وجود

... loading ...

وجود
وجود
ashaar

اویغور مسلمان‘ چین میں لاپتہ جغرافیہ کے پروفیسر کو زمین نگل گئی یا آسمان کھا گیا

منگل 15 اکتوبر 2019 اویغور مسلمان‘ چین میں لاپتہ جغرافیہ کے پروفیسر کو زمین نگل گئی یا آسمان کھا گیا

2017 تک تاشپولات طیپ ایک جانے پہچانے معلم اور سنکیانگ یونیورسٹی کے سربراہ تھے، ان کے دنیا بھر میں رابطے تھے جبکہ انھوں نے فرانس کی مشہور پیرس یونیورسٹی سے اعزازی ڈگری بھی حاصل کر رکھی تھی۔لیکن اسی برس وہ بغیر کسی پیشگی انتباہ کے لاپتہ ہو گئے اور اس حوالے سے چینی حکام مکمل خاموشی اختیار کیے ہوئے ہیں۔ان کے دوستوں کا خیال ہے کہ پروفیسر طیپ کو علیحدگی کی تحریک چلانے کا ملزم قرار دیا گیا، ان پر خفیہ انداز میں مقدمہ چلا اور بعدازاں اس جرم کی پاداش میں انھیں سزائے موت دے دی گئی۔پروفیسر طیپ چین کے صوبے سنکیانگ میں بسنے والے ایک اویغور مسلمان ہیں۔ انسانی حقوق سے متعلق سرگرم گروپس کا کہنا ہے کہ انھیں چین میں اویغور ادیبوں کے خلاف جاری کارروائیوں کے پس منظر میں گرفتار کیا گیا۔ چین اویغور مسلمانوں کو علیحدگی پسند اور دہشت گرد قرار دیتا ہے۔محقق اور ’پیپلز ریپبلک آف ڈس اپیئرڈ‘ نامی کتاب کے مصنف مائیکل کاستر نے بی بی سی کو بتایا کہ چین میں سینکڑوں اساتذہ اور پیشہ وارانہ مہارت کے حامل افراد کو بڑے پیمانے پر جاری آپریشن کے دوران حراست میں لیا گیا ہے۔یونیورسٹی میں پروفیسر طیپ کے ساتھیوں کو خدشہ ہے کہ اگر وہ ابھی بھی زندہ ہیں اور زیر حراست ہیں تو انھیں جلد ہی پھانسی کے پھندے پر لٹکا دیا جائے گا۔لاپتہ ہونے تک تاشپولات طیپ چین کی سرکاری سنکیانگ یونیورسٹی میں جغرافیے کے ایک انتہائی قابل احترام پروفیسر کے طور پر جانے جاتے تھے۔مقامی اویغور کمیونٹی کے ممبر ہونے کے ناطے انھوں نے اپنے آبائی صوبے سنکیانگ کی یوینورسٹی میں پڑھانا شروع کر دیا تھا۔ انھوں نے جغرافیہ کی تعلیم چین سے ہی حاصل کی اور کچھ عرصہ جاپان گذارنے کے بعد انھوں نے دوبارہ اپنی یونیورسٹی میں پڑھانا شروع کر دیا۔وہ عالمی سطح پر ادبی حلقوں میں متحرک تھے۔ انھیں فرانس کی ایک یونیورسٹی نے اعزاز سے بھی نوازا۔ وہ جغرافیے کے شعبے سے وابستہ ماہرین کے بین الاقوامی نیٹ ورک سے بھی منسلک تھے۔وہ سنہ 2010 میں چین کی کمیونسٹ پارٹی کے رکن بھی بنے۔ اپنے لاپتہ ہونے تک وہ سنکیانگ یونیورسٹی کے سربراہ کی حیثیت سے کام کر رہے تھے۔پروفیسر طیپ کے خلاف چلنے والے مقدمے کی تفصیلات کو انتہائی مخفی رکھا گیا اور ان پر کیا بیتی اس سے متعلق کوئی سرکاری ریکارڈ موجود نہیں ہے۔پروفیسر طیپ کے دوستوں کا کہنا ہے کہ لاپتہ ہونے سے قبل وہ یورپ میں ایک کانفرنس میں شرکت کرنے جارہے تھے اور اس دورے کے دوران انھوں نے ایک جرمنی کی یونیورسٹی سے تعاون سے متعلق ایک معاہدہ بھی کرنا تھا۔لیکن جب وہ یورپ جانے کے لیے بیجنگ ایئرپورٹ پہنچے تو انھیں روکا گیا اور یہ بتایا گیا کہ وہ سنکیانگ کے دارالحکومت ارومچی پہنچیں۔امریکہ سے ان کے ایک دوست نے بی بی سی کو بتایا کہ ان سے متعلق دستیاب معلومات کا اس سے زیادہ کچھ علم نہیں ہے۔ پروفیسر طیپ کے خلاف چلنے والے مقدمے کی تفصیلات کو انتہائی مخفی رکھا گیا اور ان پر کیا بیتی اس سے متعلق کوئی سرکاری ریکارڈ موجود نہیں ہے۔اس کے بعد پروفیسر طیپ کبھی گھر واپس نہیں آئے۔ اس کے بعد ان کے دوستوں اور رشتہ داروں سے بد عنوانی سے متعلق پوچھ گچھ کی گئی۔ان کی یونیورسٹی کے ایک سابق پروفیسر نے بی بی سی کو بتایا کہ اس کے بعد ان کے خاندان کو یہ اطلاع ملی کہ انھیں علیحدگی کی تحریک چلانے کا مرتکب قرار دے کر سزائے موت دے دی گئی ہے۔تاہم چین نے اس مقدمے سے متعلق کسی قسم کی کبھی کوئی تصدیق نہیں کی ہے۔


متعلقہ خبریں


امریکا ، پولیس کے نسل پرستانہ رویے کے خلاف احتجاجی مظاہرے وجود - بدھ 22 جنوری 2020

امریکا میں نسل پرستی کے خلاف جدوجہد کرنے والی مختلف تنظیموں کے سینکڑوں کارکنوں نے پورٹ لینڈ شہر میں مظاہرے کیے ۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق امریکی پولیس کے نسل پرستانہ رویئے کے خلاف اس مظاہروں کی کال بلیک لائف میٹر اور نسل پرستی کے خلاف جدوجہد کرنے والی دوسری تنظیموں نے دی تھی۔ مظاہرے کے شرکا نے زمین پر لیٹ کر پولیس کے نسل پرستانہ تشدد کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے حکومت سے لازمی اقدامات کی اپیل کی۔امریکہ میں کرائے جانے والے رائے عامہ کے تازہ جائزوں کے مطابق 56 فی صد امریکی شہ...

امریکا ، پولیس کے نسل پرستانہ رویے کے خلاف احتجاجی مظاہرے

مکیش امبانی مسلسل 12 ویں بار امیر ترین بھارتی قرار وجود - بدھ 22 جنوری 2020

بھارتی بزنس مین مکیش امبانی مسلسل 12 ویں مرتبہ بھارت کے امیر ترین شخص قرار پائے ، 2019 میں ان کی دولت 58.4 ارب ڈالر رہی۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق بھارت کے 15 ارب پتی شخصیات کی مجموعی دولت 197.8 ارب ڈالر کے برابر ہے ۔ سالانہ رپورٹ کے مطابق 2019 میں متعدد بھارتی ارب پتی شخصیات کی دولت میں کمی ہوئی لیکن مکیش امبانی مسلسل 12 ویں مرتبہ بھارت کے امیر ترین شخص قرار پائے ۔15عشاریہ 3ارب ڈالر کے ساتھ بھارتی صنعت کار شیونادر دوسرے نمبر پر رہے ، جبکہ بھارت کے تیسرے امیر ترین شخص بی...

مکیش امبانی مسلسل 12 ویں بار امیر ترین بھارتی قرار

امریکا کی بزدلانہ کارروائی کا مردانہ وار جواب دیں گے ، ایران وجود - بدھ 22 جنوری 2020

ایران کی قدس فورس کے نئے سربراہ اسماعیل قانی نے امریکا کو مخاطب کرتے ہوئے کہا ہے کہ جنرل قاسم سلیمانی کو بزدلانہ حملے میں شہید کرنے والے امریکا پر مردانہ وار کارروائی کرکے جواب دیں گے ۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق ایران کی قدس فورس کے سربراہ اسماعیل قانی نے کہا کہ امریکا نے بزدلوں کی طرح حملہ کرکے جنرل قاسم سلیمانی کو شہید کیا ہے جس کا ہم مردوں کی طرح بہادری سے جواب دیں گے ۔قدس فورس کے سربراہ نے کہا کہ ایران امریکا کی طرح پیچھے سے بزدلانہ وار نہیں کرتا بلکہ مردوں کی طرح سا...

امریکا کی بزدلانہ کارروائی کا مردانہ وار جواب دیں گے ، ایران

کورونا وائرس امریکا پہنچ گیا، پہلے متاثرہ شخص کی تصدیق وجود - بدھ 22 جنوری 2020

کورونا وائرس امریکا پہنچ گیا ، امریکی حکام کی جانب سے پہلے متاثرہ شخص کی تصدیق کی گئی ۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق امریکی حکام کی جانب سے تصدیق کی گئی ہے کہ چائنا وائرس، یعنی کورونا وائرس سے متاثرہ ایک شخص کی تصدیق ہوئی ہے جو حال ہی میں چین کے سفر سے واپس آیا تھا۔امریکا کے سینٹر فار ڈیزیز کنٹرول (سی ڈی سی)کی جانب سے کہا گیا کہ چین میں دریافت ہونے والا وائرس امریکی شہر سیاٹل میں ایک ایسے شخص میں پایا گیا جو چین کے سفر سے واپس آیا تھا۔امریکہ میں پائے جانے والا مریض 30 کی دہ...

کورونا وائرس امریکا پہنچ گیا، پہلے متاثرہ شخص کی تصدیق

ٹرمپ عنقریب صدی کی ڈیل کے حوالے سے حتمی اعلان کرنے والے ہیں، امریکی عہدیدار وجود - منگل 21 جنوری 2020

  وائٹ ہائوس کے ایک عہدیدار نے کہا ہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کچھ دن میں مشرق وسطیٰ کے لیے اپنے مجوزہ امن منصوبے صدی کی ڈیل کے بارے میں حتمی اعلان کرنے کی تیاری کررہے ہیں۔ا نہوں نے غیرملکی خبررساں ادارے کو بتایا کہ صدی کی ڈیل کے حوالے سے صدرٹرمپ خود ہی کوئی فیصلہ کریں گے ۔اس فیصلے کے حوالے سے وقت ایک اہم عنصرہوگا کیونکہ اس معاملے میں تاخیرامریکی صدارتی انتخابات کی وجہ سے اس منصوبے کے مفاد میں نہیں ہوگی۔وائٹ ہائوس نے بحرین کے دارالحکومت منامہ میں امن سے خوشحالی کے نام...

ٹرمپ عنقریب صدی کی ڈیل کے حوالے سے حتمی اعلان کرنے والے ہیں، امریکی عہدیدار

چین میں فی کس جی ڈی پی 10 ہزار ڈالرسے تجاوز کرگئی وجود - منگل 21 جنوری 2020

چین کی قومی ترقی و اصلاحات کی کمیٹی کے ترجمان مینگ وے نے کہا ہے کہ 2019 میں چین میں فی کس جی ڈی پی دس ہزار امریکی ڈالر سے تجاوز کرگئی ہے ۔بیجنگ میں ایک پریس کانفرنس کے دوران انہوں نے کہا کہ اس سے چین کی مجموعی طاقت میں اضافے ، سماجی پیداواری صلاحیت کے فروغ اور عوامی زندگی کی بہتری کی عکاسی ہوتی ہے ۔یہ چین کے ہمہ گیر خوشحال معاشرے کی تعمیر کے راستے میں حاصل کردہ ایک اہم کامیابی ہے ۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ ترقی یافتہ ممالک میں فی کس جی ڈی پی تیس ہزار امریکی ڈالر سے زیادہ ہے ، ا...

چین میں فی کس جی ڈی پی 10 ہزار ڈالرسے تجاوز کرگئی

ایرانی سپریم لیڈر الفاظ کے چنائو میں احتیاط کریں، ٹرمپ وجود - اتوار 19 جنوری 2020

امریکی صدر ٹرمپ نے ایران کے سپریم لیڈر آیت اللہ خامنہ ای کو الفاظ کے چناومیں محتاط رہنے کی تنبیہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ امریکا اور یورپ کے بارے میں غلط باتوں سے پرہیز کریں۔سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے ایک پیغام میں انہوں نے کہا کہ ایران کی معیشت تباہ ہو رہی ہے ،وہاں لوگ مشکلات کا شکار ہیں۔انہوں نے کہا کہ ایرانی سپریم لیڈر آیت اللہ خامنہ ای الفاظ کے چنائو میں احتیاط کریں۔ واضح رہے کہ گذشتہ روز 8 سال بعد پہلی مرتبہ نماز جمعہ کی امامت کرتے ہوئے ایرانی سپریم لیڈر آیت الل...

ایرانی سپریم لیڈر الفاظ کے چنائو میں احتیاط کریں، ٹرمپ

جاپان، کوبے میں آنے والے شدید زلزلے کو 25 سال مکمل وجود - اتوار 19 جنوری 2020

جاپان کے مغربی علاقے کوبے اور اِردگرد کے علاقوں کو ہلا کر رکھ دینے والے تباہ کن زلزلے کو آئے 25 سال مکمل ہو گئے ہیں، اس زلزلے کے باعث 6 ہزار 4 سو 34 افراد ہلاک ہو گئے تھے ۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق 17 جنوری 1995 کو آنے والا یہ زلزلہ گریٹ ہانشن اواجی زلزلہ کہلاتا ہے ، اس زلزلے سے کئی عمارتیں تباہ ہوئی تھیں اور کئی میں آگ لگ گئی تھی۔سب سے متاثرہ کوبے شہر کے ایک پارک میں ہلاک شدگان کی یاد میں بانس سے بنی لالٹینیں روشن کی گئیں۔

جاپان، کوبے میں آنے والے شدید زلزلے کو 25 سال مکمل

بانی اسرائیل کے بیٹے کی ریاست کے مجرمانہ پروگرام پر اظہار شرمندگی وجود - اتوار 19 جنوری 2020

اسرائیلی ریاست کے بانی کے بیٹے ''یعقوف شریٹ''نے صہیونی ریاست کے مجرمانہ پروگرام پر افسوس اور شرمندگی کا اظہار کیا ہے ۔ ان کا کہنا ہے کہ انہیں نہ صرف 1940 ء کی د ہائی میں جزیرہ نما النقب پر سمجھوتے پر افسوس ہے بلکہ وہ صہیونی ریاست کے پورے پروگرام پر شرمندہ ہیں۔ دیے گئے انٹرویو میں مسٹر یعقوف شریٹ نے کہا کہ اگرچہ ان کے آبائو اجداد نے ارض فلسطین میں اسرائیلی ریاست قائم کی۔ وہ اسرائیل کے بانی موشے شریٹ کا بیٹا ہونے کے باوجود صہیونی ریاست کے جرائم کی حمایت نہیں کرسکتے ۔ وہ اسرائیل...

بانی اسرائیل کے بیٹے کی ریاست کے مجرمانہ پروگرام پر اظہار شرمندگی

سلامتی کونسل اجلاس سے بھارت پر دبائو بڑھے گا، منیر اکرم وجود - اتوار 19 جنوری 2020

اقوام متحدہ میں پاکستان کے مستقل مندوب منیر اکرم نے کہا ہے کہ سلامتی کونسل کے اجلاس سے بھارت پر دبائوبڑھے گا، بھارت کو اپنے جارحانہ اقدامات واپس لینے کا پیغام دیا گیا ہے ۔ سلامتی کونسل جب چاہے مسئلہ کشمیر کو اٹھا سکتی ہے ۔ سلامتی کونسل کی 50سال سے غیر فعال قراردادیں اب فعال ہو چکی ہیں۔ نہ صرف چین بلکہ اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انتونیو گوتیرس نے بھی واضح بیان دیا ہے ۔ حق خودارادیت کو دہشت گردی سے جوڑنے کی بھارت کی کوششوں کو رد کیا گیا۔ نجی ٹی وی سے انٹرویو میں منیر اکرم کا ک...

سلامتی کونسل اجلاس سے بھارت پر دبائو بڑھے گا، منیر اکرم

فلسطین ہمارا پہلا مسئلہ تھا ہے اور رہے گا، سعودی عرب وجود - جمعه 17 جنوری 2020

سعودی وزیر خارجہ شہزادہ فیصل بن فرحان آل سعود نے کہا ہے کہ فلسطین ہمارا پہلا مسئلہ تھا، آج بھی ہے اور آئندہ بھی رہے گا۔سعودی وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ ہم نے ہمیشہ عرب امن فارمولے اور بین الاقوامی قانونی قراردادوں کے مطابق جامع عرب حل کا مطالبہ کیا ہے ۔ انھوں نے کہا ہے کہ ہمارا غیر متزلزل موقف ہے کہ فلسطینیوں کے حوالے سے قابض حکام کے یکطرفہ اقدامات غیر قانونی ہیں۔انھوں نے کہا کہ سعودی عرب، عرب ممالک کے اتحاد و سالمیت کو ضروری سمجھتا ہے اور عربوں کے استحکام کو خطرہ لاحق کرنے والی...

فلسطین ہمارا پہلا مسئلہ تھا ہے اور رہے گا، سعودی عرب

ایرانی حکومت ہر آنے والے دن اپنا قانونی جواز کھو رہی ہے ، مائیک پومپیو وجود - جمعه 17 جنوری 2020

امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے ایرانی حکومت پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ تہران حکومت اپنے عوام اور پوری دنیا سے مسلسل جھوٹ بول رہی ہے ۔پومپیو نے اپنے ٹویٹر اکائونٹ پر پوسٹ کردہ ایک ٹویٹ میں لکھا کہ ایرانی حکومت اپنے عوام سے مسلسل جھوٹ بول رہی ہے اور اس کے ساتھ توہین آمیز سلوک کررہی ہے ۔ ایرانی رجیم اپنے من پسند لوگوں کو انتخابات میں کامیاب کرانے کے لیے پارلیمنٹ کے انتخابات میں دھاندلی کی بھی مرتکب ہے ۔انہوں نے یہ بھی مزید کہا کہ یہاں تک کہ ایران کے صدر کا کہنا ہے کہ ی...

ایرانی حکومت ہر آنے والے دن اپنا قانونی جواز کھو رہی ہے ، مائیک پومپیو