وجود

... loading ...

وجود
وجود
ashaar

مصر کے سابق صدر محمد مرسی سپردِ خاک، اخوان المسلمون نے موت قتل قرار دیدی

منگل 18 جون 2019 مصر کے سابق صدر محمد مرسی سپردِ خاک، اخوان المسلمون نے موت قتل قرار دیدی

مصر کے سابق صدر اور اخوان المسلمون کے رہنما محمد مرسی قاہرہ کے مشرقی علاقے مدین النصر میں سپرد خاک کردیا گیا، تدفین کے وقت سابق صدر کا خاندان موجود تھا۔اخوان المسلمون نے محمد مرسی کی موت کو مکمل طور پر قتل قرار دیا ہے۔ مصر میں پہلی مرتبہ جمہوری طور پر منتخب ہونے والے صدر ڈاکٹر محمد مرسی کمرہ عدالت میں اچانک حرکت ِ قلب بند ہونے سے انتقال کر گئے تھے، ان کی عمر 67 سال تھی۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق ڈاکٹر محمد مرسی قاہرہ کی ایک عدالت میں اپنے خلاف مقدمے کی سماعت کے دوران جج کے روبرو دلائل دے رہے تھے، اس دوران ان کی حالت اچانک بگڑ گئی، وہ وہیں گر گئے اور پھر دم توڑ گئے جس کے بعد ان کی میت ہسپتا ل منتقل کر دی گئی۔ ایمنسٹی انٹرنیشنل اور ہیومن رائٹس واچ نے محمد مرسی کی موت کی غیر جانبدارانہ تحقیقات کا مطالبہ کیا ہے۔مصر کے سابق صدر مرسی کا انتقال عدالت میں اس وقت ہوا جب وہ اپنے خلاف ایک مقدمے کی سماعت میں شریک تھے۔انسانی حقوق کی عالمی تنظیم ایمنسٹی انٹرنیشنل نے کہا ہے کہ محمد مرسی کو قید کے دوران صرف 3 بار اپنے رشتے داروں سے ملنے کی اجازت دی گئی جبکہ انہیں ان کے وکیل اور ڈاکٹر سے بھی ملنے نہیں دیا گیا۔ہیومن رائٹس واچ کی مشرقِ وسطی کی ڈائریکٹر سارہ لی وٹسن نے محمد مرسی کی موت کو خوفناک قرار دیا ہے۔ترکی کے صدر رجب طیب اردوان نے محمد مرسی کی موت کا الزام مصر کے غاصبوں پر عائد کیا ہے جبکہ قطر کے امیر شیخ تمیم بن حماد الثانی نے ان کی موت پر گہرے دکھ کا اظہار کیا ہے۔دوسری جانب اخوان المسلمون نے محمد مرسی کی موت کو مکمل طور پر قتل قرار دیتے ہوئے دنیا بھر میں موجود مصر کے سفارت خانوں کے باہر مظاہرے کرنے کی اپیل کی ہے۔واضح رہے کہ محمد مرسی 1951 میں مصر کے ضلع شرقیہ کے گاؤں ال ادوا میں پیدا ہوئے، انہوں نے قاہرہ یونیورسٹی سے انجینئرنگ جبکہ امریکا سے پی ایچ ڈی کی۔ 2012 میں اخوان المسلمون نے میں محمد مرسی کو اپنا صدارتی امیدوار چنا تھا۔مصری فوج نے 3 جولائی 2013 کو مصر کی پہلی جمہوری حکومت کا اقتدار صرف ایک سال بعد اس کا تختہ الٹ کر ختم کر دیا تھا اور محمد مرسی کو ان کے سرکردہ وزرا اور اخوان المسلمون کے رہنماوں سمیت گرفتار کر کے قید کر دیا تھا اور ان کے خلاف جھوٹے مقدمات درج کر لیے تھے۔


متعلقہ خبریں


کورونا وائرس کی وجہ سے 9 سال پرانی فلم کی مقبولیت میں اضافہ وجود - جمعه 27 مارچ 2020

ہالی وڈ کی 9 سال قبل ریلیز ہونے والی فلم ''کونٹیجن'' نے ریلیز کے وقت باکس آفس پر 60 ملین ڈالرز کمائی کی تھی لیکن اب 2020 میں جان لیوا کورونا وائرس کے پیشِ نظر فلم کی مقبولیت میں اضافہ ہوگیا ہے ۔اسٹیوین سوڈربرگ کی ہدایت کاری میں بننے والی ہالی وڈ فلم 'کونٹیجن' کی 2020 میں مقبولیت کی وجہ کووڈ 19 یعنی کورونا وائرس ہے کیونکہ اس فلم کی کہانی افسانوی بیماری 'ایم ای ویـ1' پر مبنی ہے جو کہ ایشیا سے پھیلنے کے بعد دنیا بھر میں لاکھوں لوگوں کی ہلاکتوں کی وجہ بنی۔' وارنر بروس' کی 2011 می...

کورونا وائرس کی وجہ سے 9 سال پرانی فلم کی مقبولیت میں اضافہ

کرونا سے 199 ممالک میں 24 ہزار ہلاکتیں ،امریکا میں تیزی وجود - جمعه 27 مارچ 2020

دنیا بھر میں کرونا کا خوف، 199 ممالک میں 24 ہزار 87 افراد ہلاک ہو چکے ہیں، عالمی وبا نے پانچ لاکھ بتیس ہزار 224 افراد کو لپیٹ میں لے لیا جبکہ صحت یاب افراد کی تعداد ایک لاکھ 24 ہزار 326 ہے ، امریکا میں کرونا سے متاثرین افراد کی تعداد دنیا میں سب سے زیادہ ہو گئی۔میڈیارپورٹس کے مطابق عالمی وبا سے امریکا میں 1300 افراد ہلاک اور 85 ہزار 594 افراد متاثر ہو چکے ہیں۔ چین میں کرونا سے ہلاک افراد کی تعداد 3 ہزار 292 ہو گئی جبکہ متاثرین کی تعداد 81 ہزار 340 ہے ۔ اٹلی میں کرونا سے آٹھ ہ...

کرونا سے 199 ممالک میں 24 ہزار ہلاکتیں ،امریکا میں تیزی

نئے نوول کورونا وائرس میں جینیاتی تبدیلی کی رفتار فلو سے سست قرار وجود - جمعه 27 مارچ 2020

نئے کورونا وائرس کے حوالے سے ایک اچھی خبر سامنے آئی ہے کہ اس میں تغیر یا تبدیلی کی رفتار دیگر وائرسز جیسے فلو کے مقابلے میں بہت کم ہے ۔میڈیارپورٹس کے مطابق یہ دعویٰ وائرس کے پھیلائو پر نظر رکھنے والے ماہرین نے کیا اور وائرس میں تبدیلی کی سست رفتار 2 مثبت اثرات کو ظاہر کرتی ہے ۔پہلی چیز تو یہ ہے کہ یہ وائرس اپنی موجودہ حالت میں مستحکم ہے اور آگے پھیلنے پر بھی اس سے زیادہ خطرناک نہیں ہوگا اور دوسرا پہلو یہ ہے کہ اس کے لیے تیار کی جانے والی ویکسین طویل المعیاد بنیادوں پر موثر ثا...

نئے نوول کورونا وائرس میں جینیاتی تبدیلی کی رفتار فلو سے سست قرار

اٹلی میں کورونا سے 8000، اسپین میں 4000 سے زائد اموات وجود - جمعه 27 مارچ 2020

اٹلی میں کورونا وائرس آج بھی 662 زندگیاں لے گیا، اموات 8 ہزار سے اوپر چلی گئیں جبکہ اسپین میں 458 زندگیاں گئیں، تعداد 4 ہزار سے اوپر ہوگئی۔ادھر امریکا میں مریضوں کی تعداد 75 ہزار سے تجاوز کرگئی جبکہ برطانیہ میں مزید 320 افراد میں کورونا مرض کی تشخیص ہوئی، مجموعی تعداد 9 ہزار 800 سے زائد ہوگئی۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق کورونا وائرس کے باعث ایران میں 2200 افراد جان سے جاچکے ہیں جبکہ مریضوں کی تعداد 29 ہزار سے تجاوز کرگئی۔دنیا بھر میں مریضوں کی تعداد 5 لاکھ سے اوپر چلی گئی،...

اٹلی میں کورونا سے 8000، اسپین میں 4000 سے زائد اموات

اٹلی کے ڈاکٹروں کی دنیا بھر میں تعریف،تصاویر سوشل میڈیاپر وائرل وجود - جمعه 27 مارچ 2020

پاکستان سمیت دنیا بھر میں کورونا وائرس سے فرنٹ لائن پر نبرد آزما ڈاکٹرز، نرسوں اور پیرامیڈکس کو خراج تحسین پیش کرنے کا سلسلہ جاری ہے ۔ اٹلی میں ڈاکٹروں اور نرسوں کی آئی سی یو سے شیئر کی گئیں تصاویر نے دنیا بھر میں لوگوں کو ان کا گرویدہ کر لیا۔میڈیارپورٹس کے مطابق اٹلی میں کورونا وائرس کے مریضوں کے علاج میں مصروف ڈاکٹروں اور نرسوں نے اپنی تصاویر سوشل میڈیا پر شیئر کیں۔ آئی سی یو میں مریضوں کے علاج کے لئے کئی گھنٹے حفاظتی کٹس اور سامان پہنے رکھنے کے باعث ڈاکٹرز اور نرسوں کے چہر...

اٹلی کے ڈاکٹروں کی دنیا بھر میں تعریف،تصاویر سوشل میڈیاپر وائرل

برطانیا میں کورونا سے مزید 115 افراد ہلاک،ہلاکتیں 578ہوگئیں وجود - جمعه 27 مارچ 2020

برطانیا میں کورونا وائرس سے مزید 115 افراد ہلاک ہو گئے جس کے بعد مجموعی تعداد 578 ہو گئی جبکہ مریضوں کی تعداد ساڑھے 11 ہزار سے زائد ہو گئی۔برطانوی میڈیا کے مطابق برطانیہ میں جان بوجھ کر کھانسنا بھی جرم قرار دیدیا گیا، خود کو کورونا کا مریض ظاہر کر کے طبی عملے پر کھانسنے والے کو دو سال قید ہوگی۔عوام کو گھروں تک محدود رکھنے کیلئے پولیس کو نئے اختیارات مل گئے ، لاک ڈاون کی خلاف ورزی پر گرفتار ہونے والے پر 60 پاونڈ جرمانہ ہوسکے گا۔ ہر مرتبہ جرمانہ دوگنا بڑھتا جائے گا۔ اپنا کام کر...

برطانیا میں کورونا سے مزید 115 افراد ہلاک،ہلاکتیں 578ہوگئیں

کوروناوائرس ، متاثرہ ملکوں میں امریکا نے چین کو پیچھے چھوڑ دیا وجود - جمعه 27 مارچ 2020

کورونا وائرس سے متاثرہ ملکوں میں امریکا نے چین کو پیچھے چھوڑ دیا اور پہلی پوزیشن پر آگیا۔میڈیارپورٹس کے مطابق امریکا میں کورونا مریضو ں کی تعداد 85 ہزار 280 ہوگئی جبکہ چین میں یہ تعداد 81 ہزار 340 ہے ۔چین میں کورونا سے ہلاک ہونے والے افراد کی تعداد 3,292 ہے جبکہ امریکا میں آج 266 نئی ہلاکتوں کے بعد مجموعی تعداد 1293 ہوچکی ہے ۔دوسری جانب نیو یارک میں کورونا مریضوں کے لیے درکار وینٹی لیٹرز کی شدید کمی کے باعث دو مریضوں کے لیے ایک ہی وینٹی لیٹر استعمال کرنے کی اجازت دے دی گئی ہے...

کوروناوائرس ، متاثرہ ملکوں میں امریکا نے چین کو پیچھے چھوڑ دیا

198 ممالک میں کورونا وائرس پھیل گیا، مرنیوالوں کی تعداد 21 ہزار 295 ہوگئی وجود - جمعرات 26 مارچ 2020

دنیا کے 198 ممالک میں کورونا وائرس پھیل گیا، مرنے والوں کی تعداد 21 ہزار 295 ہوگئی ۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق چین میں مزید 6 افراد ہلاک ہوئے جس کے بعد مرنے والوں کی تعداد 3 ہزار 2 سو 87 ہو گئی، امریکا میں مزید 5 افراد کی ہلاکت کے بعد تعداد ایک ہزار 32 ہوگئی۔ جنوبی کوریا میں بھی 5 ہلاکتیں ہوئیں، تعداد ایک سو اکتیس ہو گئی۔دنیا بھر میں اٹلی میں سب زیادہ ہلاکتیں ہوئیں تعداد 7 ہزار 5 سو تین ہو چکی ہے ، سپین دوسرے نمبر پر ہے جہاں مرنے والوں کی تعداد 3 ہزار 6 سو 47 ہے ، ایران ...

198 ممالک میں کورونا وائرس پھیل گیا، مرنیوالوں کی تعداد 21 ہزار 295 ہوگئی

ایران ، کرونا مریضوں کی ناکوں میں معجزاتی خوشبوڈالنے والامعالج فرار وجود - جمعرات 26 مارچ 2020

ایران میں تیل کے ذریعے کرونا وائرس کے مریضوں کے علاج کا دعوی کرنے والی مذہبی شخصیت کے فرار ہو جانے پر ملکی حلقوں اور سوشل میڈیا پر ہنگامہ برپا ہو گیا ہے ۔میڈیارپورٹس کے مطابق عدالت نے مرتضی کوہنسال نامی شخص کے خلاف گرفتاری کا وارنٹ جاری کیا ، شمالی ایران کے شہر انزالی میں جنرل پراسیکیوٹر نے انکشاف کیا کہ یہ گرفتاری کا وارنٹ اس شخص کے خلاف جاری کیا گیا ہے جس نے متعدد مریضوں کی زندگیوں کو خطرے میں ڈال دیا۔کوہنسال نے اپنی جانب سے دی جانے والی دوا کو نبی کے عطرکا نام دے رکھا تھا۔...

ایران ، کرونا مریضوں کی ناکوں میں معجزاتی خوشبوڈالنے والامعالج فرار

قم میں کرونا وائرس چینی طلبا کے ذریعے پھیلا،ایرانی وزارت صحت وجود - جمعرات 26 مارچ 2020

ایرانی وزارت صحت کے ایک سینئر عہدیدار علی رضا رئیسی نے کہا ہے کہ اس بات کے اشارے ملے ہیں کہ قم شہر میں کرونا وائرس وہاں پر زیرتعلیم بعض چینی طلبا اور چینی ملازمین کے ذریعے پھیلا ہے ۔میڈیارپورٹس کے مطابق انہوں نے ایک ویڈیو کانفرنس کے دوران بتایا کہ قم میں کرونا کا پہلا کیس سامنے آنے کے بعد وزارت صحت کی ٹیم اس وبا کے وہاں پہنچنے کے اسباب کا مطالعہ اور تحقیق کررہی ہے ۔ یہ ٹیم اس نتیجے تک پہنچی ہے کہ قم میں یہ وائرس چینی طلبا اور وہاں پرکام کرنے والے بعض ملازمین کے ذریعے ہی پہنچا...

قم میں کرونا وائرس چینی طلبا کے ذریعے پھیلا،ایرانی وزارت صحت

ایران میں قید ایف بی آئی ایجنٹ کی پراسرار موت کا انکشاف وجود - جمعرات 26 مارچ 2020

امریکی وفاقی تحقیقاتی ادارے ایف بی آئی کے سابق ایجنٹ باب لیونسن کے اہلخانہ جو 2007 میں پراسرار حالات میں ایران میں غائب ہوگئے تھے نے اعلان کیا ہے کہ باب لیونسن کا ایران میں ایک جیل میں انتقال ہوگیا ہے ۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق اہل خانہ نے ایک بیان میں کہا کہ ہمیں حال ہی میں امریکی عہدیداروں سے اطلاعات موصول ہوئیں جن سے یہ نتیجہ اخذ کیا جاسکتا ہے کہ ہم ایک بہترین شوہر اور شاندار باپ سے محروم ہوگئے ہیں۔ باب لیونسن ایران میں دوران حراست پراسرار طور پر ہلاک ہوگئے ہیں۔اہل خا...

ایران میں قید ایف بی آئی ایجنٹ کی پراسرار موت کا انکشاف

ایرانی رجیم کی وجہ سے ان کے عوام کے مصائب بڑھ رہے ہیں،امریکا وجود - جمعرات 26 مارچ 2020

امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے ڈاکٹرز ود آئوٹ بائونڈریزکی ایک ٹیم کو ملک بدر کرنے پر ایران کو شدید تنقید کا نشانہ بنایاہے اورکہاہے کہ ایرانی عوام کی مشکلات تہران رجیم کی وجہ سے مسلسل بڑھ رہی ہیں۔ میڈیارپورٹس کے مطابق امریکی وزیر خارجہ نے اپنے ٹویٹر اکانٹ پر پوسٹ کردہ ایک ٹویٹ میں کہا کہ ایرانی حکومت نے اطبا بلا حدودکی ایک میڈیکل ٹیم ملک سے نکال دی ہے ۔ یہ ٹیم کرونا وائرس سے متاثرہ مریضوں کی مدد کے لیے فیلڈ اسپتال میں کام کر رہی تھی۔ انہوں نے مزید کہا کہ ایرانی عوام تہران پ...

ایرانی رجیم کی وجہ سے ان کے عوام کے مصائب بڑھ رہے ہیں،امریکا