وجود

... loading ...

وجود
وجود
ashaar

تندرستی ہزارنعمت

پیر 21 جون 2021 تندرستی ہزارنعمت

کورونا وائرس کی وبا جب سے پھیلی توڈبلیو ایچ او نے اس بات پر زوردیا کہ اس وباسے بچنا ہے تو قوت ِ مدافعت بڑھانے کے لیے یہ بات پڑھی لکھی ہے کہ اچھی غذا سے ہی انسان تندرست رہ سکتاہے جب اپنی غذائی ضروریات کو مدنظر رکھتے ہوئے روز مرہ کا اہتمام کرتا ہے تو اس کے جسم میں ایسی قوت مدافعت پیدا ہوتی ہے جو مختلف بیماریوں سے محفوظ رکھنے میں معاون کر دار ادا کرتی ہے۔ یہی وجہ ہے کہ طبی ماہرین سبزیاں بالخصوص کچی سبزیاں زیادہ کھانے کی تجویز دیتے ہیں۔ دنیا بھر میں سبزیوں کی افادیت کے پیش نظر بے تحاشہ تحقیق کی جا رہی ہے جن سے یہ بات منظر عام پر آ گئی ہے کہ کچی یا پکائی گئی سبزیوں میں بعض ایسے قدرتی غذائی اجزا پائے جاتے ہیں جو مختلف بیماریوں سے محفوظ رکھنے میں معاون ہوتے ہیں، بعض سبزیاں ایسی بھی ہوتی ہیں جنہیں کچا کھانا زیادہ مفید ہوتا ہے اور انہیں پکانے سے قدرتی اجزا اپنی افادیت کھو دیتے ہیں جیسے ٹماٹر، گاجر، بند گوبھی، مولی، پالک وغیرہ۔ ان میں قدرت نے وہ بیشتر ضروری اجزا رکھے ہوئے ہیں جو انسانی نشوونما میں نمایاں کردار ادا کرتے ہیں، ان میں وٹامن، منرلز، کیلشیم، فولاد وغیرہ شامل ہیں۔
موجودہ دور میں جہاں دل کے امراض، ذیابیطس، بلڈپریشر وغیرہ منظر عام پر آئے ہیں، ایک تکلیف دہ مرض کی شرح میں بھی اضافہ ہوا ہے۔ یہ مرض ریڑھ کی ہڈی کے مہروں کی خرابی کا مرض ہے جو آہستہ آہستہ انسان کو متاثر کر رہا ہے۔اس بیماری میں مبتلا افراد کے کندھوں کے اطراف میں کھچاو، گردن کے عقب میں درد اور ریڑھ کی ہڈی میں اکڑاو ٔپیدا ہوتا ہے جس سے مریض کو اٹھنے بیٹھنے، جھکنے اور چلنے پھرنے میں دشواری پیش آتی ہے۔ عموما اس مرض میں ریڑھ کی ہڈی کے مہرے ایک دوسرے میں اس طرح پیوست ہو جاتے ہیں کہ سارا وزن اور جسمانی دباؤ اعصابی جڑوں یا ریڑھ کی ہڈی کے گودے پر آن پڑتا ہے۔ اس زائد وزن کی بدولت جوڑوں کی سوزش اور ہڈیوں کے مختلف حصوں میں درد پیدا ہو جاتا ہے۔ اگرچہ اس مرض کا علاج ادویات یا سرجری سے تو ممکن ہے لیکن اس مرض کی شدت میں کمی لانے میں ہماری روزمرہ غذا اور ورزش بھی اہم کردار ادا کرتی ہیں۔ بعض غذائیں سوزش اور کمر درد کم کرنے میں کردار ادا کرتی ہیں۔ السی اور چیا سیڈز (Chia seed) سوزش میں کمی کے لیے بہت مفید ہیں بالخصوص اگر انہیں اومیگا3 والی غذاوں کے ساتھ کھایا جائے۔ اومیگا3 بعض مچھلیوں میں خاصی مقدار میں پایا جاتا ہے، ان میں سالمون، ٹونا، ٹراوٹ جیسی مچھلیاں شامل ہیں۔ یعنی سبزیوں اور مچھلی جیسی اومیگا3 والی غذاوں کا ملاپ ریڑھ کی ہڈی کے لئے انتہائی فائدہ مند ہے۔ گہرے رنگ کی سبزیوں میں سوزش کم کرنے کی صلاحیت زیادہ ہوتی ہے۔ اس کے علاوہ سوزش اور کمردرد کم کرنے کی استعداد سبز چائے، اولیو آئل میں بھی ہوتی ہے۔ ان میں پالک اور بروکولی بھی شامل ہیں۔
سبز رنگ والی سبزیوں میں میگنیشیم زیادہ ہوتا ہے جو ریڑھ کی ہڈی کی چوٹ سے بحالی میں معاون ہوتا ہے۔درد کم کرنے کے لیے ایوکیڈو، گری دار میوے، چکن اور دالیں بھی کردار ادا کرتی ہیں۔ کمردرد کے دوران کچھ لوگ ٹماٹر، بینگن اور آلو سے پرہیز کرتے ہیں لیکن تحقیقات اس کی تصدیق نہیں کرتیں۔ تاہم فاسٹ فوڈز، پاستا، میٹھے مشروب اور تلی ہوئی اشیا درد بڑھاتی ہیں۔طبی ماہرین کے مطابق کمر کی تکلیف میں مبتلا افراد کو کچی سبزیوں کا سلاد یا بھاپ سے تیار کی گئی سبزیوں کا سالن، پھل اور دودھ زیادہ مقدار میں استعمال کرنے چاہئیں۔ تازہ پھلوں کے جوس اور بے چھنے آٹے کی چپاتیاں، وٹامن، پروٹین، کیلشیم کی بھی مناسب مقدار استعمال کرنے سے ہڈی کے صحت مند گودے کی پیداوار میں اضافہ کیا جا سکتا ہے۔ان مریضوں کو زیادہ مصالحہ دار اور مرغن یا تلی ہوئی غذائی اشیا، سنیکس، چائے، مٹھائیاں، تمباکو نوشی، اور چٹ پٹی ڈشز سے پرہیز کرنا چاہیے۔ ریڑھ کی ہڈی کے مہروں کی سوزش دور کرنے کے لیے لہسن کا روزانہ استعمال بہت مفید ہے۔ حکما کے مطابق لہسن کا تیل متاثرہ حصے پر لگانے سے بھی فائدہ ہو سکتا ہے۔ یہ تیل کم از کم تین گھنٹے تک لگائے رکھیں۔ بعد میں نیم گرم پانی سے غسل کر لیں۔ تقریبا 15 دن یہ عمل دہرانے سے تکلیف میں آرام ملے گا اور صحت یابی ہو گی۔ اس تیل میں لیموں کا رس ملا کر گردن، کاندھوں اور ہاتھوں پر مالش کرنے سے بھی درد میں افاقہ ہو گا۔کمردرد اور ریڑھ کی ہڈی کی تکلیف میں کیلشیم اور وٹامن ڈی کو نظر انداز بالکل نہیں کرنا چاہیے، ان کی مناسب مقدار لینا یقینی بنائیں کیونکہ یہ دونوں ہڈیوں کی نمو اور مضبوطی کے لیے کلیدی اہمیت رکھتے ہیں۔ ان سے اول تو ہڈیاں مضبوط رہتی ہیں اور چوٹ کو برداشت کرنے کی صلاحیت ان میں بڑھ جاتی ہے، دوم، اگر چوٹ لگنے سے انہیں گزند پہنچے تو بحالی بہتر انداز میں ہو سکتی ہے۔ اولین ترجیح یہ ہونی چاہیے کہ اہم ایسی غذا استعمال کریں جن سے ریڑھ کی ہڈی سمیت ہماری تمام ہڈیاں مضبوط ہوں۔ ممکن ہے نوعمری اور بچپن میں اس امر کا پتا نہ چلے لیکن جوانی کے ڈھلنے کے ساتھ، ہم نے جن غذاوں کی عادت بنا لی ہوتی ہے، وہ ہماری صحت پر اثر انداز ہونا شروع ہو جاتی ہیں۔ اگر کوئی فرد صحت مندانہ اور متوازن غذائیں استعمال نہیں کرتا رہا تو عمر کے بڑھنے کے ساتھ اس کے ہڈیوں کے مسائل میں مبتلا ہونے کے امکانات زیادہ ہوں گے۔سبزیوں کے علاوہ بعض مصالحہ جات بھی ریڑھ کی ہڈی کے لیے مفید ہیں اور ان میں ہلدی قابل ذکر ہے۔
ہمارے ہاں کھانے میں ہلدی کا استعمال عام ہوتا ہے لیکن جن افراد کو ریڑھ کی ہڈی کا مسئلہ ہو انہیں اس کے استعمال کو یقینی بنانا چاہیے۔ ریڑھ کی ہڈی اور کمردرد کے مسئلے کا تعلق غذا کے علاوہ ہمارے اٹھنے بیٹھنے کے انداز اور طرززندگی سے بھی ہوتا ہے۔ اگر طرززندگی سست ہو اور بیٹھنے کا انداز درست نہ ہو تو کسی بھی عمر میں مشکل پیش آ سکتی ہے۔ لہذا جہاں غذا کا خیال رکھیں وہیں مناسب ورزش اور اٹھنے بیٹھنے کو یقینی بنائیں اسی لئے کہاجاتاہے کہ تندرستی ہزار نعمت ہے ۔اگر آپ صحت مند، اورتندرست رہنا چاہتے ہیں تو اپنی خوراک کو بہتر بنانے کی کوشش کریں کیو نکہ ایک صحت مند انسان میں قوت ِ مدافعت زیادہ ہوتی ہے جو ہمیں بیماریوں سے محفوظ رہنے میں مدد دیتی ہے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔


متعلقہ خبریں


مضامین
عمرؓکومعاف کردیں وجود جمعرات 29 جولائی 2021
عمرؓکومعاف کردیں

افغانستان میں امن اور کابل حکومت کی پروپیگنڈہ مہم وجود جمعرات 29 جولائی 2021
افغانستان میں امن اور کابل حکومت کی پروپیگنڈہ مہم

حیسکو قاتل بھی مقتول بھی وجود جمعرات 29 جولائی 2021
حیسکو قاتل بھی مقتول بھی

اگر اب بھی نہ جاگے۔پیگاسس جاسوسی اسکینڈل وجود جمعرات 29 جولائی 2021
اگر اب بھی نہ جاگے۔پیگاسس جاسوسی اسکینڈل

قوت گویائی کی بحالی میں کامیابی وجود منگل 27 جولائی 2021
قوت گویائی کی بحالی میں کامیابی

کون کہتاہے وجود اتوار 25 جولائی 2021
کون کہتاہے

اپنا دھیان رکھنا وجود اتوار 25 جولائی 2021
اپنا دھیان رکھنا

محکمہ بہبودی آبادی کے گریڈ چودہ کے ملازم کے اختیارات و مراعات!! وجود هفته 24 جولائی 2021
محکمہ بہبودی آبادی کے گریڈ چودہ کے ملازم کے اختیارات و مراعات!!

اپنوں کی حوصلہ شکنی حب الوطنی نہیں وجود هفته 24 جولائی 2021
اپنوں کی حوصلہ شکنی حب الوطنی نہیں

مسلماں نہیں راکھ کا ڈھیر ہے وجود بدھ 21 جولائی 2021
مسلماں نہیں راکھ کا ڈھیر ہے

مساوات، قربانی اور انعام وجود بدھ 21 جولائی 2021
مساوات، قربانی اور انعام

’’ایف آئی آر‘‘ کے خلاف سندھ حکومت کی قانونی کارروائی وجود بدھ 21 جولائی 2021
’’ایف آئی آر‘‘ کے خلاف سندھ حکومت کی قانونی کارروائی

اشتہار

افغانستان
امریکی جنگی طیاروں کے طالبان کے ٹھکانوں پر فضائی حملے وجود هفته 24 جولائی 2021
امریکی جنگی طیاروں کے طالبان کے ٹھکانوں پر فضائی حملے

افغان صدارتی محل میں نماز عید کے دوران راکٹ حملے کی ویڈیو وائرل وجود بدھ 21 جولائی 2021
افغان صدارتی محل میں نماز عید کے دوران راکٹ حملے کی ویڈیو وائرل

وزیر اعظم عمران خان نے افغان صدر اشرف غنی کو آئینہ دکھا دیا وجود هفته 17 جولائی 2021
وزیر اعظم عمران خان نے افغان صدر اشرف غنی کو آئینہ دکھا دیا

پاکستان سے 10ہزار جنگجو افغانستان میں داخل ہوئے ، اشرف غنی کا الزام وجود هفته 17 جولائی 2021
پاکستان سے 10ہزار جنگجو افغانستان میں داخل ہوئے ، اشرف غنی کا الزام

طالبان نے افغانستان کے شمالی علاقوں پر قبضہ کرلیا، امریکی میڈیا وجود پیر 12 جولائی 2021
طالبان نے افغانستان کے شمالی علاقوں پر قبضہ کرلیا، امریکی میڈیا

اشتہار

بھارت
بابری مسجد کی شہادت کے بعد مسلمان ہونے والے محمد عامر کی پر اسرار موت وجود اتوار 25 جولائی 2021
بابری مسجد کی شہادت کے بعد مسلمان ہونے والے محمد عامر کی پر اسرار موت

پیگاسس کے ذریعے جاسوسی،نریندر مودی نے غداری کا ارتکاب کیا، راہول گاندھی وجود هفته 24 جولائی 2021
پیگاسس کے ذریعے جاسوسی،نریندر مودی نے غداری کا ارتکاب کیا، راہول گاندھی

بھارت میں کورونا اموات سرکاری اعداد وشمار سے 10 گنا زیادہ ہوسکتی ہیں وجود بدھ 21 جولائی 2021
بھارت میں کورونا اموات سرکاری اعداد وشمار سے 10 گنا زیادہ ہوسکتی ہیں

افغانستان سے بھارتی سفارتکاروں کا انخلائ، سوشل میڈیا پہ مذاق اڑنے لگا وجود پیر 12 جولائی 2021
افغانستان سے بھارتی سفارتکاروں کا انخلائ، سوشل میڈیا پہ مذاق اڑنے لگا

نریندر مودی کی کابینہ میں شامل 42فیصدوزراء کے خلاف فوجداری مقدمات قائم ہیں'رپورٹ وجود پیر 12 جولائی 2021
نریندر مودی کی کابینہ میں شامل 42فیصدوزراء کے خلاف فوجداری مقدمات قائم ہیں'رپورٹ
ادبیات
عظیم ثنا ء خواں،شاعر اورنغمہ نگار مظفر وارثی کی دسویں برسی منائی گئی وجود جمعرات 28 جنوری 2021
عظیم ثنا ء خواں،شاعر اورنغمہ نگار مظفر وارثی کی دسویں برسی منائی گئی

لارنس آف عربیا، بچپن کیسے گزرا؟ وجود منگل 20 اکتوبر 2020
لارنس آف عربیا، بچپن کیسے گزرا؟

بیروت سے شائع کتاب میں اسرائیل نواز بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کا چہرہ بے نقاب وجود جمعرات 17 جنوری 2019
بیروت سے شائع کتاب میں اسرائیل نواز بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کا چہرہ بے نقاب

14واں بین الاقوامی کتب میلہ کراچی ایکسپوسینٹر میں ہوگا وجود پیر 10 دسمبر 2018
14واں بین الاقوامی کتب میلہ کراچی ایکسپوسینٹر میں ہوگا

شاعر جون ایلیا کو مداحوں سے بچھڑے 16 برس بیت گئے وجود جمعرات 08 نومبر 2018
شاعر جون ایلیا کو مداحوں سے بچھڑے 16 برس بیت گئے
شخصیات
188ارب ڈالر کے مالک ایلون مسک دنیا کے مالدار ترین آدمی بن گئے وجود جمعه 08 جنوری 2021
188ارب ڈالر کے مالک ایلون مسک دنیا کے مالدار ترین آدمی بن گئے

ہالی وڈ اداکار ادریس البا کی اہلیہ بھی کورونا سے متاثر وجود پیر 23 مارچ 2020
ہالی وڈ اداکار ادریس البا کی اہلیہ بھی کورونا سے متاثر

امریکی میگزین فوربز میں سب سے زیادہ کمانے والی شخصیات کی فہرست جاری وجود منگل 01 جنوری 2019
امریکی میگزین فوربز میں سب سے زیادہ کمانے والی شخصیات کی فہرست جاری

سال 2018، مختلف شعبہ ہائے حیات کی بہت سی عالمی شخصیات دنیا چھوڑ گئیں وجود بدھ 26 دسمبر 2018
سال 2018، مختلف شعبہ ہائے حیات کی بہت سی عالمی شخصیات دنیا چھوڑ گئیں

ماضی کی رہنما خواتین وجود پیر 14 مئی 2018
ماضی کی رہنما خواتین