سلمان خان کے قتل کا منصوبہ بے نقاب ، منصوبہ ساز گرفتار

بالی ووڈ کے سپر اسٹار سلمان خان کے قتل کے منصوبے نے دنیا بھر میں شوبز کے حلقوں کو چونکا دیا ہے۔ ہریانہ پولیس نے انکشاف کیا ہے کہ سلمان خان کے قتل کے منصونہ ساز سمپت نہرا کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔ بھارتی ذرائع ابلاغ کے مطابق بھارتی فلم انڈسٹری کے سلوبھائی کی سپاری بدنام زمانہ گینگسٹر لارینس بشنوئی نے سمپت نہرا کو دی تھی۔بھارتی میڈیا کے مطابق ڈی آئی جی ہریانہ پولیس نے انکشاف کیا ہے کہ سلمان خان قاتل نشانہ باز کے ریڈار پر تھے ، جو گزشتہ کئی ماہ سے اداکار کی حرکات و سکنات پر نظر رکھے ہوئے تھا ۔ ہریانہ کی اسپیشل ٹاسک فورس نے سلمان خان پر حملے کی منصوبہ بندی کرنے والے کرائے کے قاتل سمپت نہرا کو حیدرآباد سے گرفتار کرلیا ہے ۔پولیس کی ابتدائی تفتیش میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ سمپت نہرا کا تعلق لارنس بشنوئی کے گینگ سے ہے ،جس نے سلمان خان کو اس سے قبل بھی قتل کرنے کی دھمکی دے رکھی تھی۔واضح رہے کہ بشنوئی قبیلے کے حوالے سے یہ بات سامنے آئی ہے وہ نایاب کالے ہرن کی پوجا کرتے ہیںاور سلمان خان کالے ہرن کے شکار میں عدالتی کارروائی بھگت رہے ہیں۔پولیس کے مطابق ممکنہ طور پر سمپت نہرا اداکار کو لارینس بشنوئی کے کہنے پر قتل کرنا چاہتے تھے ، حیدرآباد سے گرفتار ملزم نے انکشاف کیا کہ اس نے دو ماہ تک سلمان خان کے گھر کی ریکی کرنے سمیت ان کے آنے جانے اور گھر کی سیکیورٹی سے متعلق بھی معلومات حاصل کرلی تھی۔پولیس کے مطابق گرفتار ملزم نے اس بات کا بھی اعتراف کیا کہ اس نے سلمان خان کو عین اس وقت قتل کرنے کا منصوبہ بنا رکھا تھا، جب اداکار جیل سے رہائی کے بعد ممبئی میں اپنے گھر کی بالکونی سے مداحوں کو ہاتھ ہلا کر جواب دے رہے تھے ، تاہم ملزم اپنے منصوبے میں ناکام رہے ۔

واضح رہے کہ سلمان خان کو رواں برس اپریل میں بھارتی ریاست راجستھان کے شہر جودھپور کی مقامی ٹرائل عدالت نے 1998 میں نایاب ہرن کے شکار کے مقدمے میں 5 سال قید اور 10 ہزار روپے جرمانے کی سزا سنائی تھی۔عدالتی فیصلے کے بعد سلمان خان کو جودھپور سینٹرل جیل منتقل کیا گیا تھا، جہاں انہوں نے دودن گزارے تھے ، بعد ازاں اداکار کو ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹ جودھپور نے ضمانت پر رہا کیا تھا۔بھارتی میڈیا کے مطابق سمپت نہرا پر سلمان خان کے قتل کی منصوبہ بندی سے قبل بھی کم سے کم ایک درجن دیگر مقدمات درج ہیں۔

Electrolux