وجود

... loading ...

وجود
وجود

جشن آزادی ۔۔

اتوار 14 اگست 2022 جشن آزادی ۔۔

دوستو،کہتے ہیں کہ دنیا کے سارے دکھ ایک طرف اور اتوار کو چودہ اگست آنے کا دکھ ایک طرف۔۔ہر سال کی طرح آج بھی ہم جشن آزادی مناکرخواب خرگوش کے مزے لینا شروع کردیں گے اور اگلے سال پھر جشن آزادی والے دن جاگیں گے،ہم نے کچھ عرصہ پہلے اپنے ایک کالم میں لکھا تھا کہ ۔۔ہم لوگ جس قوم سے تعلق رکھتے ہیں، پاسپورٹ پر تو اسے ’’پاکستانی‘‘ قوم کہہ سکتے ہیں لیکن ہماری نظر میں یہ ’’ڈاٹ قوم‘‘ ہے۔۔ یعنی اس قوم کے سامنے باقی ساری قوموں کو ’’فل اسٹاپ‘‘ لگ جاتا ہے۔ ذہانت، عیاری،چالاکی، دونمبری، سخاوت، یعنی کسی پیمانے میں بھی تولا جائے اس قوم کا کوئی مقابلہ نہیں کرسکتا۔۔گزشتہ سال ہم نے جشن آزادی پر ایک تحریر لکھی تھی، حالات آج بھی ویسے ہی ہیں، بالکل بھی نہیں بدلے۔۔
اس بات سے آپ قطعی اختلاف نہیں کریں گے کہ۔۔پاکستانی ایک عمدہ قوم ہے۔۔اگست آئے تو سچے پاکستانی۔۔رمضان آئے تو پکے مسلمان۔۔۔جنگ کے حالات ہوں تو فوجی۔۔کھیل ہے تو پوری قوم کھلاڑی۔۔الیکشن ہوں تو سب سیاستدان۔۔احتساب شروع ہو تو سب نیب۔۔بجٹ آئے تو پوری قوم اکانومسٹ۔۔خبر آئے تو سب تجزیہ نگار۔۔کوئی بلڈنگ دیکھیں تو سب انجنئیر۔۔بیمار کو ملیں تو سب ڈاکٹر۔۔اور ڈاکٹر سے ملیں تو سب مریض بن جاتے ہیں۔۔جس مُلک میں،ایک خُدا،ایک رسولﷺ،اور ایک قرآن، کو ماننے والی قوم ایک ہی مُلک میں ایک ساتھ عید منانے پر متفق نہیں ہوسکتی، تو اُس قوم سے قومی مفاد کے لیے یکجا ہونے کی اُمید کیسے کی جاسکتی ہے،یہ ایک لمحہ ِفکرہے۔کہیں کوئی دودھ میں پانی مِلا رہا ہے،کوئی ماپ تول میں بے ایمانی کر رہا ہے،کوئی اسکول،کالج جاتی لڑکیوں کو چھیڑ رہا ہے،کوئی شیطان صفت انسان حوا کی بیٹی کی عزت کو تار تار کر رہا ہے،کوئی ناجا ئز طریقوں سے بجلی چوری کررہا ہے،یہ سب کچھ ہماری آنکھوں کے سامنے ہورہا ہوتا ہے۔ہم پھر بھی ہرسال جشن آزادی مناتے ہیں۔چلیں پھر اس قوم کو جشن آزادی کی مبارک باد بھی دیتے چلیں۔۔
20 روپے والے جوس کا ڈبہ بھی آخری قطرے کے شڑوپ کی آواز آنے تک نہ پھینکنے والوں کو بھی جشن آزادی مبارک۔۔آئس کریم کا’’ریپر‘‘ چاٹنے والوں کو جشن آزادی مبارک۔۔قربانی کے گوشت سے فریج بھرنے والوں اور پھر اسی گوشت سے حلیم کی نیاز دینے والے سخیوں کوجشن آزادی مبارک۔۔ جن لوگوں کے ڈر سے واٹر کولر کے ساتھ گلاس کوزنجیروں سے باندھ کر رکھا جاتا ہے ان لوگوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔ صبح صبح قوالیاں سن کر نیکیاں حاصل کرنے والوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔لڑکیوں کی ہر پوسٹ لائیک کرنے والوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔ پودے اکھاڑنے اور درخت کاٹنے والوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔ پانی ملا کر دودھ بیچنے والے گوالوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔آم کی پیٹی کے اوپر 6 آم پکے اور نیچے 25 اچاری آم رکھنے والے حاجیوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔اسپتال میں مریض کی تیمارداری پر جا کر چائے پانی نہ پوچھنے پر ناراض ہو کر واپس آنے والوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔ ویلنٹائن ڈے کو حرام قرار دے کر خود انباکس میں جانو مانو کرنے والوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔عوام سے مفت ووٹ لے کر بعد میں اپنا ووٹ بیچنے والے کونسلروں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔کمپاؤنڈر اور ڈسپنسر کا کورس کرکے خود کو ڈاکٹر سمجھنے والوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔ دو نمبر بوتلیں بیچ کر رحمت کی بارش مانگنے والوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔تھوڑے ملک شیک میں زیادہ برف ڈالنے والے جوس کارنرز والوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔ باسی بریانی اور تازہ بریانی مکس کر کے بیچنے والے بریانی سینٹر والوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔ بھینس کو ٹیکے لگا لگا کر دودھ نکالنے والوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔ واش روم میں بیٹھ کر موبائل فون استعمال کرنے والوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔جلیبیاں سموسے پکوڑے بریانی کھا کر ووٹ دینے والوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔ ایک ٹرالی میں تین چار سو اینٹوں کی کرپشن کرنے والے ٹریکٹر ٹرالی والوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔ ترقی کا معیار صرف نالیاں گلیاں سڑکیں بتانے والی قوم کو جشنِ آزادی مبارک۔۔ آگے آگے صاف اور تازہ پھل،پیچھے باسی اور خراب پھل لگا کرایک ہی ریٹ پر فروخت کرنے والے پھل فروشوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔ پوری مزدوری لے کر دیہاڑی میں کام چوری کرنے والے مستریوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔ صرف ڈرامہ دیکھ کر خود کو ارتغرل سمجھنے والوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔ نقلی چالان کاٹنے والے ٹریفک وارڈنز کو جشنِ آزادی مبارک۔۔ روزہ نہ رکھ کر افطاری میں شامل ہونے والوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔ بغیر ٹیسٹ کے رزلٹ دینے والی میڈیکل لیبارٹریوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔میرے کپڑے پاک نہیں ہیں، کہہ کر نماز نہ پڑھنے والوں کو جشن آزادی مبارک۔۔ہر گھر سے سو سو روپے لے کر اوپر اوپر سے نالی صاف کرنے والے صفائی والوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔: آپ کا سوٹ سی کر بقایا کپڑے سے اپنے بچوں کی نِکریں بنانے والے درزیوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔ایمبولینس کے سائرن سن کر بھی راستہ نہ دینے والوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔بیسن میں آٹا ملا کر پکوڑے بیچنے والوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔پاؤں کے ساتھ آٹا گوندھنے والے نان بائیوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔ ڈیوٹی ٹائمنگ میں رکشہ چلانے والے چپڑاسیوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔ہر جھاڑو سے،چار،چار تیلے نکال کر دکان کے استعمال کیلئے الگ’’ منی جھاڑو‘‘بنانے والوں کو جشن آزادی مبارک۔۔چودھری صاحب دے حکم تے میں اپنے دو پروگرام کینسل کر ایتھے پڑھن آگیا وے، کہہ کے نعت پڑھنے والے نعت خواناں نوں وی جشن آزادی مبارک۔۔جمعے دے دو فرض پڑھ کر فٹافٹ مسجد وچوں نسن والیاں نوں وی جشن آزادی مبارک۔۔پیسے لگا کر جعلی ڈگری حاصل کرنے والوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔عمرہ کر کے واپسی مدینہ پاک دیاں کھجوراں گھر میں رکھ کر،لوکل سستی کھجوراں وڈن والیاں نوں وی جشن آزادی مبارک۔۔دوستوں کو مس کال مارنے اور معشوقوں کو ایزی لوڈ کرانے والوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔دعوت پر جانے کے لیے سارا دن بھوکے رہنے والوں کوجشن آزادی مبارک۔۔ مینوں جلدی فارغ کر دیو،میں ہور جگہ وی ختم پڑھنا وے،کہن والیاں مولویاں نوں وی جشن آزادی مبارک۔۔اورپب جی کھیلنے والوں کو جشنِ آزادی مبارک۔۔
جشن آزادی منانے والی قوم کا طرہ امتیاز ہے کہ یہاں جتنا بڑا دونمبری اور کرمنل ہوگا، حاجی صاحب کہلائے گا۔۔جہاں گھر کے ماتھے پہ’’ہذا من فضل ربی‘‘ لکھنے کا مطلب یہ ہوتا ہے کہ۔۔خبردار مجھ سے مت پوچھنا یہ گھر کیسے بنایا۔۔جہاں مجرم کا دفاع استغاثہ کا وکیل کرتا ہے۔۔۔ جہاں نمبر ایک ہونے کے لیے نمبر 2 ہونا ضروری ہے۔۔۔جو موروثیت کو جمہوریت گردانتی ہے۔۔۔جہاں حق رائے دہی قیمے والے نان اور بریانی کے ڈبوں میں تقسیم کیا جاتا ہے۔۔جہاں اربوں ہڑپ کر جانے والے ’’ایک دھیلے کی کرپشن‘‘ نہ کرنے کی قسم کھا لیتے ہیں۔۔جہاں راشی کے ماتھے پر محراب ہوتی ہے۔۔جہاں حرام نہ کھانے والے کو کمزور اور بیوقوف گردانا جاتا ہے۔۔جہاں بدمعاش کی عزت کی جاتی ہے اور شریف کو ٹکے کوڑی کا سمجھا جاتا ہے۔۔لیکن ان سب کے باوجودآپ سب کو جشن آزادی مبارک، خوش رہیں اور خوشیاں بانٹیں۔۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔


متعلقہ خبریں


مضامین
دوستوں سے ریاکی بات نہ کر وجود اتوار 02 اکتوبر 2022
دوستوں سے ریاکی بات نہ کر

چالیں اور گھاتیں وجود هفته 01 اکتوبر 2022
چالیں اور گھاتیں

ایران میں پرتشدد مظاہروں کے سلگتے ہوئے انگارے وجود جمعرات 29 ستمبر 2022
ایران میں پرتشدد مظاہروں کے سلگتے ہوئے انگارے

وزیرِ اعظم کا گھر غیر محفوظ تو محفوظ ہے کیا ؟ وجود بدھ 28 ستمبر 2022
وزیرِ اعظم کا گھر غیر محفوظ تو محفوظ ہے کیا ؟

بلوچستان ،کابینہ میں ردو بدل کی باتیں وجود بدھ 28 ستمبر 2022
بلوچستان ،کابینہ میں ردو بدل کی باتیں

چند ان کہی کہانیاں وجود منگل 27 ستمبر 2022
چند ان  کہی کہانیاں

اشتہار

تہذیبی جنگ
مودی حکومت کی اقلیتوں کے خلاف کارروائی، مسلم مذہبی گروپ پر 5 سال کی پابندی لگا دی وجود جمعرات 29 ستمبر 2022
مودی حکومت کی اقلیتوں کے خلاف کارروائی، مسلم مذہبی گروپ پر 5 سال کی پابندی لگا دی

پاک بھارت میچ کے باعث ہندو مسلم کشیدگی برمنگھم تک پہنچ گئی وجود بدھ 21 ستمبر 2022
پاک بھارت میچ کے باعث ہندو مسلم کشیدگی برمنگھم تک پہنچ گئی

برلن میں مسلم کمیونٹی کو ناموافق حالات کا سامنا ہے، جرمن حکومت کے پینل کا اعتراف وجود پیر 19 ستمبر 2022
برلن میں مسلم کمیونٹی کو ناموافق حالات کا سامنا ہے، جرمن حکومت کے پینل کا اعتراف

بھارت:مسلمان طلبا سے پڑھائی کا حق چھین لیا گیا، 17 ہزار طالبات اسکول چھوڑنے پر مجبور وجود جمعه 16 ستمبر 2022
بھارت:مسلمان طلبا سے پڑھائی کا حق  چھین لیا گیا، 17 ہزار طالبات اسکول چھوڑنے پر مجبور

بے روزگاری کا خوف، بھارتی مسلمان شناخت تبدیل کرنے لگے وجود اتوار 11 ستمبر 2022
بے روزگاری کا خوف، بھارتی مسلمان شناخت تبدیل کرنے لگے

نائن الیون، ورلڈ ٹریڈ سینٹر پر حملوں کو 21 برس بیت گئے وجود اتوار 11 ستمبر 2022
نائن الیون، ورلڈ ٹریڈ سینٹر پر حملوں کو 21 برس بیت گئے

اشتہار

بھارت
تمام خواتین کو اسقاط حمل کا اختیار ہے، بھارتی سپریم کورٹ کا اپنے ہی فیصلے کے خلاف فیصلہ وجود جمعرات 29 ستمبر 2022
تمام خواتین کو اسقاط حمل کا اختیار ہے، بھارتی سپریم کورٹ کا اپنے ہی فیصلے کے خلاف فیصلہ

مودی حکومت کی اقلیتوں کے خلاف کارروائی، مسلم مذہبی گروپ پر 5 سال کی پابندی لگا دی وجود جمعرات 29 ستمبر 2022
مودی حکومت کی اقلیتوں کے خلاف کارروائی، مسلم مذہبی گروپ پر 5 سال کی پابندی لگا دی

جھوٹے ٹوئٹر اکاؤنٹس:امریکی یونیورسٹی اسٹین فورڈ نے بھارت کو بے نقاب کردیا وجود جمعه 23 ستمبر 2022
جھوٹے ٹوئٹر اکاؤنٹس:امریکی یونیورسٹی اسٹین فورڈ نے بھارت کو بے نقاب کردیا

بھارت، ریپ کے بعد جلائی گئی دلت لڑکی دورانِ علاج دم توڑ گئی وجود بدھ 21 ستمبر 2022
بھارت، ریپ کے بعد جلائی گئی دلت لڑکی دورانِ علاج دم توڑ گئی
افغانستان
افغا ن طالبان حکومت کا پہلا بین الاقوامی تجارتی معاہدہ وجود بدھ 28 ستمبر 2022
افغا ن طالبان حکومت کا پہلا بین الاقوامی تجارتی معاہدہ

قتل کی دھمکی کے ساتھ ملا برادر کو ان کی رہائش گاہ کی تصویر بھیجی تھی، ٹرمپ وجود هفته 24 ستمبر 2022
قتل کی دھمکی کے ساتھ ملا برادر کو ان کی رہائش گاہ کی تصویر بھیجی تھی، ٹرمپ

یو این کی جانب سے لڑکیوں کے اسکول کھولنے پر زور، طالبان نے نیا وزیر تعلیم مقرر کر دیا وجود جمعه 23 ستمبر 2022
یو این کی جانب سے لڑکیوں کے اسکول کھولنے پر زور، طالبان نے نیا وزیر تعلیم مقرر کر دیا

افغانستان کے صوبے لوگر میں سیلاب سے تباہی، 20 افراد جاں بحق وجود پیر 22 اگست 2022
افغانستان کے صوبے لوگر میں سیلاب سے تباہی، 20 افراد جاں بحق
ادبیات
مسجد حرام کی تعمیر میں ترکوں کے متنازع کردار پرنئی کتاب شائع وجود هفته 23 اپریل 2022
مسجد حرام کی تعمیر میں ترکوں کے متنازع  کردار پرنئی کتاب شائع

مستنصر حسین تارڑ کا ادبی ایوارڈ لینے سے انکار وجود بدھ 06 اپریل 2022
مستنصر حسین تارڑ کا ادبی ایوارڈ لینے سے انکار

پاکستانی اور سعودی علما کی کئی سالہ کاوشوں سے تاریخی لغت کی تالیف مکمل وجود منگل 04 جنوری 2022
پاکستانی اور سعودی علما کی کئی سالہ کاوشوں سے تاریخی لغت کی تالیف مکمل

پنجابی بولتا ہوں، پنجابی میوزک سنتاہوں اور پنجابی ہوں، ویرات کوہلی وجود جمعرات 23 دسمبر 2021
پنجابی بولتا ہوں، پنجابی میوزک سنتاہوں اور پنجابی ہوں، ویرات کوہلی
شخصیات
مسلم دنیا کے معروف اسکالر شیخ یوسف القرضاوی انتقال کر گئے وجود پیر 26 ستمبر 2022
مسلم دنیا کے معروف اسکالر شیخ یوسف القرضاوی انتقال کر گئے

سابق صدر جنرل ریٹائرڈ پرویز مشرف کے پرنسپل سیکریٹری طارق عزیز انتقال کر گئے وجود پیر 19 ستمبر 2022
سابق صدر جنرل ریٹائرڈ پرویز مشرف کے پرنسپل سیکریٹری طارق عزیز انتقال کر گئے

ملکہ الزبتھ دوئم 96 برس کی عمر میں چل بسیں وجود جمعرات 08 ستمبر 2022
ملکہ الزبتھ دوئم 96 برس کی عمر میں چل بسیں

عامر لیاقت کی تدفین کردی گئی، نماز جنازہ بیٹے نے پڑھائی وجود جمعه 10 جون 2022
عامر لیاقت کی تدفین کردی گئی، نماز جنازہ بیٹے نے پڑھائی