وجود

... loading ...

وجود
وجود
ashaar

بیجنگ میں مطالعہ کا رحجان، ہر باسی سالانہ اوسطاً 9 کتابیں پڑھ لیتا ہے

هفته 31 اکتوبر 2015 بیجنگ  میں مطالعہ کا رحجان، ہر باسی سالانہ اوسطاً 9 کتابیں پڑھ لیتا ہے

chinese-bookstore

ایک تازہ ترین سروے کے مطابق 2013ء کے مقابلے میں بیجنگ کے باشندوں میں 2014ء میں پڑھنے کے رحجان میں 17.13 فیصد اضافہ دیکھنے کو ملا ہے۔ بیورو آف پریس، پبلی کیشن، ریڈیو فلم و ٹیلی وژن کے سروے میں 91.16 فیصد بیجنگ باسیوں نے کہا کہ انہوں نے2014ء میں مطالعہ کیا ہے جو ملکی تناسب 78.6 فیصد سے کہیں زیادہ ہے۔
صحت، ادب اور خبریں دارالحکومت کے باسیوں کے مطالعے کے سرفہرست تین زمرے ہیں۔ یہ سروے 7 سے 70 سال کے بیجنگ رہائشی افراد میں کیا گیا، جس میں بیورو کے مطابق 6 ہزار سے زیادہ افراد نے حصہ لیا۔
چین کو مطالعے کے بحران کا سامنا ہے۔ سروے میں شامل 50 سے زائد افراد کا مانناہے کہ ان کا مطالعہ کافی نہیں ہے جبکہ صرف 20 فیصد خود سے مطمئن دکھائی دیے۔

چینی اکیڈمی برائے پریس و پبلی کیشنز کے سربراہ سو شینگ گو نے کہا کہ ملک میں مطالعے کی شرح گزشتہ سال78.6 فیصد تھی جس میں کتب، جرائد و رسالوں، اخبارات کا یا آن لائن مطالعہ شامل ہے۔ جبکہ 21.4 فیصد افراد نے سرے سے کوئی مطالعہ نہیں کیا۔سو نے کہا کہ اکیڈمی نے 2005ء میں چینی عوام میں مطالعے کے رحجان کا اندازہ لگانے کے لیے سالانہ سروے شروع کیا تھا، اور پایا کہ 2005ء سے 2014ء کے دوران سالانہ ہر چینی 4.5 سے 4.7 کتابیں پڑھیں۔
گزشتہ سال چینی افراد نے اوسطا 4.56 کتب کا مطالعہ کیا تھا جو فرانس کے 12، جنوبی کوریا کے 11، جاپان کے 9 اور امریکا کے 7 سے کہیں کم ہے۔ اس کے علاوہ 40 فیصد سے زیادہ چینی باشندے نصابی کتب کے علاوہ اوسطاً ایک سے بھی کم کتاب پڑھتے ہیں۔

بیجنگ میونسپل بیورو آف پریس کے زیر اہتمام گزشتہ ہفتے بیجنگ میں مطالعے کے حوالے سے ایک تربیتی سیشن کا انعقاد ہوا جو اس معلم، سرکاری افسران، کالج طلبا اور کتب فروشوں کے لیے تربیتی مرحلے کا پہلا اجلاس تھا تاکہ ملک بھر میں مطالعے کے رحجان کو فروغ دیا جا سکے۔ یہ ستمبر اور اکتوبر میں ہفتہ وار بنیادوں پر ہوں گے۔


متعلقہ خبریں


چین کے قومی دن پربیجنگ میں سکیورٹی ہائی الرٹ وجود - پیر 30 ستمبر 2019

چین میں قومی دن کے موقع پر دارالحکومت بیجنگ میں سکیورٹی ہائی الرٹ ہے ، سڑکوں پر پولیس کی نفری میں اضافہ کردیا گیا جبکہ شہر میں ڈرون اڑانے پر بھی پابندی عائد کی گئی ۔چین میں یکم اکتوبر کوقومی دن کے موقع پر تیانمن اسکوائر پر بڑے پیمانے پر ملٹری پریڈ کی جائے گی، جس میں 15 ہزار اہلکار، 160 سے زائد ایئر کرافٹ500 سے زائد جنگی سامان شامل ہوگا۔قومی دن کے موقع پر شہر میں سکیورٹی ہائی الرٹ ہے ، تیانمن اسکوائر کے ارد گرد کی سڑکیں بند ہیں جبکہ شہر میں ڈرون کے ساتھ کبوتر اور پتنگیں اڑانے ...

چین کے قومی دن پربیجنگ میں سکیورٹی ہائی الرٹ

بیجنگ ارب پتیوں میں سب سے آگے وجود - هفته 27 فروری 2016

چین کے دارالحکومت بیجنگ میں دنیا کے کسی بھی شہر سے زیادہ ارب پتی موجود ہیں۔ امریکی خبر رساں ادارے کے مطابق شہر میں ارب پتیوں کی تعداد 100 تک پہنچ چکی ہے اور یوں اس نے نیو یارک کو پیچھے چھوڑ دیا ہے جہاں یہ تعداد 95 ہے۔ دنیا میں ارب پتیوں کے سب سے بڑے شہر بیجنگ اور نیو یارک کے بعد ماسکو، ہانگ کانگ اور شنگھائی ہیں کہ جہاں بالترتیب 66، 64 اور 50 ارب پتی رہتے ہیں۔ یہ اعداد و شمار چین کے ایک تحقیقاتی ادارے ہورون نے جاری کیے ہیں جو دنیا کے امیر ترین افراد پر نظر رکھتا ہے۔ ...

بیجنگ ارب پتیوں میں سب سے آگے

چین کے خوبصورت طائرانہ مناظر وجود - هفته 17 اکتوبر 2015

[caption id="attachment_31139" align="aligncenter" width="900"] آڈی کی نئی گاڑیاں ایک وسیع پارکنگ علاقے میں موجود۔ چانگ، صوبہ جلن [/caption] [caption id="attachment_31138" align="aligncenter" width="900"] سمندر طوفان کی آمد سے قبل محفوظ مقام پر لنگر انداز کشتیاں۔ تائی ژو، صوبہ ژی جیانگ[/caption] [caption id="attachment_31137" align="aligncenter" width="900"] سمندر طوفان کی آمد سے قبل محفوظ مقام پر لنگر انداز کشتیاں۔ تائی ژو، صوبہ ژی جیانگ[/caption] [capti...

چین کے خوبصورت طائرانہ مناظر

دنیا کے 10 بہترین ہوائی اڈے وجود - پیر 07 ستمبر 2015

ہوائی اڈے کسی بھی ملک یا شہر کا پہلا تاثر ہوتے ہیں، بلکہ محاورے کے مطابق کسی بھی جگہ کے بارے میں دیرپا تاثر قائم کرنے والے اولین مقامات ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ ترقی یافتہ ممالک کے ہوائی اڈے اپنی تعمیر، سہولیات اور آسان استعمال کے لیے معروف ہیں۔ وہ زمانے گزر گئے، جب ترقی یافتہ ممالک سے مراد مغرب ہوتا تھا، اب مشرق کا سر بھی تیزی سے اٹھ رہا ہے اور دنیا کے بہترین ہوائی اڈوں کی تازہ درجہ بندی یہ بات ثابت بھی کرتی ہے۔ لندن میں قائم ہوا بازی کی معروف ویب سائٹ اور ایئر لائنوں کی درجہ بندی...

دنیا کے 10 بہترین ہوائی اڈے

امریکا کی قومی سلامتی کی مشیر کا اہم دورۂ چین وجود - جمعرات 27 اگست 2015

امریکا کی قومی سلامتی کی مشیر سوسن رائس 28؍ اور 29؍ اگست کی تاریخوں میں بیجنگ کا دورہ کریں گی۔جہاں وہ چینی حکام سے دونوں ممالک میں حائل مسائل کی ایک لمبی قطار پر تبادلۂ خیال کریں گی۔ چینی وزارتِ خارجہ کے ترجمان نے منگل کے روز اس کا اعلان کیا۔ رائس کا یہ دورہ اس لئے بھی نہایت اہمیت کا حامل ہے کہ اگلے ماہ چینی صدر شی جِن پِنگ امریکا کا دورہ کر رہے ہیں۔اُدھر امریکی محکمۂ خارجہ کے ترجمان جان کربی نے بھی اُسی روز کہا کہ چینی صدر کا دورۂ چین دونوں ممالک کے تعلقات کے حوالے س...

امریکا کی قومی سلامتی کی مشیر کا اہم دورۂ چین

مضامین
جامہ عریانی کا قامت پہ مری آیا ہے راست
(ماجرا۔۔محمد طاہر)
وجود بدھ 16 اکتوبر 2019
جامہ عریانی کا قامت پہ مری آیا ہے راست <br>(ماجرا۔۔محمد طاہر)

کامی یاب مرد۔۔
(علی عمران جونیئر)
وجود بدھ 16 اکتوبر 2019
کامی یاب مرد۔۔<br> (علی عمران جونیئر)

تری نگاہِ کرم کوبھی
منہ دکھانا تھا !
(ماجرا۔۔محمد طاہر)
وجود منگل 15 اکتوبر 2019
تری نگاہِ کرم کوبھی <br>منہ دکھانا تھا ! <br>(ماجرا۔۔محمد طاہر)

معاہدے سے پہلے جنگ بندی سے انکار
(صحرا بہ صحرا..محمد انیس الرحمن)
وجود منگل 15 اکتوبر 2019
معاہدے سے پہلے جنگ بندی سے انکار <br>(صحرا بہ صحرا..محمد انیس الرحمن)

ہاتھ جب اس سے ملانا تو دبا بھی دینا
(ماجرا۔۔۔محمدطاہر)
وجود پیر 14 اکتوبر 2019
ہاتھ جب اس سے ملانا تو دبا بھی دینا<br> (ماجرا۔۔۔محمدطاہر)

وزیراعلیٰ سندھ کی گرفتاری کے امکانات ختم ہوگئے۔۔۔؟
(سیاسی زائچہ..راؤ محمد شاہد اقبال)
وجود پیر 14 اکتوبر 2019
وزیراعلیٰ سندھ کی گرفتاری کے امکانات ختم ہوگئے۔۔۔؟<br>(سیاسی زائچہ..راؤ محمد شاہد اقبال)

پانچ کیریکٹر،ایک کیپٹل۔۔
(عمران یات..علی عمران جونیئر)
وجود پیر 14 اکتوبر 2019
پانچ کیریکٹر،ایک کیپٹل۔۔ <br>(عمران یات..علی عمران جونیئر)

طالبان تحریک اور حکومت.(جلال نُورزئی) قسط نمبر:3 وجود بدھ 09 اکتوبر 2019
طالبان تحریک اور حکومت.(جلال نُورزئی)  قسط نمبر:3

دودھ کا دھلا۔۔ (علی عمران جونیئر) وجود بدھ 09 اکتوبر 2019
دودھ کا دھلا۔۔ (علی عمران جونیئر)

سُکھی چین کے 70 سال سیاسی
(زائچہ...راؤ محمد شاہد اقبال)
وجود پیر 07 اکتوبر 2019
سُکھی چین کے 70 سال  سیاسی <Br>(زائچہ...راؤ محمد شاہد اقبال)

دنیا کے سامنے اتمام حجت کردی گئی!
(صحرا بہ صحرا..محمد انیس الرحمن)
وجود پیر 07 اکتوبر 2019
دنیا کے سامنے اتمام حجت کردی گئی! <br>(صحرا بہ صحرا..محمد انیس الرحمن)

حدِ ادب ۔۔۔۔۔۔(انوار حُسین حقی) وجود بدھ 02 اکتوبر 2019
حدِ ادب ۔۔۔۔۔۔(انوار حُسین حقی)

اشتہار