ کسی بھی کھلاڑی کے پاس ہو،کھیل چل رہا ہو یا رکا ہوا ہو ،میچ کے دوران گرائونڈ میں 30کیمرے کام کر رہے تھے کہ اس دوران ایلن نائیکر کو شک گذرا تو اس نے اسے مزید دیکھا اور ایک کیمرا مین کو کوچنگ ا سٹاف کو فوکس کرنے کا کہاوہاں کوچ دیرن لیمین واکی ٹاکی پر گرائونڈ میں بات کر رہا تھا، فیلڈ ایمپائرز نے24سالہ کیمرون کو طلب کر کے پوچھا تو اس نے جیب سے کالا رومال نکال کر دکھایا کہ جو عینک صاف کرنے کے لیے تھا اسی دوران اس نے پیلی ٹیپ کو انڈر وئیر میں چھپانے کی کوشش کی تو مزید مشکوک ہو گیا،بال کو خراب کرنے کی بات کسی حد تک واضح ہوئی تو میچ ریفری نے اس پر چارج لگا کر جرمانہ کر دیا۔

مگر یہ سلسلہ تھمنے والا تھاہی نہیں،جس کے بعد آسٹریلوی کپتان اسٹیون سمتھ نے جاری ٹیسٹ میچ میں شکست سے بچنے کے لیے منصوبہ بندی کے تحت بال ٹمپرنگ کا اعتراف کر لیا جس پر کرکٹ آسٹریلیا کے سربراہ جیمز سورلینڈ نے پریس کانفرنس میں اس گھٹیا حرکت کے تینوں اہم کرداروںسمتھ،نائب کپتان وارنر اور کیمرون بین کرافٹ کو فوری طور پر معطل کرتے ہوئے وکٹ کیپر بلے باز ٹم پین کو ٹیم کی کپتانی کی ذمہ داری سونپ دی اور ان کی جگہ نئے کھلاڑیوں میٹ رنشیا،گلین میکسویل اور جو برنس کو اسکواڈ میں طلب کر لیا انہوں نے اس وقت کہا میں شائقین کے غم و غصہ کو جانتا ہوں اس لیے جنوبی افریقہ اور آسٹریلیا کے عوام سے معافی مانگتاہوںکیونکہ اس واقعہ نے شاندار سیریز کو گہنا دیاہے،بعد ازان آسٹریلوی کرکٹ حکام نے کپتان اور نائب کپتان کو ایک ایک سال اور کیمرون کو 9ماہ کے لیے کرکٹ سے معطل کرنے کی سزا سنا دی،ٹم پین46آسٹریلین کپتان ہیں، اس واقعہ پر آسٹریلوی وزیر اعظم میلکم ٹرن بل نے شدید برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا یہ ناقابل یقین بات ہے کہ آسٹریلین کھلاڑی دھوکہ دہی میں ملوث رہے ہیں انہیں بہت صدمہ پہنچا تمام ملوث کھلاڑیوں کو قرار واقعی سزا دی جائے،اسٹیون سمتھ نے وطن واپس پہنچ کر پریس کانفرنس میں روتے ہوئے قوم سے معافی مانگی اور بتایا کہ انہوں نے ممکنہ شکست سے بچنے کے لیے گیند خراب کرنے کے لیے بلے باز کیمرون کو چنا جنہوں نے تیسرے روز منصوبے پر عمل کیا مگرکیمرے کی آنکھ سے بچ نہ پائے ،اس صورتحال کا سینئر کھلاڑیوں کو بھی علم تھا جن سے کھانے کے وقفہ میں بات کی گئی لیکن اس واقعہ پر مجھے فخر نہیں بلکہ بہت ندامت ہے بحیثت کپتان تمام ذمہ داری قبول کرتا ہوں کیونکہ یہ سب میری نگرانی میں ہوا میں نے بال ٹمپرنگ کا سوچ کر ،اجازت دے کر ایسی بڑی غلطی کی جس کا مجھے زندگی بھر پچھتاوا رہے گا ،تاہم انہوں نے اس منصوبہ بندی میں شامل دیگر سینئر کھلاڑیوں میں سے کسی کا نام نہ بتایا،عالمی رینکنگ میں نمبر ون ٹیسٹ بیٹسمین اسٹیون سمتھ کی جانب سے اس حرکت پر دنیا ئے کرکٹ میں تشویش کی لہر دوڑ گئی ہے، کہا جا رہا ہے اس واقعہ کا اصل ذمہ دار ڈیوڈ وارنر تھا ،یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ ڈومیسٹک میچوں میں بھی اسٹیون ا سمتھ اور وارنر بال ٹمپرنگ کیا کرتے تھے۔

ٹیم کے کوچ ڈیرن لی مین نے بھی ٹیم کی کوچنگ چھوڑنے کا اعلان کر دیا ہے حالانکہ کرکٹ آسٹریلیا نے کوچ کو بے قصور سمجھتے ہوئے کوچ برقرار رکھنے کا فیصلہ سامنے آ چکا تھا،تاہم کوچ نے عہدہ چھوڑ دیا اور کہا یہ ان کا آخری میچ ہے جو کچھ ہوا وہ ایک انتہائی تکلیف دہ عمل تھا جس پر بہت دکھ ہوا یہ سکینڈل منظر عام آنے پر وہ ٹھیک طرح سو نہیں پا رہا ،پاکستان کے موجودہ کوچ مکی آرتھر نے آسٹریلوی کھلاڑیوں پر شدیدتنقید کا نشانہ بناتے ہوئے غیر مہذب قرار دہا اور کہا بال ٹمپرنگ کا کلچر آسٹریلوی کھلاڑیوں کی وجہ سے ختم نہیں ہو رہا،مکی آرتھر پہلے غیر ملکی کوچ تھے جنہوں نے آسٹریلین ٹیم کی کوچنگ کی تاہم وہ 2013میں اس عہدے سے سبکدوش ہو گئے ان کی موجودہ کوچ ڈین لی مین نے لی تھی، آئی سی سی کے چیف ایگزیکٹو ڈیوڈ رچرڈسن نے کہا اسٹیون سمتھ کا طرز عمل کھیل کی روح کے خلاف تھا،سابق آسٹریلوی کپتان مائیکل کلارک نے کہا،یہ آسٹریلوی کرکٹ کے لیے انتہائی برا دن تھا یہ ایک سوچی سمجھی دھوکے بازی تھی جس کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے جس کے لیے ایک نو آموز کھلاڑی کا انتخاب کیا گیا،شین وارن کے مطابق وہ ان مناظر سے بہت مایوس ہوئے ہیں،انگلش کوچ ٹریور ہیلس نے بال ٹمپرنگ کو آسٹریلوی ٹیم کی بھیانک غلطی قرار دیا،انگلش کپتان نے الزام لگایا کہ حالیہ ایشز سیریز میں بھی آسٹریلیا نے بال ٹمپرنگ کی ہے اس سیریز میں آسٹریلیا نے انگلینڈ کو 5-0سے شکست دی تھی،اب سابق کپتان سمتھ اور ڈیوڈ وارنر جنہیں انڈین پریمئرلیگ کے لیے 19لاکھ ڈالر میں خریدا گیا تھا اب وہ اس سے بھی محروم ہو گئے ہیں ڈیوڈ وارنر سے سن رائزرز حیدر آباد اور اسٹیون سمتھ کے ہاتھ سے راجستھان رائلز کی کپتانی بھی گئی،اب نائب کپتان ڈیوڈ وارنر نے بھی پریس کانفرنس میں روتے ہوئے عوام سے معافی مانگ لی ، کرکٹ کے انٹر نیشنل ماہرین کے مطابق آئی سی سی نے ہمیشہ پاکستانی کھلاڑیوں کو سخت سزائیں دیں یہاں اس کا دوہرا معیار واضح ہوا ہے ،پاکستانی قوم کے مطابق اتنا تضاد شرمناک ہے،جنوبی افریقہ اور آسٹریلیا کے درمیان یہ ٹیسٹ میچ بھی جنوبی افریقہ نے کینگروز سے چھین لیا ۔


متعلقہ خبریں


مقبوضہ کشمیر کی صورتحال پوری دنیا کیلئے لمحہ فکریہ ہے ، برطانوی رکن پارلیمنٹ وجود - جمعه 21 فروری 2020

پاکستان کے دورے پر آئی برطانوی رکن پارلیمنٹ ڈیبی ابراہمز نے مقبوضہ کشمیر کی صورتحال کو عالمی برادری کیلئے لمحہ فکریہ قرار دے دیا۔لاہور میں گورنر پنجاب سے ڈیبی ابراہمز سمیت برطانوی اراکین پارلیمنٹ نے ملاقات کی جس میں مسئلہ کشمیر اور خطے کی صورتحال پر بات چیت کی گئی۔ وفد میں ممبر برطانوی پارلیمنٹ مارک ایسٹوڈ ، سارہ برٹکلف، لارڈ قربان ، جوڈی کمننز، طاہر علی اور عمران حسین شامل تھے ۔وفد نے گورنر کو کشمیریوں پر مظالم کے خلاف برطانوی پارلیمنٹ میں آواز بلند کرنے کی یقین دہانی کراتے ...

مقبوضہ کشمیر کی صورتحال پوری دنیا کیلئے لمحہ فکریہ ہے ، برطانوی رکن پارلیمنٹ

پاکستان کو دنیا کے کئی حصوں میں اسلاموفوبیا پر تشویش ہے ،ترجمان دفتر خارجہ وجود - جمعه 21 فروری 2020

دفتر خارجہ کی ترجمان عائشہ فاروقی نے کہا ہے کہ پاکستان کو دنیا کے کئی حصوں میں اسلاموفوبیا، زینوفوبیا اور نسلی نفرت کی بڑھتی ہوئی لہر پر تشویش ہے ۔اسلام آباد سے جاری ہونے والے بیان میں انہوں نے کہا کہ پاکستان نے جرمنی میں حملوں کی سخت مذمت کی ہے ، ان گھنائونے حملوں سے کئی معصوم اپنی جان گنوا بیٹھے اور بہت سے زخمی ہیں، دکھ کی اس گھڑی میں پاکستان جرمنی کے ساتھ کھڑا ہے جب کہ اس حملے میں ترک شہریوں کی جانیں جانے پر ترکی کے ساتھ بھی تعزیت کرتے ہیں۔ ترجمان دفتر خارجہ نے کہا کہ ان ح...

پاکستان کو دنیا کے کئی حصوں میں اسلاموفوبیا پر تشویش ہے ،ترجمان دفتر خارجہ

چین کورونا وائرس سے مزید 118افراد ہلاک ،تعداد2247ہو گئی وجود - جمعه 21 فروری 2020

کورونا وائرس سے مزید 118 افراد جان کی بازی ہارگئے ،مرنیوالوں کی تعداد 2247ہو گئی ۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق چین میں کورونا وائرس سے ہلاکتیں نہ رک سکیں اورمزید 118 افراد ہلاک ہوگئے جس کے بعد مجموعی ہلاکتوں کی تعداد2247ہوگئی۔899 نئے مریضوں میں وائرس کی تصدیق ہوئی ہے جس سے متاثرہ افراد کی تعداد 76700ہوگئی۔ صرف صوبہ ہوبئی میں وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد 62ہزارسے زائد ہے جبکہ 11ہزار633مریضوں کی حالت نازک ہے ۔دوسری جانب شنگھائی میں کورونا وائرس کے علاج کے لیے پلازما تھراپی ...

چین کورونا وائرس سے مزید 118افراد ہلاک ،تعداد2247ہو گئی

میکسیکو، اجتماعی قبر سے 10نعشیں برآمد وجود - جمعرات 20 فروری 2020

میکسیکو کی ریاست میشواکان میں اجتماعی قبر سے 10نعشیں برآمد کر لی گئیں۔ غیرملکی خبر رساں ادارے کے مطابق پراسیکیوٹر جنرل کے دفتر نے جاری کردہ بیان میں بتایا کہ میکسیکو حکام نے مغربی ریاست میشواکان کے علاقے کومانجا میں اجتماعی قبر دریافت کی جس کی کھدائی کر کے بوسیدہ حالت میں 10نعشیں برآمد کی گئیں جنہیں ہلاکت کی وجوہات جاننے کے لیے فرانزک ماہرین کے تجزیے کے لیے بھیجا جائے گا۔بیان میں بتایا گیا کہ جرائم میں ملوث افراد کی شناخت کر لی گئی ۔

میکسیکو، اجتماعی قبر سے 10نعشیں برآمد

یوکرین اسکینڈل، امریکی نائب وزیرِ دفاع مستعفی وجود - جمعرات 20 فروری 2020

یوکرین اسکینڈل سے وابستہ امریکی نائب وزیر دفاع جان روڈ مستعفی ہو گئے ۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق امریکی نائب وزیرِ دفاع برائے پالیسی جان روڈ نے صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی درخواست پر استعفی دیدیا۔ مریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو لکھے گئے خط میں جان روڈ کا کہنا تھا کہ وزیرِ دفاع سے معلوم ہوا ہے کہ آپ چاہتے ہیں کہ میں اپنے عہدے سے استعفیٰ دوں۔انہوں نے یہ بھی لکھا ہے کہ آپ کی درخواست پر میں اپنا استعفیٰ بھیج رہا ہوں، 28 فروری سے عہدہ خالی ہو گا۔ غیر ملکی خبر ایجنسی کے مطابق جان روڈ نے تصدیق ...

یوکرین اسکینڈل، امریکی نائب وزیرِ دفاع مستعفی

بیرونی سرمایہ کاری کو مستحکم بنانے کے کام کو آگے بڑھایا جائے ، چین وجود - بدھ 19 فروری 2020

چین کی وزارت تجارت نے ایک نوٹس جاری کرتے ہوئے مختلف ملکوں سے مطالبہ کیا کہ بیرونی تجارت ،بیرونی سرمایہ کاری کو مستحکم بنانے اور اصراف کو فروغ دینے کے کام کو آگے بڑھایا جائے اور تجارتی ترقی پر وبا کے اثرات کو کم سے کم کیا جائے ۔نوٹس میں مطالبہ کیا گیا ہے کہ بیرونی تجارت ،بیرونی سرمایہ کاری ،لاجسٹکس اور ای کارمرس سے منسلک صنعتی اداروں کی پیداوار بحال کرنے میں مددفراہم کی جائے ،دی بیلٹ اینڈ روڈ سے وابستہ اہم منصوبوں کو منظم طور پر آگے بڑھایا جائے ۔

بیرونی سرمایہ کاری کو مستحکم بنانے کے کام کو آگے بڑھایا جائے ، چین

مصر میں مٹی کے تاریخی قبرستان دریافت وجود - بدھ 19 فروری 2020

مصری وزارت سیاحت و آثار قدیمہ نے اعلان کیا ہے کہ الدقھلیہ صوبے کے معروف مقام ام الخلجان میں 83تاریخی قبرستان دریافت ہوئے ہیں۔ یہ مصر کا ڈیلٹا کہلاتا ہے ۔ دریافت ہونے والے آثار کا تعلق 4ہزار قبل مسیح کے نصف اول سے ہے ۔یہ مصر زیریں یا بوتوتمدن کے نام سے مشہور ہے ۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق قبرستان بیضوی شکل کے ہیں۔ قبریں ریگستانی جزیرے میں تراش کر بنائی گئی ہیں۔ قبروں میں نعشیںاکڑوںشکل میں رکھی ہوئی ہیں۔میتوں کے ساتھ سامان وغیرہ بھی موجود ہے ۔وہاں سے ملنے والا سامان مختلف ...

مصر میں مٹی کے تاریخی قبرستان دریافت

سعودی عرب کی طرف 47 ممالک میں 4 ارب ڈالر کی امداد وجود - بدھ 19 فروری 2020

کنگ سلمان سینٹر برائے انسانی امداد نے کہا ہے کہ جنوری 2020 تک 47ممالک میں 4ارب ڈالر سے زیادہ کی امداد دی ہے ۔سب سے زیادہ امداد یمن میں دی گئی جہاں سینٹر نے اب تک دو بلین ریال مالیت سے زیادہ منصوبے ، امدادی سامان، علاج معالجہ اور دیگر سہولتیں مستحقین کو فراہم کی ہیں۔فلسطین دوسرے نمبر پر جہاں 355ملین ڈالر کی امداد دی گئی۔شام چوتھے نمبر پر ہے جہاں 286ملین ڈالر سے زیادہ امداد کی گئی جبکہ پانچویں نمبر پر صومالیہ ہے جہاں 186ملین ڈالر سے زیادہ امداد دی گئی۔سینٹر نے کہا ہے کہ اس نے س...

سعودی عرب کی طرف 47 ممالک میں 4 ارب ڈالر کی امداد

کورونا وائرس کی وبا ، عالمی خطر ے کے درجے میں اضافہ نہیں کیا جائیگا ، عالمی ادارہ صحت وجود - منگل 18 فروری 2020

عالمی ادارہ صحت نے کورونا وائرس کے حوالے سے ایک پریس کانفرنس کا انعقاد کیا جس میں عالمی ادارہ صحت کے ڈائریکٹر جنرل تیدروس ادھنوم نے کہا کہ چین کے جاری کردہ اعدادوشمار کے مطابق نوول کورونا وائرس سے متاثرہ نئے کیسز میں کمی دیکھنے میں آ رہی ہے ۔اس لئے عالمی ادارہ صحت موجودہ نتائج کو برقرار رکھے گا یعنی نوول کرونا وائرس نمونیا عالمی سطح پر وبائی بیماری نہیں اور عالمی سطح پر وبا کے خطر ے کی درجہ بندی کو نہیں بڑھایا جائے گا۔عالمی ادارہ صحت کے تحت ہنگامی صحت عامہ پروگرام کے انچارج م...

کورونا وائرس کی وبا ، عالمی خطر ے کے درجے میں اضافہ نہیں کیا جائیگا ، عالمی ادارہ صحت

ایران کے ساتھ کام کرنے والی چینی کمپنیوں پر امریکی پابندیاں ختم کی جائیں،چین وجود - منگل 18 فروری 2020

چین نے ایران کے ساتھ کام کرنے والی چینی کمپنیوں پر عائد امریکی پابندیوں کے خاتمے کا مطالبہ کردیا ۔چین کی وزارت خارجہ کے ترجمان گنگ شوانگ نے بیجنگ میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے ان چینی کمپنیوں کے خلاف امریکی پابندیوں کے خاتمے کا مطالبہ کیا جو ایران اوردوسرے ممالک کے ساتھ کام کر رہی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ امریکہ کو یہ حق نہیں پہنچتا کہ وہ اپنے داخلی قوانین اور یکطرفہ طور پر دیگر ممالک کے ساتھ تعاون کرنے والی کمپنیوں اور اداروں پر پابندی عائد کرے ۔گنگ شوانگ نے ایران کے خلاف امریک...

ایران کے ساتھ کام کرنے والی چینی کمپنیوں پر امریکی پابندیاں ختم کی جائیں،چین

سعودی عرب دنیا کے 10پرکشش ممالک کی فہرست میں شامل وجود - منگل 18 فروری 2020

سعودی عرب دنیا کے دس پرکشش ممالک کی صف میں شامل ہوگیا ۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق2020 کے دوران سعودی عرب مختلف تجارتی سرگرمیوں کے حوالے سے نمایاں ترین ملک بن جائے گا۔عالمی بنک نے بھی اپنی تازہ رپورٹ میں سعودی عرب کو دنیا کے دس پرکشش ممالک کی فہرست میں شامل کیا ہے ۔ سعودی عرب دبئی کا طاقتور حریف بننے جارہا ہے ۔ عالمی بینک نے اپنی رپورٹ میں سعودی اصلاحات کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ اصلاحات کی بدولت کمپنیاں دبئی سے سعودی عرب منتقل ہونے لگی ہیں۔ کئی کمپنیوں نے اپنے کاروبار کا ...

سعودی عرب دنیا کے 10پرکشش ممالک کی فہرست میں شامل

سوڈانی حکومت کا اسرائیل کے ساتھ تعلقات قائم کرنے کا آغاز وجود - پیر 17 فروری 2020

سوڈان میں گزشتہ برس صدر عمر البشیر کا تختہ الٹے جانے کے بعد نئی حکومت نے اسرائیلی ریاست کے ساتھ تعلقات قائم کرنے کا آغاز کردیا ۔ سوڈان کی خود مختار کونسل کے سربراہ جنرل عبدالفتاح البرہان کی اجازت سے اسرائیل کے لیے سوڈان کی فضائی حدود کو کھول دیا گیا ۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق سوڈان اور اسرائیل کے درمیان دو طرفہ تعلقات کے باب میں اہم پیش رفت سامنے آئی ہے ۔ سوڈان نے اسرائیلی سول طیاروں کو اپنی حدودمیں استعمال کرنے کی اجازت دے دی ۔رپورٹ کے مطابق ایک سول طیارہ تل ابیب سے سو...

سوڈانی حکومت کا اسرائیل کے ساتھ تعلقات قائم کرنے کا آغاز