آج چودہ فروری ہے۔ گزشتہ ایک ڈیڑھ عشرے سے مغربی دنیا کی طرح ہمارے ہاں بھی مغربی معاشرے کی نقالی کے زیر اثر لوگ اہتمام کے ساتھ ’’ ویلنٹائن ڈے ‘‘ کو منانے لگے ہیں ۔ خود کو ماڈرن سمجھنے اور ظاہر کرنے کے نفسیاتی مرض میں مبتلا ہمارے معاشرے کے اس مٹھی بھر جنونی گروہ کو اس سے کوئی غرض نہیں ہے کہ مغربی معاشرے میں منائے جانے والے تہواروں یا ایام کا...

دوستو،ہرسال کی طرح اس بار بھی فروری کا سورج چڑھتے ہی یوم ویلنٹائن منانے یا نہ منانے کی بحث نے اٹھانوے فیصد مسلمان پاکستانیوں کو آن گھیرا ہے۔۔ہرسال 14 ؍فروری کو دنیابھر میں ویلنٹائن ڈے منایا جاتا ہے۔ اس دن کی تاریخ کے متعلق مختلف روایات ملتی ہیں جن میں بہر حال یہ بات مشترک ہے کہ یہ دن کسی سینٹ ویلنٹائن نامی غیر مسلم کی یاد میں منایا جاتا ہے جسے ملکی قوانین...

'قائد اعظم محمد علی جناح کی سحر انگیز شخصیت کے بہت پہلو ہیں، وہ مضبوط اعصاب، ذہانت، متانت، اور بروقت درست فیصلے کرنے کی صلاحیت سے مالا مال تھے۔ اور انکی کرک دار آواز سننے والوں پر سحر طاری کردیتی تھی ۔قائد اعظم کی شخصیت کا ایک اور پہلو یہ بھی ہے کہ وہ لباس ، اس کی تراش خراش کا بہت خیال رکھتے تھے۔ بہت نفیس اور دیدہ زیب لباس پہنتے ، اور...

دوستو، پندرہ ،سولہ سال قبل اسی عنوان سے جرأت میں لکھا کرتا تھا، یہ اپنے وقت کا سب سے ہٹ سلسلہ تھا، جس کی شہرت کا اندازہ ہمیں اس بات سے ہوا کہ دوتین ماہ لکھنے کے بعد جب ہم نے کالم لکھنا بند کیا تو ہمیں انتظامیہ نے کہا کہ کالم لکھیں، ہم نے کہا اور بھی کام ہیں زمانے میں کالم کے سوا۔۔ جس پر ہمیں جرأت کی تاریخ میں پہلی بار...

پانچ اور چھ فروری2019 ء کو روس کے دار الحکومت ماسکو میں افغانستان کی سیاسی احزاب و شخصیات کا اجلاس افغانستان میں امن اور غیر ملکی افواج کے انخلاء کی سمت ایک اور پیش رفت ہے۔ ایک بڑی تبدیلی درماندہ افغانستان کے اندر رونما ہونے والی ہے، جس کی حمایت و نصرت ہونی چاہیے۔ خصوصاً پاکستان کے اندر قرار تب آسکتا ہے جب افغانستان کامل طور پر خود مختار اور پرامن ملک ہوگا۔ حیرت ہے...

پاکستان میں طاقت کے سب سے عالی مرکز پر جلوہ افروز شخصیت کے خیالاتِ عالیہ کا یہ نکتہ تمام بڑے حلقوں میں زیرِ گردش ہے کہ ’’وہ ایک نارمل پاکستان چاہتے ہیں‘‘۔ متوازی طور پر ایک اور تصورِ پاکستان سے بھی ہمیں سابقہ ہے۔ یہ ریاست مدینہ کا تصور ہے جو ہمارے پیارے وزیراعظم عمران خا ن کا ہے۔ جن سے مذکورہ طاقت ور شخصیت کو سب سے زیادہ میلان ہے۔ اور وہ گاہے...

خطے کے ممالک اور افغان عوام کے لیے خوشی اور راحت کا مقام ہے کہ افغانستان میں امارت اسلامیہ کی طویل اور صبر آزما مزاحمت (جس میں یقیناًحزب اسلامی افغانستان کا بھی حصہ ہے) کے نتیجے میں آزادی کی نئی صبح طلوع ہونے کے امکانات روشن ہو گئے ہیں ۔ قابض امریکا اس امر کے لیے آمادہ وبے چین ہے کہ وہ اپنی افواج افغان مومن عوام کی سرزمین سے نکال لے ۔ قطر کے...

انحہ ساہیوال دل میں برچھی بن کر اُترتا ہے۔ زندگی ہم سے روٹھ گئی ۔ ہمار اطرزِ فکر تباہی کو دعوت دیتا ہے۔ یہ تبدیلی سرکار کا امتحان ہے، کڑا امتحان!!!کہا جاتا ہے ، جنگ میں بوڑھے بچوں کے لاشے اُٹھاتے ہیں جبکہ امن میں بچے بوڑھوں کو دفناتے ہیں۔پاکستان میں زمانہ امن و جنگ کی تمیز مشکل ہے ۔ بچوں کے سامنے گھر کے بڑوں کو گالیوں کے ساتھ گولیوں کا نشانا بنایا...

جام حکومت کے خلاف اندریں شورُ اٹھانے اور فضاء بنانے کی بہت کوششیں ہوئی ہیں۔ سرِدست ان لوگوں کو شرمندگی کا سامنا ہوا ہے۔ یقیناًجام کمال خان کی چند مجبوریاں ہیں وگرنہ شاید یہ لوگ موجودہ مقام پر بھی نہ ہوتے۔دیکھا جائے تو حالات جنوری 2018 ء جیسے نہیں ہیں۔ ان صاحبانِ بے خِرد کو معلوم ہونا چاہیے کہ تب مرکز میں نواز شریف کی حکومت تھی۔ صوبے میں بھی وزیراعلیٰ نواز لیگ کے...

صحافی کو ہمیشہ باسی روٹی اور تازہ سفر درپیش رہتا ہے۔ اسلام آباد کا سہ روزہ قیام غیر معمولی حالات کی تفہیم میں نہایت معاون رہا۔ سی پی این ای کے پاکستان میڈیا کنونشن نے مالکان ومدیران کے کان کھڑے کیے۔ اخبارات وجرائد جن مصائب کے شکار ہیں، مدیران اس کا سامنا کرنے کے لیے کمربستہ ہوچکے۔ مگر اُنہیں ادراک ہے کہ نیا سفر بجائے خود صبر آزما ہے۔ میڈیا کی صنعت بحران در...